مقبول خبریں
عبدالباسط ملک کے والدحاجی محمد بشیر مرحوم کی روح کے ایصال ثواب کیلئے دعائیہ تقریب
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
مقبوضہ کشمیر:مارچ ناکام بنانے کیلئے وادی فوجی چھائونی میں تبدیل،حریت قیادت نظر بند
سرینگر :مقبوضہ کشمیر میں ضلع کولگام کی طرف 6کشمیریوں کی شہادت پرمارچ کو ناکام بنانے کیلئے قابض حکام نے کولگام اور سرینگر سمیت وادی کشمیر کے دیگر علاقوں میں کرفیو اور دیگر پابندیاں نافذ کردیں جبکہ تمام حریت قیادت کو نظر بند کردیاگیا۔تفصیلات کے مطابق بھارتی فوج نے کولگام کی طرف جانے والے تمام راستوں کوسیل کردیا اور کسی کو قصبے کی طرف جانے کی اجازت نہیں دی گئی ،علاقے میں دفعہ 144 نافذ تھی اور لوگوں کو گھروں کے اندر رہنے کی ہدایت کی گئی ،پولیس افسروں کا کہناتھا کہ ضرورت پڑی تو کرفیو بھی نافذ کیاجاسکتاہے ۔وادی کے تمام حساس علاقوں میں بھارتی پولیس اور سنٹرل ریزرو پولیس فورس کی بھاری تعداد تعینات کی گئی جس سے وادی فوجی چھاؤنی کا منظر پیش کرنے لگی ۔دوسری طرف بھارتی فوجیوں کے ہاتھوں کشمیری نوجوانوں کے قتل کے خلاف کولگام ، پلوامہ اور اسلام آباد میں ہڑتال کی وجہ سے معمولات زندگی مفلو ج رہے اورہرطرف ہو کا عالم تھا۔ کیموہ ، کولگام ، دیوسراور ڈی ایچ پورہ تحصیلوں میں دکانیں اور تجارتی مراکز بند رہے اور سڑکوں پر ٹریفک معطل رہی ۔پولیس نے گزشتہ صبح مائسمہ سرینگرمیں محمد یاسین ملک کے گھر پر چھاپہ مار کر انہیں گرفتار کر لیااور کوٹھی باغ پولیس سٹیشن میں نظربند کیاگیا ۔ انتظامیہ نے کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی ، میرواعظ عمر فاروق ، شبیر احمد شاہ ، آغا سید حسن الموسوی الصفوی ، محمد اشرف صحرائی ، قاضی یاسر، مختار احمدوازہ ،غلام محمد خان سوپوری ،عمر عادل، فردوس احمد شاہ اوردیگر رہنماؤں کو گھروں یا جیلوں میں نظربند رکھا ۔ مشترکہ حریت قیادت نے جمعرات سے 28فروری تک کے لیے نیا احتجاجی کیلنڈر جاری کردیا ہے ، جمعہ کو یوم مزاحمت منایا جائے گا ۔نماز جمعہ کے بعد پوری وادی کشمیرمیں پر امن احتجاجی مظاہرے کئے جائیں گے ۔