مقبول خبریں
عبدالباسط ملک کے والدحاجی محمد بشیر مرحوم کی روح کے ایصال ثواب کیلئے دعائیہ تقریب
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
عالمی برادری کا ضمیر جھنجھوڑنے کیلئے پاکستان سمیت دنیا بھر میں یوم یکجہتی کشمیر منایا گیا
لاہور /اسلام آباد:پاکستان سمیت دنیا بھر میں کشمیریوں کی جدوجہد آزادی کی سیاسی ، سفارتی اور اخلاقی حمایت کے عزم کے اعادہ اور عالمی برادری کا ضمیر جھنجھوڑنے کے لئے یوم یکجہتی کشمیربھرپور انداز میں منا یا گیا۔ ملک بھر میں عام تعطیل کی گئی، صبح 10بجے کشمیریوں سے اظہار ہمدردی کے لئے سائرن بجاکرایک منٹ کی خاموشی اختیار کی گئی، چھوٹے بڑے شہروں میں احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں منعقد کی گئیں، پاکستان کو کشمیر سے ملانے والے پلوں پر انسانی ہاتھوں کی زنجیریں بنائی گئیں ۔تفصیلات کے مطابق پاکستان کی حکومت اور عوام، تمام سیاسی جماعتیں اور آزادکشمیر بھر میں مقبوضہ جموں وکشمیر کے عوام سے اظہار یکجہتی کے لئے یوم یکجہتی کشمیر بھرپور جوش اور ولولہ کے ساتھ منایا گیا۔ پاکستان اور آزادکشمیر کو ملانے والے تاریخی پل کوہالہ کے مقام پر 10بجے دن سائرن بجائے گئے اور ایک منٹ کی خاموشی اختیار کی گئی، بعد ازاں وہاں پر موجودافراد نے ہاتھوں میں ہاتھ ڈال کی انسانی ہاتھوں کی زنجیر بنا کر مقبوضہ کشمیر کے عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کیا اورتقریب کے دوران قراردا دبھی منظور کی گئی جس میں کہا گیا کہ مقبوضہ جموں وکشمیر پر بھارت کے جابرانہ قبضہ کی بھر پور مزمت کرتے ہیں اور اقوام عالم سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے مطابق کشمیریوں کو ان کا پیدائشی اور تسلیم شدہ حق حق خودارادیت دلوانے کے لیے اپنا بھرپور کر دارادا کریں ۔ قرارداد میں بھارت کی ریاستی دہشتگردی اور مظالم کی بھرپورمذمت کی گئی ۔لاہور میں بھی مختلف ریلیوں اور احتجاجی مظاہروں کا اہتمام کیا گیا تھا،ہرطرف کشمیر بنے گا پاکستان کے نعرے گونجتے رہے ،بھارتی پرچم اور مودی کے پتلے نذرآتش کئے گئے ۔ علی گیلانی ، حافظ محمد سعید سے رشتہ کیا لاالہ الاﷲ،مودی کا جو یار ہے ،غدار ہے غدار ہے ،کشمیر کی آزادی تک جنگ رہے گی،جنگ رہے گی کے نعرے بھی لگائے گئے ۔جماعت اسلامی نے لاہور ہائیکورٹ سے مسجد شہدا ،جمعیت علماء اسلام (ف )نے یکی گیٹ جامع مسجد فاروق اعظم سے لاہور پریس کلب، مسلم لیگ ن نے مال روڈ،سنی تحریک نے لاہو ر پریس کلب سے پنجاب اسمبلی تک اوریوتھ فورم فار کشمیر نے پنجاب اسمبلی سے لاہور پریس کلب تک ریلیاں نکالیں اور کشمیریوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کی گئی ،تحریک آزادی جموں و کشمیر نے ناصرباغ میں جلسہ کیا ۔کشمیریوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لئے مرد،خواتین ،بزرگ اور بچے سمیت مختلف شعبہ زندگی سے تعلق رکھنے والے لوگوں کی بڑی تعداد سڑکوں پر نکلی۔ مسجد شہدا مال روڈ پر خطا ب کرتے ہوئے امیرجماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ حکمرانوں کو منافقت ختم کرنا ہوگی ،انہیں فیصلہ کرنا ہے کہ مودی کے ساتھ کھڑا ہونا ہے یا کشمیریوں کے ساتھ۔کشمیر میں آزادی کا سورج طلوع ہونے والا ہے ،وہ وقت جلد آرہا ہے جب سرینگر میں پاکستان کا پرچم لہرائے گا اور ہم کشمیریوں کے ساتھ مل کر آزادی کا جشن منائیں گے ۔کشمیر کی لڑائی افغانستان اور فلسطین سے مختلف ہے جس پر عالمی قوتوں اور اقوام متحدہ نے آنکھیں بند کررکھی ہیں ۔یہ تکمیل پاکستان کی جنگ ہے جسے پاکستان ہی نے لڑنا ہے ۔کشمیریوں نے لاکھوں جانوں کی قربانی دیکر اپنا فرض پورا کردیا ،اب پاکستان کو بھی اپنا فرض نبھاتے ہوئے کشمیر کی آزادی کی جدوجہد کو تیز کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہاکہ ہمیں مغرب اور امریکہ کی طرف دیکھنے کی بجائے اپنے اﷲ سے نصرت مانگنے اور رسول ؐکے اسوہ کو اپنانے کی ضرورت ہے ۔ حکمران محض بھارت سے دوستی اورتجارت کیلئے لاکھوں شہداء کے خون سے غداری کررہے ہیں ۔ناصر باغ میں دفاع پاکستان کونسل اور جماعۃالدعوۃ کے مرکزی رہنما پروفیسر حافظ عبدالرحمن مکی نے اپنے خطاب میں کہاکہ حافظ محمد سعید و دیگر رہنماؤں کی نظربندی سے کشمیریوں کو مضبوط پیغام نہیں دیا جا سکا، حکومت بتائے کہ اس کی کشمیرپالیسی کیا ہے ؟۔ ہم کشمیر کو پاکستان کی شہ رگ سمجھتے ہیں ،ہماری پالیسی وہی ہے جو قائد اعظم محمد علی جناح کی تھی ،آزادی کشمیر کیلئے کشمیری وپاکستانی قوم ہر قسم کی قربانی پیش کرنے کیلئے تیار ہے ۔بادشاہی مسجد کے باہرمظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے مولانا سید عبد الخبیر آزاد نے کہا کہ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے کبھی تنہا نہیں چھوڑیں گے ۔مسلم لیگ(ن) کے زیر اہتمام ریلی سے خطاب کرتے ہوئے وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے کہا آج کے دن کوئی جماعت ہے نہ کوئی اختلاف ،ہم سب کی ایک ہی آواز ہے کہ کشمیر ہمارا ہے سارے کا سارا ہماراہے ،آج کے دن ہم سب کشمیریوں کی آواز ہیں، کوئی جبر کسی کی آزادی کا راستہ نہیں روک سکا بھارت کوتاریخ سے سبق سیکھنا ہوگا۔ لارڈ میئر لاہور کرنل مبشر جاوید نے کہا حکومت اور عوام نے ہمیشہ مقبوضہ کشمیر میں ریاستی جبر و تشدد اور انسانی حقوق کی پامالی کے خلاف بھرپور آواز اٹھائی ہے اورہمیشہ ساتھ دینگے ۔یوتھ فورم فار کشمیر کے زیراہتمام ریلی کے شرکاسے خطاب کرتے ہوئے سابق چیئرمین سینیٹ محمد میاں سومر و نے کہاکہ مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ کے ایجنڈے پر1949سے موجود ہے ۔افسوس کہ 69سال گزرنے کے باوجود اقوام متحدہ اپنی ہی منظور کردہ حق خود ارادیت کی قرار دادوں پر عمل دارآمد نہیں کرا سکا،کشمیریوں کیساتھ بھارت کا غیر انسانی سلوک مہذب و دنیا کے لئے ایک چیلنج ہے ،اقوام متحدہ کو اپناکردار اداکرناچاہئے ۔ چیف آرگنائر طارق احسان غوری نے کہا وادی کشمیر شہیدوں کے مقدس لہو سے رنگین ہو چکی ہے ،اب شہیدوں کے لہو سے روشن چراغو ں کو کوئی بجھا سکے گا اور بہت جلد کشمیر کی آزادی کا سورج طلوع ہوگا ۔پارلیمنٹ کی خصوصی کمیٹی برائے کشمیر نے اقوام متحدہ کو تنازعہ کشمیر پر منظور قراردادوں کی پاسداری کی یادداشت ایک بار پھر پیش کردی ۔پارلیمنٹ کے نمائندہ وفد نے اعجازالحق کی زیرقیادت اسلام آبادمیں اقوام متحدہ کے مبصر مشن کا دورہ کیا اوریادداشت پیش کی ۔ کشمیری رہنماء یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک نے ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کا کشمیریوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کشمیریوں کی قربانیوں کا اعتراف ہے ، مقبوضہ کشمیر میں ہونے والے مظالم کے خلاف پورے پاکستان سے موثر آواز اٹھانی چاہیے ،کشمیر کی تحریک کو ہر سطح پر اٹھانا ہوگا تاکہ مسئلہ کشمیر فوری حل ہو ۔ آزاد کشمیر کونسل اور قانون ساز اسمبلی کے مشترکہ اجلاس سے صدر اور وزیراعظم آزاد کشمیر نے خطاب کیا اور وزیراعظم پاکستان کا پیغام پڑھ کر سنایا۔ وفاقی دارالحکومت سمیت ملک بھر میں کشمیریوں کی حمایت میں بڑے بڑے بینرز اور پینا فلیکس آویزاں کئے گئے تھے ۔جن میں اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ وہ کشمیریوں کوسلامتی کونسل کی قرار دادوں کے مطابق حق خودارادیت دلائے ۔ راولپنڈی ،کوئٹہ ،پشاور ،کراچی ،ملتان،بہاولپور،خانیوال،مظفرگڑھ،لودھراں،وہاڑی سمیت ملک بھر کے تما م شہروں میں یوم کشمیرکے موقع پرکشمیریوں سے زبردست اظہاریکجہتی کا اظہار کیا گیا۔ کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی نے 5فروری کو یومِ یکجہتی کشمیرمنانے کے لیے پاکستانی حکومت، فوج اور عوام کا دل کی عمیق گہرائیوں سے شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ کشمیری عوام گزشتہ70سال سے اپنے حقِ خودارادیت کے لیے ِ جدوجہدکررہے ہیں اور اس جدوجہد میں پاکستان روزِ اول سے ان کی سیاسی، سفارتی اور اخلاقی سطح پر مدد کرتا آرہا ہے ۔پاکستان دنیا کا وہ واحد ملک ہے جو ان کے حقِ خودارادیت کو خود بھی تسلیم کرتا ہے اور عالمی برادری کے سامنے اس کی وکالت بھی کرتا ہے ۔ دختران ملت کی سر براہ آسیہ اندرابی نے پاکستان کی قومی اسمبلی کا اجلاس اظہار یکجہتی کشمیر کے طور پر انعقادکا خیرمقدم کیا ہے ۔