مقبول خبریں
سیرت النبیؐ کے پیغام کو دنیا بھر میں پہنچانے کے لئے میڈیا کا کردار اہم ہے:پیر ابو احمد
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
گورنر پنجاب کی برطانیہ میں کام کرنے والی چیریٹیز کے نمائندوں اور کمیونٹی رہنمائوں سے ملاقات
لندن ... برطانیہ میں کام کرنے والی چیریٹیز کے نمائندوں اور کمیونٹی رہنمائوں سے ملاقات میں گورنر پنجاب محمد سرور نے کہا ہے کہ ترقی یافتہ ممالک کی جانب سے ترقی پزیر ممالک کی تھوڑی امداد بھی ان کے لیے بڑی اہمیت کی حامل ہوتی ہے۔ انہوں نے برطانوی چیرٹیز سے اپیل کی کہ پاکستان کے لوگوں کو تعلیم اور سکول کے بچوں کو صاف پانی کی فراہمی میں مدد کریں۔ چوہدری سرور نے کہا کہ دہشت گردی، توانائی کے بحران، سیلابوں، زلزلوں اور معاشی مسائل کے باعث مشکل دور سے گزر رہا ہے اور فلاحی ادارے پاکستان کے لوگوں کی زندگی بہتر بنانے کے لئے بہت کچھ کرسکتے ہیں۔ انہوں نے برطانیہ کے محکمہ برائے بین الاقوامی ترقی اور دیگر این جی اوز کی تعریف کرتے ہوئے ان پر زور دیا کہ وہ پاکستان میں لاکھوں سکول نہ جانے والے بچوں کو سکول میں تعلیم حاصل کرنے کیلئے پاکستان میں انفرا سٹرکچر کی تعمیر کی کوششوں میں مزید اضافہ کریں۔ انہوں بتایا کہ متعدد این جی اوز پاکستان کے مختلف حصوں میں واٹر پلانٹس کی تنصیب کررہے ہیں، لیکن ان کی کوششیں اس صورت میں مزید مؤثر ہوسکتی ہیں، اگر وہ منتخب علاقوں میں پراجیکٹس پر کام کریں تاکہ ایک ہی علاقے میں دوہری تنصیب سے بچا جا سکے۔ پاکستانی ہائی کمشنر واجد شمس الحسن نے بھی اس موقع پر اظہار خیال کیا اور برٹش چیریٹیز نے مشکل کے ہر وقت میں پاکستان کی دل کھول کر مدد کی ہے۔ تقریب کی نظامت کے فرائض کمیونٹی ویلفئر اتاشی فضا بتول نے ادا کئے۔