مقبول خبریں
راچڈیل کیسلمئیرسنٹر میں کمیونٹی کو صحت مند رہنے،حفاظتی تدابیر بارے آگاہی ورکشاپ کا انعقاد
یورپی پارلیمنٹ میں قائم ’’فرینڈز آف کشمیر گروپ‘‘ کی تنظیم سازی کردی گئی
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت جولائی میں برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز،سیمینارز منعقد کریگی
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
اوورسیز پاکستانیز ویلفیئر کونسل کا وسیم اختر چوہدری اور ملک ندیم عباس کے اعزاز میں استقبالیہ
مسئلہ کشمیر کو برطانیہ و یورپ میں اجاگر کرنے پر تحریکی عہدیداروں کا اہم کردار ہے: امجد بشیر
ہم نے سچ کو دیکھا ہے جھوٹ کے جھروکوں سے!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
نواز شریف کا عدالت سے استثنیٰ حاصل کرنیکا مطالبہ عوام کی توہین ہے:باسط شاہ مشوانی، چوہدری سردار
اولڈہم:وزیر اعظم پاکستان میاں نواز شریف کا عدالت عظمیٰ سے استثنیٰ حاصل کرنے کا مطالبہ مادر وطن کی اٹھارہ کروڑ سے زائد عوام کی توہین ہے،قوم سے پچھلے نو ماہ سے جھوٹ بول کر پھر عوامی عدالت پارلیمنٹ میں غلط بیانی کر کے پچھلے بتیس سال سے سرکاری عہدوں کو ڈھال بنا کر دنیا بھر میں اپنے کاروبار کو وسعت دینے،لوٹی ہوئی دولت کو مختلف ذرائع سے ملک سے باہر لے جانے اور اسی دولت کی بدولت لوگوں کے ضمیر خریدنے،انصاف کی راہ میں حائل ہونے،صوبہ پنجاب میں اپنے حواریوں کو مختلف شعبہ و محکمہ جات میں تعینات کر کے مک مکائو کرنے سے اور ملکی مفادات کو تحفظ دینے کی بجائے ذاتی دلچسپیوں کی بنا پر بیرونی طاقتوں سے توقعات استوار کرنے کے بعد اب بھی اپنے عہدے کی وجہ سے فائدہ اٹھانے کی ناکام کوشش کر رہے ہیں اب پاکستان کی عدلیہ اور با غیرت قوم ایسا نہیں ہونے دے گی،ان خیالات کا اظہار تحریک انصاف برطانیہ نارتھ ویسٹ کے سابق صدر سید باسط شاہ مشوانی اور آرگنائزنگ کمیٹی کے رکن حاجی چوہدری محمد سردار نے عدالت عظمیٰ کی کارروائی کے فی الفور بعد میڈیا سے گفتگو کے دوران کیا،انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان میں اس وقت صرف عمران خان ہی ایک ایسی واحد شخصیت ہے جس کے قول و فعل میں تضاد نہیں ہے اور جو کرپشن کے خلاف بغاوت کا علم بلند کئے ہوئے ہے اور صدقے دل سے پسے ہوئے طبقات کے حقوق کیلئے لڑ رہا ہے اور یہی وجہ ہے کہ پاکستان کی پانچ فیصد اشرفیہ مشترکہ مفادات کی خاطر اکٹھی ہے اور بیان بازی محض نورا کشتی ہے،انہوں نے مزید کہا کہ اب وقت آ گیا ہے کہ پاکستان میں انصاف کا بول بالا ہونا چاہئے،عدالت عظمیٰ کو قانون کے مطابق اور تمام شواہد کو مد نظر رکھتے ہوئے تاریخی فیصلہ کرنا چاہئے جس سے پاکستان کے اندر کرپشن کے ناسور کا خاتمہ ہو سکے اور آئندہ کوئی بھی ملکی وسائل کو لوٹنے کا مرتکب نہ ہو۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر