مقبول خبریں
نائجیریا کمیونٹی ایسوسی ایشن کا میئر چیئرٹی فنڈریزنگ ڈنر کا اہتمام ،مئیر کونسلر محمد زمان کی خصوصی شرکت
بریگزیٹ بحران :کنزرویٹو پارٹی کی تین خواتین ممبر کی آزاد گروپ میں شمولیت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
پولنگ کا پول کھل گیا، کراچی حلقہ این اے 256 میں77 ہزار 642 ووٹ جعلی قرار
کراچی ... تحریک انصاف کے امیدوار کی جانب سے انتخابات میں ڈالے گئے ووٹوں کی سکروٹنی کے عمل نے ایسے ہوش ربا انکشافات کیے ہیں کہ لوگ سوچنے پر مجبور ہوگئے ہیں آیا ماضی میں کبھی فری اینڈ فئیر الیکشن ہوئے بھی کہ سب ڈھکوسلہ تھا۔ نادرا کی نشان انگوٹھا انکوائری میں حلقہ این اے256 سے یہ حقیقت سامنے آئی ہے کہ 67پولنگ اسٹیشن میں ڈالے گئے84ہزار448 ووٹوں میں سے 77 ہزار 642 ووٹوں کو جعلی قراردے دیا گیاہے۔این اے 256 سے متحدہ قومی موومنٹ کے امیدوار اقبال محمد علی کی کامیابی کو تحریک انصاف کے امیدوار زبیر خان نے چیلنج کیا تھا ، جس پر الیکشن ٹریبونل نے نادرا کو انگوٹھوں کے نشان کی تصدیق کرنے کا کہا تھا۔ انگوٹھوں کی تصدیق کیلئے زبیر خان نے نو لاکھ روپے جمع کرائے تھے۔ نادرا کی جانب سے آج رپورٹ الیکشن ٹریبونل میں جمع کرائی ،جس کے مطابق 67 پولنگ اسٹیشنز میں 84 ہزار چارسو 48 ووٹ ڈالے گئے ،نادرا کے ریکارڈ کے مطابق صرف چھ ہزار 806 ووٹوں کی تصدیق ہوسکی ،جبکہ 77 ہزار 642 ووٹ جعلی قرار دیئے گئے ،رپورٹ کے مطابق پانچ ہزار 893 ووٹ ایسے تھے جو ووٹرز نے ایک سے زائد ڈالے۔انتخابات میں ایم کیوایم کے امیدوار اقبال محمد علی نے ایک لاکھ 51 ہزار 788 ووٹ حاصل کیے تھے جبکہ تحریک انصاف کے امیدوار زبیرخان نے 69 ہزار 72 ووٹ حاصل کیے تھے۔