مقبول خبریں
پاکستان میں صاف پانی کی سہولت کو ممکن بنانے کیلئے مختلف منصوبوں پر کام کرونگی:زارہ دین
پیپلزپارٹی کے رہنما ندیم اصغر کائرہ کی پریس کانفرنس ،صحافیوں کے سوالات کے جوابات دیئے
واجد خان ایم ای پی کا آزاد کشمیر سے آئے حریت کانفرنس کے رہنمائوں کے اعزاز میں عشائیہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے زیر اہتمام پہلی کشمیر کلچرل نمائش کا اہتمام
دسمبر بے رحم اتنا نہیں تھا!!!!!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
لاکھوں روپے واجب الادا ہونے کے باوجودآزاد کشمیر کےصحافیوں کےلیئے مزید 5 لاکھ امداد کا اعلان
مظفرآباد...آزاد کشمیر کے سینیئر وزیر اورقا ئمقام وزیر اعظم چوہدری محمد یاسین نے محکمہ اطلاعات میں قائم سرکولیشن مانیٹرنگ کمیٹی کو تاریخ اجراءسے ختم کرنے کے احکامات جاری کئے ہیں اور اس سلسلے میں متعلقہ حکام کو احکامات اور ہدایات جاری کر دی گئی ہیں۔اس بات کا اعلان انہوں نے آل کشمیر نیوز پیپرز سوسائٹی (اے کے این ایس) کے وفد سے ملاقات میں کیا جس نے صدر عامر محبوب کی قیادت میں میں ان سے ملاقات کی۔ قا ئمقام وزیر اعظم آزاد کشمیر چوہدری محمد یاسین نے اس موقع پر ”اے کے این ایس“ کے لئے پانچ لاکھ روپے کا اعلان کیا اور کہا کہ حکومت آزاد کشمیرکی میڈیا پالیسی ” اے کے این ایس“کی مشاورت سے بنائی جائے گی۔ واضح رہے کہ صحافی پہلے ہی واویلا کر رہے تھے کہ ان کے پہلے سےاعلان کردہ لاکھوں روپے واجب الادا ہیں۔قا ئمقام وزیر اعظم آزاد کشمیر نے کہا کہ حکومت ،عدلیہ اور انتظامیہ کی طرح میڈیا ریاست کا بنیادی ستون ہے ۔حکومت ریاستی میڈیا کی ترویج و ترقی کے لئے اہم اقدامات اٹھا رہی ہے۔ حکومت ریاستی اخبارات و جرائد کو مضبوط و مستحکم کرنے کا عزم رکھتی ہے ۔۔حکومت نے اخبارات و جرائد کے سالہا سال سے چلے آ رہے بقایہ بلات کی ادائیگی کی ہے اور رہائشی کالونیوں سمیت صحافیوں کو درپیش تمام مسائل کے حل کو ترجیح دی جا رہی ہے۔ قا ئمقام وزیر اعظم آزاد کشمیر چوہدری محمد یاسین نے کہا کہ حکومت ریاستی اخبارات کی اہمیت اور ان کے شاندار کردار سے آگاہ ہے اور ریاستی میڈیا کو درپیش مسائل و مشکلات کے حوالے سے حکومت اپنی ذمہ داریاں پوری کرے گی۔ ” اے کے این ایس“ کے وفد میں سابق صدر عامر محبوب کے علاوہ صدر سردار زاہد تبسم،اطہر مسعود وانی،امجد چوہدری،امتیاز بٹ،راجہ کفیل،چوہدری جاوید اور چوہدری بنارس شامل تھے۔