مقبول خبریں
اولڈہم کے نوجوانوں کی طرف سے روح پرور محفل، پیر ابو احمد مقصود مدنی کی خصوصی شرکت
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
چوہدری یعقوب، اورنگزیب چوہدری و دیگر کا ممتاز شخصیت راجہ محمد عارف کیلئے نیک تمنائوں کا اظہار
سلائو: میرپور آزاد کشمیر کی ممتاز شخصیت راجہ محمد عارف جن کی گزشتہ روز میرپور میں صبح کی واک کے دوران طبیعت خراب ہوگئی تھی اسلام آباد کے ڈاکٹروں سے ابتدائی چیک آپ کے بعد مزید علاج کے لئے برطانیہ پہنچ گئے آکسفورڈ ہسپتال میں ڈاکٹروں نے ان کا طبی معائنہ کیا اور مزید طبی ٹیسٹ کے لئے ریفر کر دیا ٹیسٹ کے رزلٹ کے بعد علاج کا باقاعدہ آغاز کیا جائے گا فل وقت خدشہ ہے کہ شاید ان کے ہارٹ میں بلڈ کولڈ ہیے بہرحال اس کا حتمی فیصلہ ٹیسٹ رزلٹ کے بعد ہی ہو گا راجہ محمد عارف کے بڑے بیٹے خود برطانیہ میں سینئر ڈاکٹر ہیں جو اپنی نگرانی میں علاج کروا رہے ہیں اور اب تک کے علاج سے پوری طرح مطمئن ہیں راجہ محمد عارف کے مطابق وہ اپنے آپ کو بہت بہتر سمجھتے ہیں اور ان کی صحت بہت اچھی ہے پہلے دن کی تکلیف کے بعد دوبارہ کسی قسم کی تکلیف نہیں ہوئی اللہ تعالیٰ کے فضل و کرم اور لوگوں کی دعاؤں کے صدقے بہت بہتر محسوس کر رہا ہوں گزشتہ روز وزیر اعظم پاکستان کے سابق مشیر چوہدری یعقوب،سابق مشیر اطلاعات وزیراعظم آزاد کشمیر اورنگزیب چوہدری، چوہدری مظہر اکرام اور حاجی طارق نے ملٹن کنیز میں جا کر ان سے ملاقات کر کے عیادت کی اور نیک تمناؤں کا اظہار کرتے ہوئے آن کی جلد صحت یابی کے لئے خصوصی دعا کی اس موقع پر راجہ محمد عارف نے آن کی آمد پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ اللہ تعالیٰ کے خاص فضل و کرم سے وہ برطانیہ سے علاج کے بعد مکمل صحت یاب ہو کر بہت جلد اپنے پیاروں کے پاس پاکستان میں ہیوں گئے وہ اپنے بڑے بیٹے کے جو برطانیہ میں ڈاکٹر ہیں کے اصرار پر برطانیہ میں علاج کے لئے آئے ہیں انہوں نے تمام احباب کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے آن کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا اور جلد صحت یابی کے لئے دعا کی۔