مقبول خبریں
عبدالباسط ملک کے والدحاجی محمد بشیر مرحوم کی روح کے ایصال ثواب کیلئے دعائیہ تقریب
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
کشمیریوں کو حق خود ارادیت ملنا چاہئے، کُل جماعتی کشمیر رابطہ کمیٹی کی سلور جوبلی تقریب
برمنگھم... کُل جماعتی کشمیر رابطہ کمیٹی کے 25سال مکمل ہونے پرسلور جوبلی تقریب برمنگھم میں ہوئی مہمان خصوصی جماعت اسلامی آزاد کشمیر کے امیر عبدالرشید ترابی تھے، صدارت رابطہ کمیٹی کے صدر شہزاد اقبال نے کی تقریب کے خاص مہمانوں میں یورپین رکن پارلیمنٹ فل بینسین، لارڈ قربان حسین، یو کے آئی پی کے بل ایتھرج اور کشمیری پاکستانی جماعتوں کے نمائندوں کے علاوہ برطانوی جماعتوں کے کونسلرز اور علمائے کرام بھی موجود تھے۔ تقریب میں رابطہ کمیٹی کے سرپرست اعلیٰ اور بانی رہنما مولانا محمد بوستان القادری نے سرپرست اور نگرانی جبکہ نظامت کے فرائض تحریک کشمیر کے صدر محمد غالب نے انجام دیے۔تقریب کے مہمان خصوصی محمد رشید ترابی نے تقریب سے خطاب میں کہا کہ مسئلہ کشمیر تمام ترمظالم، عالمی طاقتوں کی مفاد پرستوں اور دوھرے معیاروں کے ساتھ ساتھ بھارت کی تمام ترسازشوں اور مظالم کے باوجود آج بھی دنیا کا سب سے بڑا قدیم اور حل طلب مسئلہ ہے عالمی برادری کا فرض ہے کہ وہ اقوام متحدہ اور دیگر عالمی اداروں قراردادوں اور فیصلوں کے مطابق کشمیری قوم کو ان کا حق خود ارادی دیاجائے اور کشمیری قوم کو یہ حق دیاجائے کہ وہ جا چاہیں اپنے مستقبل کا آزادانہ فیصلہ کرسکیں، رشید ترابی نے کہا کہ جس تحریک اور جدوجہد میں شہدا کا خون شامل ہو وہ تحریکیں کبھی ناکام نہیں ہوتیں۔ انہوں نے کہا کہ بھارت نے افضل گروپ کو قانونی ضابطوں اور انصاف کے تقاضوں کو پامال کرتے ہوئے جس طرح چوری چھپے سزائے موت دی ہے اس سے بھارتی حکمرانوں کے عزائم دیکھنے اور سمجھنے میں زیادہ مشکل نہیں ہے۔رشید ترابی نے کل جماعتی کشمیر رابطہ کمیٹی کی 25سالہ شاندار خدمات کو سراہتے ہوئے کہا کہ کشمیری قوم اور کشمیری سیاسی جماعتوں کے اتحاد یکجہتی اور کشمیری کی آزادی کے ایک نقطے پر مکمل اتفاق کی دلیل ہے، انہوں نے رابطہ کمیٹی کے تمام بانی رہنماؤں کو خراج عقیدت پیش کیا اور خاص طورپر مولانا محمد بوستان القادری، محمد غالب ، شہزاد اقبال اور دیگر رہنماؤں کی تعریف کی۔ لارڈ قربان حسین نے اپنی تقریر میں کہا کہ موجودہ دور میں بھی مسئلہ کشمیر کا حل نہ ہونا مسروقہ جمہوری سیاسی اور انسانی اقدار کی توہین اور سراسر ظلم وبے انصافی کے مترادف ہے۔رابطہ کمیٹی کے صدر شہزاد اقبال مغل نے کل جماعتی کشمیر رابطہ کمیٹی کی تاریخ پس منظر اور اہمیت کا ذکرکرتے ہوئے کہا کہ رابطہ کمیٹی آزادی کشمیر کے لئے ایک ہر اول دستے کا کردار ادا کررہی ہے۔ رابطہ کی ویب سائٹ تیار کی گئی ہے اور کراس پارٹی اہم اور موثر رہنماؤں سے رابطہ کو متعارف کروایا ہے۔ مولانا محمد بوستان القادری نے اپنے خطاب میں رابطہ کمیٹی کے قیام، پس منظر تاریخ اور خدمات پر مفصل اظہار خیالات کیا اور کہا کہ یہ تنظیم 25پہلے جس جذبے اور ایثار کے ساتھ بنائی گئی تھی آج اللہ کے فضل وکرم سے اس پر قائم اور دائم ہے اور دن بہ دن مضبوط اور بھرپور کردار ادا کررہی ہے۔رابطہ کمیٹی کی تقریب میں یو کے آئی پی کے نمائندے بل ایتھرج نے بھی شرکت کی اور مسئلہ کشمیر پر کشمیریوں کے موقف کی حمایت کی، یورپین رکن پارلیمنٹ فل بینین نے کہا کہ میرے نزدیک مسئلہ کشمیر ایک جمہوری سیاسی اور انسانی آزادی کا مسئلہ ہے۔ بھارت جو ایک جمہوری اور سیکولر ملک ہے یہاں کشمیر میں بھارتی افواج کے مظالم، انسانی حقوق کی سخت خلاف ورزیاں اجتماعی قبریں اور کشمیری عوام پر مظالم قابل مذمت ہیں.. پاکستان کے قونصلر جنرل شیر بہادر خان نے اس موقع پر اپنی تقریر میں رابطہ کمیٹی کو ایک موثر اور قدیم تنظیم کے حوالے سے سراہا اور مسئلہ کشمیر پر حکومت پاکستان کا موقف پیش کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان چاہتا ہے کہ مسئلہ کشمیر کو حل کرنے کے لئے اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل کیاجائے ، مقبوضہ کشمیر کے رہنما نذیر احمد قریشی نے کہا کہ اگر ایسٹ تیمور کو آزاد کیاجاسکتا ہے تو بھارت کے قبضے میں کشمیر کو آزاد کیوں نہیں کیا جاسکتا۔ پاکستان کے قونصلر برائے برمنگھم فیصل ابڑو نے رابطہ کمیٹی کی خدمات کو سراہا اور کشمیریوں کے سیاسی اور انسانی حقوق کو موثر سطح پر اجاگر کرنے کی تعریف کی۔ تقریب میں علامہ حافظ فضل احمد قادری نے سنی حریت کونسل کی نمائندگی اور تلاوت کلام مجید سے تقریب کا آغاز کیا۔ دیگر کشمیری رہنماؤں میں کشمیر فورم کے چئیرمین چوہدری محمد عظیم ،کونسلر گردیو سنگھ اٹوال، چوہدری ظفر اقبال ایڈووکیٹ (لبریشن لیگ) راجہ امجد خان مسلم لیگ ن، آزاد کشمیر علامہ فاروق احمد علوی(یو کے اسلامک مشن) راجہ فہیم کیانی(جماعت اسلامی) چوہدری محمد بشیر رٹوی( مسلم کانفرنس) نائب حسین مغل اور دیگر رہنماموجود تھے۔ اس موقع پر رابطہ کمیٹی کی جانب سے عبدالرشید ترابی، مولانا بوستان قادری ، محمد غالب، لارڈ قربان اور دیگر کو رابطہ کمیٹی کی شیلڈ پیش کی گئیں۔