مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
مقبوضہ کشمیر :عوام مظالم کے باوجود آزادی کے سوا کسی چیز پر کمپرومائز نہیں کرینگے:شاہنواز علی حیدر
برمنگھم: مقبوضہ کشمیر میں جاری تاریخ کے بدترین مظالم اور طویل ترین کرفیو کے باجود کشمیری عوام پُرعزم اور اُمید ہیں آزادی کے سوا کسی چیز پر کمپرومائز نہیں کریں گے۔ صدر تحریک کشمیر برطانیہ برمنگھم شاہنواز علی حیدر ایڈووکیٹ نے کشمیر بارے منعقد ہ مشاورتی تقریب سے خطاب سے کرتے ہوے مزید کہا کہ اقوام متحدہ کو اپنی افادیت اور اہمیت منوانے اور عالمی برداری کی اصل ترجمانی کا حقدار کہلانے کے لیے کشمیریوں کو آزادی دلانے میں اپنا کردار ادا کرنے کا وقت آگیا ہے۔ کشمیری عوام اپنی آزادی اور بقاء کی جنگ میں فیصلہ کن موڑ پر ہیں اقوام متحدہ نے اگر اب بھی کشمیر کے حق میں اپنا کردار ادا نہ کیا تو اس کی افادیت اور اہمیت بڑا سوالیہ نشان بن جاے گی۔ انسانی حقوق کی تنظیمیں عالمی میڈیا فلاحی ادارے کشمیر میں برائے راست رسائی حاصل کرنے کی کوشش کریں اور وہاں جاری تاریخ انسانی کے بدترین مظالم کو خود مشاہدہ کریں۔ عالمی برداری مظلوم کشمیریوں کاساتھ دینے کے لیے آگے آئے۔ ظالم اور مظلوم کی اس کشمکش میں مظلوم کا ساتھ دیے کر اقوام متحدہ اپنی افادیت اور اہمیت منوائے۔ راجہ فہیم کیانی کا مزید کہنا تھا کہ برطانیہ میں مقیم تارکین وطن کشمیری عالمی سطح پر کشمیریوں کی ترجمانی کا سب سے بڑا ذریعہ ہیں اور ان کی طرف سے مناسب تحریک، کونسلرز اور ممبران پارلیمنٹ کی طرف سے اہم اقدامات کے ذریعے کشمیر کی آواز کو موثر بنانے کے لیے اہم اقدامات کیے جارہے ہیں۔ برطانوی پارلیمنٹ کشمیر کے حق میں اہم ترین کردار ادا کرسکتی ہے اور اسے اس کردار کے لیے عوامی سطح پر بھرپور آگاہی مہم کا آغاز وقت کی اہم ضرروت ہے جس کے لیے مشاورت جارہی ہے جلد لائحہ عمل کا اعلان کیا جاے گا۔