مقبول خبریں
مئیر کونسلر جاوید اقبال نےرضاکارانہ خدمات پرتنظیم وائی فائی کو تعریفی سرٹیفکیٹ اور شیلڈ سے نوازا
پیپلزپارٹی کے رہنما ندیم اصغر کائرہ کی پریس کانفرنس ،صحافیوں کے سوالات کے جوابات دیئے
واجد خان ایم ای پی کا آزاد کشمیر سے آئے حریت کانفرنس کے رہنمائوں کے اعزاز میں عشائیہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے زیر اہتمام پہلی کشمیر کلچرل نمائش کا اہتمام
دسمبر بے رحم اتنا نہیں تھا!!!!!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
بلوچستان میں چند دن کے وقفے سے ایک اور زلزلہ امدادی ٹیموں کو مشکلات کا سامنا
کوئٹہ... پاکستان کے صوبہ بلوچستان میں چند دن کے وقفے سے ہفتہ کے روز پھر زلزلے کے شدید جھٹکے محسوس کئے گئے جس سے مشکے کے علاقے میں مزید تباہی ہوئی ہے۔ مقامی وقت کے مطابق زلزلہ دن بارہ بج کر چونتیس منٹ پر آیا اور ریکٹر سکیل پر اس زلزلے کی شدت سات اعشاریہ دو ریکارڈ کی گئی محکمۂ موسمیات کے اہلکار نے بتایا کہ زلزلے کا مرکز آواران کے جنوب میں خضدار کا علاقہ تھا اور یہ چھیالیس کلومیٹر کی گہرائی میں آیا۔ انہوں نے کہا کہ یہ گزشتہ منگل کو آنے والے زلزلے کا آفٹر شاک نہیں بلکہ خود ایک شدید زلزلہ تھا۔ ضلع آواران کے ڈپٹی کمشنر رشید بلوچ نے ذرائع ابلاغ کو بتایا کہ مشکے میں پہلے سے ہی امدادی کارروائیاں جاری تھیں اور اب متاثرہ علاقوں میں مزید امداد بھیجی جا رہی ہے۔ رشید بلوچ کا یہ بھی کہنا تھا کہ زلزلے سے مواصلاتی نظام بری طرح متاثر ہوا ہے جس سے متاثرہ علاقے سے معلومات کے حصول میں مشکلات کا سامنا ہے۔ اس زلزلے کے جھٹکے بلوچستان کے تمام علاقوں کے علاوہ کراچی سمیت صوبہ سندھ کے بیشتر حصے میں محسوس کیے گئے۔ اس کے علاوہ زلزلے کا اثر سلطنتِ اومان اور ایران کے جنوبی علاقوں میں بھی محسوس کیا گیا۔