مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
صدرتحریک کشمیر برطانیہ کی جیس فلپ ایم پی سے ملاقات مقبوضہ کشمیر کی صورتحال سےآگاہ کیا
برمنگھم:کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر تشویش ہے کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے خلاف مہم کے نمائندوں کے ساتھ ملکر لاکھوں برٹش کشمیریوں کی نمائندگی کرتے ہوے برطانوی پارلیمنٹ میں کشمیر میں انسانی حقوق اور حق خودارادیت پر بحث کرانے کی جد وجہد کروں گی۔ان خیالات کا اظہار یارڈلی برمنگھم سے لیبر ایم پی جیس فلپ نے تحریک کشمیر برطانیہ کے صدر راجہ فہیم کیانی کے ساتھ ملاقات میں کیا، انہوں نے مزید کہا کہ برطانیہ انسانی حقوق کا علمبردار ہے اور اس کی اقدار میں عوامی رائے کو بڑی اہمیت حاصل ہے انکا کہنا تھا کہ دنیا بھر میں ایسا ہی ہونا چاہیے رائے عامہ کو اہمیت اور اولیت ادلانے کے لیے کام کر نے والے اپنے حلقے سمیت ملک بھر سے کارکنوں اور ساتھی ممبران پارلیمنٹ کے ساتھ ملکر کشمیر میں حالیہ کشیدہ صورت حال، خطرناک اسلحے کے استعمال سے درجنوں معصوم جانوں کے ضیاع اور سینکڑوں زخمیوں اور بینائی سے محروم ہونے والے افراد کے حق میں آواز اُٹھانے کے پارلیمنٹ میں لاکھوں برٹش کشمیریوں کی طرف سے نمائندگی کرتے ہوے برطانیہ بھر سے ساتھی ممبران پارلیمنٹ کے ساتھ ملکر کشمیریوں کے حق خوداردیت ، برطانوی امداد اور دیگر متعلقہ امور پر برطانوی پارلیمنٹ میں بحث کو یقینی بنانے کے لیے اقدامات کروں گی۔ راجہ فہیم کیانی نے جیس فلپ کو کشمیر میں جاری حالیہ کشیدگی اور انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں بارے برٹش کشمیریوں کی طرف سے تشویش سے آگاہ کیا اور پارلیمنٹ میں کشمیر پر بحث کرانے کا مطالبہ کیا جسے تسلیم کرتے ہوئے جیس فلپ نے یقین دلایا کہ وہ ساتھ ممبران پارلیمنٹ کے ساتھ ملکر پارلیمنٹ میں بڑے انسانی مسئلے پر بحث کو یقینی بنائیں گی۔