مقبول خبریں
الیکشن 2019 کیلئے کنگزوے وارڈ راچڈیل سے لیبر پارٹی کی مس ایلس رائٹ نامزد
بھارتی لابی نے کشمیر کانفرنس کوانے کے لئے اوچھے ہتھکنڈے استعمال کیے: شاہ محمود قریشی
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ملکہ الزبتھ کی شاہی جاگیر نے وزارت خزانہ کو ریکارڈ 30.41 کروڑ پاؤنڈ ادا کئے
لندن:برطانیہ میں ملکہ الزبتھ کی شاہی جاگیر نے وزارت خزانہ کو ریکارڈ 30.41 کروڑ پاؤنڈ ادا کئے ہیں کیونکہ اس کا پورٹ فولیو 9.7 فیصد اضافے کے ساتھ بڑھ کر 12 ارب پاؤنڈ ہو گیا ۔ملکہ کی شاہی جاگیر میں لندن کی ریجنٹ سٹریٹ اور پورے برطانیہ کی سمندر کی تہہ شامل ہے ۔ شاہی جاگیر کی جانب سے دی جانے والی رقم 28.5 کروڑ پاؤنڈ سے بڑھ کر 30.41 کروڑ پاؤنڈ ہو گئی ہے ۔یہ رقم سوورین گرانٹ سے قبل آئی ۔ سوورین گرانٹ وہ رقم ہے جو ٹیکس دہندگان ملکہ کے لیے وزارت خزانہ کو دیتے ہیں۔رواں سال ملکہ کو اس گرانٹ میں 4.3 کروڑ پاؤنڈ دئیے گئے جو شاہی جاگیر کے منافع کا 15 فیصد ہیں۔سوورین گرانٹ دو سال بعد دی جاتی ہے اور اس پر ہر پانچ سال بعد نظر ثانی کی جاتی ہے ۔آئندہ چند ماہ میں حکومت اور سینئر شاہی اہلکار گرانٹ پر نظرثانی کریں گے ۔ یہ گرانٹ 2012 میں 15 فیصد پر طے کی گئی تھی۔سوورین گرانٹ کی سالانہ رپورٹ برائے 2016-2015 کے مطابق وزارت خزانہ شاہی خاندان پر 4.01 کروڑ پاؤنڈ خرچ کرتی ہے جن میں سے 16 لاکھ پاؤنڈ سے زیادہ شاہی محلات اور دیگر عمارتوں کی دیکھ بھال پر خرچ کیے جاتے ہیں، 40 لاکھ پاؤنڈ ملکہ اور شاہی خاندان کے سرکاری دوروں پر خرچ ہوتے ہیں جن میں دس لاکھ پاؤنڈ کی کمی واقع ہوئی ہے ۔