مقبول خبریں
اولڈہم کے نوجوانوں کی طرف سے روح پرور محفل، پیر ابو احمد مقصود مدنی کی خصوصی شرکت
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ملکہ برطانیہ کی سالگرہ تقریبات:راجہ نجابت کی معاونت سے کشمیر سنگھ کے متعدد شہروں سے رابطے
نوٹنگھم: برطانوی مسلمان10جون کو ملکہ برطانیہ کی90thسالگرہ کی تقریبات منعقد کرنے میں تمام مقامی اداروں،غیر سرکاری تنظم یوں اور مذہبی اداروں کے علاوہ سٹی سکوائرز میں بھی شرکت کریں گے،رمضان المبارک کی وجہ سے نہ صرف مساجد میں ملکہ برطانیہ کی درازی عمر کی دعا کرائی جائے گی بلکہ دیگر مذاہب کے کمیونٹی لیڈروں اور مقامی سیاستدانوں کو مساجد اور کمیونٹی سینٹروں میں افطاری تقریبات بھی منعقد کی جائیں گی،بریڈ فورڈ شہر سے ایک برطانیہ اور ایک قوم کے عنوان سے چلائی جانے والی مہم کے چیف ایگزیکٹو سابق پولیس انسپکٹر کشمیر سنگھ برطانیہ بھر میں مختلف مذہبی اور کمیونٹی رہنمائوں کی معاونت سے برطانیہ کے مختلف شہروں میں اس مہم کا آغاز کر چکے ہیں تاکہ10جون کی سرکاری تقریبات کے علاوہ تارکین وطن کی طرف سے اپنے ملک کی ملکہ کی خوشی میں سالگرہ کے کیک کاٹ کر اپنی برطانیہ سے قومی وابستگی کا اظہار کریں،اس وقت تک بریڈ فورڈ،مانچسٹر،برمنگھم،کوونٹری میں آگاہی تقریبات منعقد ہو چکی ہیں جبکہ جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت یورپ کے چیئرمین اور ممتاز کمیونٹی رہنما راجہ نجابت حسین کی معاونت سے کشمیر سنگھ نے برطانیہ کے دس سے زائد شہروں میں رابطے مکمل کر لئے ہیں جبکہ اگلے چند دنوں میں لندن،لیوٹن،سلائو اور سائوتھ آف انگلینڈ کے علاوہ نارتھ ویسٹ اور ایسٹ میں بھی رابطے کر کے دس جون کو خصوصی طور پر کشمیری اور پاکستانی کمیونٹی کی سالگرہ کے حوالے سے سرگرمیوں کو مربوط کر لیا جائے گا،راجہ نجایت حسین نے برطانوی حکومت کے متعدد وزرا کو بھی اس مہم سے آگاہ کیا ہے جنہوں نے برطانوی معاشرے اور ملک کی ایسی قومی تقریبات میں مسلمانوں کی شرکت کو نیک قرار دیا ہے،یورپی پارلیمنٹ کے سلامتی اور دفاع کے وائس چیئرمین اور شوشلسٹ گروپ کے یورپی مسلمانوں کے نمائندے افضل خان ایم ای پی نے اس مہم میں سب سے پہلے تعاون کر کے نارتھ ویسٹ کے دیگر ممبران پارلیمنٹ،علما اور کمیونٹی لیڈروں سے اپیل کی ہے کہ وہ دس جون کی ملکہ برطانیہ کی سالگرہ منا کر برطانیہ سے اپنی وابستگی اور اپنے ملک کے قومی اداروں میں فعال کر دار ادا کرنے کے عزم کا اظہار کریں جبکہ نارتھ ویسٹ کے متعدد ارکان نے بھی اس کی تائید کی ہے،یارکشائر سے کنزرویٹو یورپی ممبر پارلیمنٹ امجد بشیر نے نہ صرف خدمت سینٹر میں منعقدہ سالگرہ کی تقریب میں شرکت کی بلکہ بزنس اور کمیونٹی لیڈروں سے مشاورت کر کے یارکشائر کے مسلمانوں کی طرف سے10جون کی تقریبات خصوصاً بریڈ فورڈ کے پروگرام میں بھرپور تعاون کی یقین دہانی کرائی،لیڈز کے کونسلروں محمد رفیق،اصغر خان قریشی،غوثیہ مسجد آرملے کے صدر ارشد کھٹانہ اور مسلم کانفرنس برطانیہ کے نائب صدر سردار سہراب خان کے علاوہ مقامی سماجی رہنما آصف قریشی نے بھی اپنے شہر میں تقریبات میں معاونت کی یقین دہانی کرائی ہے،ایسٹ مڈ لینڈ سے برطانوی حکومت کی کاروبار کی وزیر اینا سوبری ایم پی،لارڈ میئر آف نوٹنگھم کونسلر محمد صغیر راجپوت،برکسٹو بار کونسل کی ڈپٹی میئر کونسلر حلیمہ خالد اور ڈربی کے کونسلر گلفراز نواز کے علاوہ سنی حریت کونسل برطانیہ کے سربراہ علامہ حافظ فضل احمد قادری نے بھی راجہ نجابت حسین اور کشمیر سنگھ کو مکمل تعاون اور تقریبات منعقد کروانے کے عزم کا اظہار کیا ہے،برمنگھم میں برٹش مسلم فورم کے علما اور مشائخ کے نمائندوں،کمیونٹی اور بزنس لیڈروں کے علاوہ سکولں کی ہیڈ مسٹریس اور والسل کے رہنمائوں راجہ فضل الرحمان اور راجہ راجہ شوکت علی نے بھی اس مہم کو کامیاب کرانے کیلئے تمام مسلمانوں سے تعاون کی اپیل کی جبکہ ملک بھر میں ملکہ کے نمائندوں لارڈ لیفٹیننٹ اور ڈپٹی لارڈ لیفٹیننٹ کے دفاتر بھی کشمیر سنگھ کی اس مہم میں بھرپور معاونت کر رہے ہیں تاکہ ملکہ کی اس سالگرہ کی مناسبت سے تمام کمیونٹیز کو مل جل کر کام کرنے کا موقع مل سکے،ون بریٹن ون نیشن برطانیہ کے چیف ایگزیکٹو کشمیر سنگھ نے برطانیہ میں بسنے والے تمام تارکین وطن خصوصاً ایشیائی کمیونٹی سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ ہر شہر میں دس جون کو اپنے ٹائون ہال،مسجد اور کمیونٹی سینٹر کے علاوہ مقامی سکولوں میں دن کے گیارہ بجے ملکہ کو سالگرہ کی مبارکباد دینے کیلئے اکٹھے ہوں اور سکولوں اور مساجد میں خصوصی دعائیں کر کے ملکہ کی صحت اور درازی عمر کے علاوہ قومی ترانے مل کر گائیں اور برطانیہ کی فلاح و بہبود میں ہمارے بزرگوں اور برطانیہ میں بسنے والے تمام عوام کی طرف سے اپنے سچے برطانوی ہونے کا ثبوت دیں،ممتاز کشمیری رہنما راجہ نجابت حسین نے کشمیر سنگھ کی مہم کو تمام برطانوی عوام کی مہم قرار دیتے ہوئے اپنے ہم وطنوں سے اپیل کی کہ وہ اب اس ملک کے شہری ہیں ہماری فلاح و بہبود اور بچوں کا مستقبل اس ملک کے ساتھ وابستہ ہے اور مقامی کمیونٹی کے ساتھ جہاں ہم سیاست میں ایک فعال کردار ادا کر رہے ہیں وہاں یہاں کی قومی تقریبات کو بھی اپنی تقریبات کا حصہ بنا کر ایک سچے شہری ہونے کا ثبوت دے سکتے ہیں،راجہ نجابت حسین نے اس موقع پر خصوصی طور پر کشمیری تنظیموں،خواتین رہنمائوں،علمائے کرام اور کونسلروں سے اپیل کی ہے کہ وہ ان تقریبات کے انعقاد میں ہر سطح پر تعاون بھی کریں اور خود بھی تقریبات منعقد کریں۔بیورو رپورٹ:فیاض بشیر