مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ایشیائی کمیونٹی برطانوی افواج میں شرکت کرکےاستفادہ حاصل کرے:پینی مورڈنٹ ایم پی
بریڈ فورڈ:برطانیہ میں بسنے والے تارکین وطن کی نئی نسل کو مقامی پولیس اور افواج سمیت تمام حکومتی اداروں میں بھرتی ہو کر اس ملک کی بقاء اور استحکام میں متحرک کردار ادا کرنا چاہئے،برطانیہ سب کا ملک ہے جس کے دفاع اور فلاح و بہبود کیلئے ہمیں مل جل کر کام کرنا ہو گا،برطانیہ کی افواج میں شرکت کے بہت فوائد ہیں ایشیائی کمیونٹی اس سے استفادہ حاصل کریں، ان خیالات کا اظہار برطانوی وزیر برائے آرمڈ سروسز پینی مورڈنٹ ایم پی نے دورہ کیتھلے کے دوران جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت یورپ کے چیئرمین راجہ نجابت حسین اور سابق پارلیمانی امیدوار محمد بوٹا ہیری سے ملاقات کے موقع پر کیا جبکہ کیتھلے سے کنزر ویٹو ممبر پارلیمنٹ اور برطانوی پارلیمنٹ میں ملکہ برطانیہ کے وائس چیمبر لین کرس ہو پکنز بھی موجود تھے،دونوں حکومتی ارکان نے اس بات پر زور دیاکہ ایشیائی نوجوانوں کو برطانوی معاشرے اور حکومتی اداروں کے ہر شعبے میں شامل ہوکر اس ملک کی ترقی میں اپنا حصہ ڈالنا چاہئے جس کیلئے کنزرویٹو پارٹی کی حکومت ہر سطح پر معاونت کرے گی،وزیردفاع پینی مورڈنٹ نے ایشیائی کمیونٹی کے اس ملک میں آمد اور ماضی کی عالمی جنگوں میں کردار پر بھرپور خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ برطانوی فوجوں میں انکا کردار مثالی تھا جس کی وجہ سے برطانیہ کو عالمی جنگوں میں فتح نصیب ہوئی اور ہم ان قربانیوں کو بھی کبھی نظر انداز نہیں کر سکتے اسی لئے ہم چاہتے ہیںکہ انکی یہاں پر بسنے والی نسلیں بھی افواج برطانیہ میں شامل ہو کر اعلیٰ پوزیشنوں پر ترقی بھی کریں،اس موقع پر کرس ہوپکنز ایم پی نے کہا کہ وہ بریڈ فورڈ اور کیتھلے کے نوجوانوں سے خصوصی اپیل کی کہ وہ سروسز اور قومی اداروں میں شامل ہوکر اس معاشرے میں اپنے بزرگوں کے کارناموں کی وجہ سے باعث فخر بنیں،انہوں نے کہا کہ وہ تمام حکومتی وزراء کو وقتاً فوقتاً کیتھلے اور پارلیمنٹ میں بلا کر مسلمان نوجوانوں اور مقامی کمیونٹی سے ملواتے رہیں گے تاکہ حکومت کے اعلیٰ ارکان سے مل کر ہم اپنے اپنے علاقے اور عوام کی ترقی کیلئے مل جل کر کام کر سکیں،اس سے قبل راجہ نجابت حسین نے وزیر دفاع سے کہا کہ وہ برطانیہ بھر میں ایک منظم چلا کر ایشیائی نوجوانوں کو برطانوی افواج میں شمولیت پر آمادہ کریں اور اس سلسلے میں وہ اور انکی ٹیم ہر سطح پر تعاون کرے گی جبکہ برطانوی بحریہ کے ریٹائرڈ افسر محمد بوٹا ہیری نے کہا کہ وہ ایک سابق فوجی ہونے کی حیثیت سے حکومتی اداروں سے مل کر اپنے نوجوانوں کو راغب کرنے میں ایک موثر کردار ادا کر سکتے ہیں،دونوں رہنمائوں نے ارکان پارلیمنٹ کو مستقبل کے پروگراموں میں شرکت کی بھی دعوت دی۔بیورو رپورٹ:فیاض بشیر