مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
انڈونیشیا میں ہونے والا مس ورلڈ مسلمہ کا ٹائٹل نائجیریا کی عائشہ نے جیت لیا
جکارتہ... حسن کسی رنگ، نسل، ملک، مذھب یا زبان کا محتاج نہیں ہوتا اس کا عملی مظاہرہ دنیا نے صرف دو روز میں دیکھ لیا پہلے جب ایک سیاہ فام لڑکی مس امریکہ بنی اور دوسری بار جب انڈونیشیا کے دارالحکومت جکارتہ میں مسلمان خواتین کے مقابلہ حسن میں نائنجیریا کی21 سالہ عائشہ اجیبولا نے مسلم مس ورلڈ کا ٹائٹل حاصل کیا..ججز کے پینل نے نمبر ون پوزیشن کے لئے اس کا نام پکارا تو اس نے فرط جذبات سے قران پاک کی آیت پڑھی انعام کے طور پر عائشہ کو ٢٢٠٠ ڈالر نقد کے علاوہ عمرہ کی سعادت حاصل ہوئی .. اس مقابلے میں کامیابی سے پہلے اس نے ایک بیان میں کہا تھا کہ وہ دنیا کو یہ دکھانا چاہتی ہیں کہ اسلام خوبصورت ہے۔ مسلم خواتین کے مقابلہ حسن میں شرکت کیلئے پہلے آن لائن مہم شروع کی گئی جس میں 500 سو سے زيادہ لڑکیوں نے شرکت کی۔ اس میں سے فائنل مقابلے کیلئے 20 خواتین کو منتخب کیا گیا۔ اس مقابلے کے دوران آخری مرحلے کی خواتین نے اسلامی فیشن کا مظاہرہ کرتے ہوئے مذہبی اقدار کی اہمیت کو اجاگر کیا۔ اس مقابلے میں حصہ لینے والی تمام خواتین کیلئے حجاب پہننا لازمی تھا۔ مقابلے میں ایران، بنگلہ دیش، ملائیشیا، نائیجیریا اور برونئی سے خواتین نے حصہ لیا۔ فائنل مقابلے کے لئے شرکاء کو مذہبی تربیت دی گئی جس میں علی الصبح اٹھ کر باجماعت نماز ادا کرنا اور پھر قرآن کی تلاوت شامل تھی۔