مقبول خبریں
یورپین اسلامک سنٹر اولڈہم میں مسجد خضرا کی تزئین وآرائش کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر
پاکستان اور بھارت میں واقعی برابری کہاں ؟ ایک طرف محبت دوسری طرف نفرت
نوازشریف کی طرح باقی قیدیوں کوبھی علاج معالجے کیلئےرہا کیا جائے
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
حلقہ ِ ارباب ِ ذوق کے ادبی پروگرام میں پاکستانیوں اور کشمیری کونسلرز کی بڑی تعداد میں شرکت
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
اینڈریو سٹیفن سن سے راجہ نجابت حسین اور سردار عبدالرحمٰن کی ملاقات
سہمے ہوئے لوگوںسے بھی خائف ہے زمانہ
پکچرگیلری
Advertisement
برطانیہ میں پاکستانی سفارتی عملہ درست طور پر فرائض انجام نہیں دے رہا ، لارڈ مئیر شفیلڈ
لوٹن . . . یوکے شیفلڈ کے لارڈ میئر طالب حسین نے کہا کہ برطانیہ میں پاکستانی سفارتی عملہ صحیح کام نہیں کر رہا۔ ان خیالات کا اظہار گزشتہ روز نیشنل پریس کلب کے پروگرام میٹ دی پریس میں صحافیوں سے گفتگو کے دوران کہا کہ برطانیہ میں سفارتی کمیونٹی صحیح طرح کام نہیں کررہی، انہیں چاہیے کہ وہ بزنس اور سرمایہ کاری کیلئے راہ ہموار کریں اور مسئلہ کشمیر کو اجاگر کریں۔ لارڈ میئر نے کہا کہ پاکستانی ویزاپراسیس ایک پرائیویٹ کمپنی کے پاس ہے جو بہت مشکل ہے ۔ ویزا پراسیس میں آسان پالیسی کی ضرورت ہے اور ڈپلومیٹک کمیونٹی کو چاہیے کہ تجارت اور سرمایہ کاری کو فروغ دینے کیلئے اپنی کوششیں اس طرح کرے جیسے بھارت وہاں کام کررہا ہے ۔ بھارت نے سٹیل اور آٹو موبائل میں بہت زیادہ سرمایہ کاری کی ہے اور اس سے وہ کثیر زرمبادلہ کماتے ہیں۔ یو کے میں مسلمان اور بالخصوص پاکستانیوں میں اتحاد اور یکجہتی کی ضرورت ہے تاکہ مسئلہ کشمیر اور دیگر مسائل کو بہتر طریقے سے حل کیا جا سکے ۔ بھارت کی بھرپور کوشش ہے کہ مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ کے ایجنڈے سے ہٹا دیا جائے اور وہ ہر سال یہ کوششیں کرتے ہیں۔ پاکستان کو برطانیہ میں بہترین سفارتکاری کی ضرورت ہے۔