مقبول خبریں
جموں کشمیر نیشنل عوامی پارٹی برطانیہ برانچ کے زیرِ اہتمام فکر مقبول بٹ شہید ورکز یونیٹی کنونشن کا انعقاد
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
ہم دھوپ میں بادل کی، درختوں کی طرح ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
تحریک حق خود ارادیت یورپ کے زیر اہتمام خصوصی نشست‘ مشیر حکومت آزاد کشمیر کی شرکت
نوٹنگھم:برطانوی حکومت اور یورپی یونین کشمیری عوام کو حق خود ارادیت دلوانے کیلئے رائے شماری کروانے میں اپنا کردار ادا کریں،اگر سکاٹ لینڈ اور برطانوی عوام کے ریفرنڈم کیلئے ڈیوڈ کیمرون اعلان کر سکتے ہیں تو بھارت کشمیریوں کو رائے شماری کا موقع کیوں نہیں دیتا،حق خود ارادیت ہر انسان کا بنیادی حق ہے جس کیلئے فرینڈز آف کشمیر یورپی یونین اور پارلیمنٹ میں اپنی کوشش جاری رکھیں گے،تحریک حق خود ارادیت کی برطانیہ اور یورپی پارلیمنٹ میں سرگرمیاں مسئلہ کشمیر کے حل اور سفارتی محاذ پر کوششیں بارآور ہونگی،آزاد کشمیر کے وزیر اعظم چوہدری عبدالمجید اور انکی پوری ٹیم آزاد کشمیر میں تعمیر و ترقی جبکہ بیرون ملک مسئلہ کشمیر کو اجاگر کرنے والی تنظیموں اور شخصیات سے بلا امتیاز سیاسی وابستگی تعاون جاری رکھے گی اور ہم برطانوی اور یورپی پارلیمنٹ میں متحرک کشمیر دوست ارکان کے بھی مشکور ہیں جو کشمیریوں کی آواز بن کر عالمی سطح پر مسئلہ کشمیر اٹھا رہے ہیں،برٹش کشمیریوں کا یہاں کے اعلیٰ عہدوں اور مقامی سیاست میں شمولیت سے بھی مسئلہ کشمیر کو تقویت مل رہی ہے،برطانیہ میں پیدا ہونے والے کشمیری مقامی سیاست میں شامل ہو کر اپنے وطن کی آزاد ی میں اپنا حصہ ڈالیں،ان خیالات کا اظہار مقررین نے جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت یورپ کے زیر اہتمام نوٹنگھم میں ممبران پارلیمنٹ،سیاسی و سماجی ا ور تحریکی رہنمائوں کے علاوہ آزاد کشمیر سے آئے ہوئے وزیر اعظم آزاد کشمیر کے مشیر راجہ شوکت خالق اورNGOSکی رابطہ کونسل کے سیکرٹری جنرل چوہدری اظہر محمود نے ایک خصوصی نشست میں کیا جس کی صدارت تحریک کے چیئرمین راجہ نجابت حسین نے کی جبکہ اس موقع پر یورپی پارلیمنٹ میں لیبر گروپ لیڈر اور فرینڈز آف کشمیر کی شریک چیئر پرسن ڈیم گلینس ویلموٹ ایم ای پی،شیڈو سیکرٹری آف سٹیٹ برائے نارتھ آئر لینڈ ورنن کوکر ایم پی،نوٹنگھم کے شیرف کونسلر محمد صغیر راجپوت،ڈپٹی شیرف کونسلر شاہد چوہدری،پیپلز پارٹی برطانیہ کی ایڈہاک کمیٹی کے صدر سید حسن بخاری،سنی حریت کونسل کے سربراہ حافظ فضل احمد قادری،نوٹنگھم کے سابق لارڈ میئر کونسلر گلنواز خان،وزیر اعظم آزاد کشمیر کے مشیر سردار عبدالرحمان خان،صدر آزاد کشمیر کے مشیر راجہ ایوب خان،برٹش کشمیری وومن کونسل کی چیئر پرسن رعنا شمع نذیر،کونسلر نگہت خان،تحریک کے سیکرٹری جنرل محمد اعظم،مسلم لیگ ن کے رہنما راجہ عبدالحمید،حلال گوشت مہم کے محمد سلیم،لیبر پارٹی نوٹنگھم کے رہنما ساجد محمود،جیکی کوکر،ٹیڈ ویلموٹ اور دیگر رہنمائوں نے شریک ہو کر اپنے اپنے نکتہ نظر سے ممبران پارلیمنٹ کو آگاہ کیا،تقریب میں اظہار خیال کرتے ہوئے ڈیم گلینس ویلموٹ ایم ای پی نے کہا کہ دنیا کے بدلتے ہوئے حالات کی وجہ سے جہاں عالمی برادری مسئلہ کشمیر پر کم توجہ دے رہی ہے وہاں ہم تحریکی عہدیداروں سے مل کر یورپی پارلیمنٹ میں ہر اہم کشمیری قومی دن پر آواز بلند کر کے بھارت کی طرف سے مقبوضہ کشمیر میں ہونے والی انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں سے دیگر یورپی ممالک کے ارکان کو آگاہ کرتے ہیں اور جون میں ہونے والے ریفرنڈم مہم کے دوران بھی برطانوی حکومت سے مطالبہ کریں گے کہ وہ بھارت پر اپنا دبائو بڑھائیں کہ وہ مسئلہ کشمیر کے پر امن سیاسی حل اور اقوام متحدہ کے چارٹر کے مطابق کشمیری عوام کو انکے حقوق دے تاکہ کشمیری عوام بھی ہماری طرح ایک آزاد قوم کی حیثیت سے اپنے وطن میں رہ کر وہ زندگی گزار سکیں،انہوں نے تحریکی عہدیداروں کی طرف سے مسلسل رابطوں اور انکی خوشی میں شامل ہو کر استقبالیہ دینے پر شکریہ ادا کیا اور کہا کہ وہ مستقبل قریب میں کشمیر دوست ارکان سے مل کر یورپی پارلیمنٹ میں مسئلہ کشمیر پر تفصیلی بحث کیلئے اقدامات کریں گی مگر یورپ کے دیگر ممالک میں بسنے والے کشمیری برطانوی ممبران پارلیمنٹ کے علاوہ جرمنی، فرانس سمیت دوسرے ارکان کی حمایت کے بغیر مسئلہ کشمیر پر موثر پیش رفت ممکن نہیں،اس موقع پر گلینس ویلموٹ نے کشمیری اور پاکستانی کمیونٹی سے اپیل کی کہ وہ یورپی ریفرنڈم مہم میں بھرپور حصہ لے کر جہاں اس ملک کے نظام میں شمولیت کریں وہاں برطانوی سیاسی جماعتوں سے حمایت بھی حاصل کریں،لیبر پارٹی کے مرکزی رہنما اور شیڈو سیکرٹری برائے ناردرن آئر لینڈ ورنن کوکر ایم پی نے کہا کہ وہ گزشتہ دس سال سے مسلسل تحریکی رہنمائوں سے پارلیمنٹ کے اندر اور نوٹنگھم میں رابطے میں ہوں اور جب تک کشمیری عوام کو حق خود ارادیت نہیں مل جاتا اپنی معاونت اور حمایت جاری رکھوں گا،انہوں نے کہا کہ اگر ناردرن کا مسئلہ مذاکرات سے حل ہو سکتا ہے تو کوئی وجہ نہیں کہ ریاست جموں و کشمیر کے عوام کو حق خود ارادیت نہ مل سکے مگر اس کیلئے تینوں فریقوں بھارت،پاکستان اور کشمیریوں کو مل جل کر کردار ادا کرنا ہو گا،تحریک کے چیئرمین راجہ نجابت حسین نے گلینس ویلموٹ کو ملکہ برطانیہ کی طرف سے ملنے والے اعزاز پر کشمیری قوم کی طرف سے مبارکباد پیش کی جبکہ وزیر اعظم آزاد کشمیر چوہدری عبدالمجید کی طرف سے وزیر اعظم کے مشیر راجہ شوکت خالق اور سردار عبدالرحمان خان نے خصوصی شیلڈ پیش کی، اس موقع پر آزاد کشمیرNGOSکے سیکرٹری چوہدری اظہر محمود نے کشمیری نژاد نوٹنگھم کے شیرف کونسلر محمد صغیر راجپوت کو پھول پیش کئے۔بیورورپورٹ:فیاض بشیر