مقبول خبریں
مکس مارشل آرٹ کونسل اور چیریٹی آرگنائزیشن کے زیر اہتمام تقریب کا انعقاد
بریگزیٹ بحران :کنزرویٹو پارٹی کی تین خواتین ممبر کی آزاد گروپ میں شمولیت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
مسلم گھرانے میں آگ لگانے کے الزام میں ایک اور نوجوان گرفتار، تعداد پانچ ہو گئی !!
لیسٹر...مسلم گھرا نے میں آگ لگانے کے الزام میں پولیس نے تفتیش کے دوران ایک اورشخص کو گرفتار کرلیا ہے اسطرح اب تک گرفتار ہونے والوں کی تعداد پانچ ہو گئی ہے پراسرار آگ لگنے سے ماں، دو بیٹیاں اور بیٹا ہلاک تھے ، بدقسمت خاندان کچھ عرصہ قبل ہی ڈبلن سے لیسٹر شفٹ ہوا تھا، تفصیلات کے مطابق وڈ ھل لیسٹر کے مکان میں لگنے والی آگ جس میں اسکول ٹیچر شہلا توفیق اور اس کے تین بچے جل کر ہلاک ہو گئے کے بارے میں علاقہ مکین برملا شک کا اظہار کر رہے بھی تھے کہ اس کا تعلق چند روز قبل ہونے والے قتل کے واقعے سے ہو سکتا ہے جس میں ایک ٢٠ سالہ نوجوان انتواین اکپون جو کہ ایک فٹبال کلب کا کوچ تھا مار دیا گیا تھا..ہلاک ہونے والے انٹوین کے رشتہ داروں نے اس خدشے کے پیش نظر کے ممکن ہے وہ کسی انتقامی کارروائی کا نشانہ بنے ہوں توفیق کے خاندان سے تعزیت کا اظہار بھی کیا۔علاقے کے اسسٹنٹ چیف کانسٹیبل راجر بینسٹرکا کہنا ہے کہ لیسٹر شائر پولیس وقوعے کو شک کی نگاہ سے دیکھ رہی ہے بدقسمت خاندان کے سربراہ ڈاکٹر محمد توفیق بیمونٹ ہسپتال ڈبلن میں نیورو سرجن ہیں ان کا کہنا ہے کہ ان کی تو کسی سے کوئی لڑائی نہ تھی قتل کے وقوعے بارے انھیں یہاں آکر پتہ چلا، صدمے سے نڈھال ڈاکٹر توفیق کا کہنا تھا کہ انھیں اب تک یقین نہیں آرہا کہ ان کے ساتھ اتنا بڑا سانحہ ہو چکا ہے..مقامی ممبر پارلیمنٹ کیتھ واز نے بھی فوری طور پر جائے وقوعہ کا دورہ کیا اور مسلم کمیونٹی سے گھل مل کر تمام تفصیلات حاصل کیں انھیں بتایا گیا کہ جس گھر میں آگ لگی اس سے چند میٹر کے فاصلے پر نوجوان کا قتل ہوا اور لگتا ہے کہ بدلے کی آگ میں غلط گھر کو جلا دیا گیا .. کیتھ واز ایم پی نے بدقسمت باپ سے اظہار ہمدردی کرتے ہووے کمیونٹی کو کسی بھی جذباتی اقدام سے گریز کرنے کی ہدایات دیں..دریں اثنا پاکستان تحریک انصاف برطانیہ کے رہنما صاحبزادہ جہانگیر نے اس اندوہناک سانحے پر دلی رنج کا اظہار کرتے ہووے کہا کہ ابھی چند روز قبل ہی وہ فوزیہ قصوری اور امجد خان کے ہمراہ اس علاقے کے دورے پر تھے اور انتہائی خوشگوار یادیں لیکر واپس لوٹے تھے انہوں نے کہا کہ وو پولیس سے درخواست کرتے ہیں کہ اس وقوعے کی مکمل غیر جانبدار انکوائری کروا کر اس درندہ صفت انسان کو انصاف کے کٹہرے میں لائیں جس نے یہ انسانیت سوز عمل کیا ہے انہوں نے ڈاکٹر توفیق سے بھی دلی ہمدردی کا اظہار کیا ...