مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
اقتصادی شرح نمو میں کمی کے باوجود چین میں ارب پتی افراد کی تعداد میں اضافہ ..!!
بیجنگ...معاشی ترقی کی منازل تیزی سے طے کرتے چین میں ارب پتی افراد کی تعداد 300 سے زائد ہو گئی ہے۔ یہ اعداد و شمار بیجنگ میں ایک میگزین نے شائع کیے ہیں۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ چین میں مالدار افراد کی فہرست کے مطابق 2013ء میں ملک میں ارب پتی افراد کی تعداد 315 ہو گئی ہے۔ رپورٹ کے مطابق ملک میں پہلی مرتبہ ارب پتی افراد کی تعداد 300 سے زائد ہوئی۔ اس عرصہ میں چین میں اقتصادی شرح نمو میں کمی کے باوجود یہ اعداد و شمار مثبت رحجان کو ظاہر کرتے ہیں۔ چین میں اقتصادی ترقی کی جس رفتار کی توقع کی جا رہی ہے، وہ حاصل ہو گئی تو ارب پتی افراد کی تعداد میں مزید اضافہ ہو سکتا ہے۔ رپورٹ کے مطابق آمدن کا بڑا ذریعہ جائیداد کی خرید و فروخت ’رئیل اسٹیٹ‘ کی صنعت تھی، جس کی قیمت میں حال ہی میں تیزی آئی ہے۔ اعداد و شمار میں ’رئیل اسٹیٹ ڈویلپر‘ وینگ جینلین کا نام شامل ہے جو چین کی سب سے مالدار شخصیت ہیں اور اُن کی دولت لگ بھگ 22 ارب ڈالر ہے۔