مقبول خبریں
موومنٹ فار دی رائٹس اوورسیز پاکستانیز کے زیر اہتمام ڈوئل نیشنل کو عزت دو بارے تقریب کا اہتمام
جمہوریت کی مضبوطی کیلئے جمہوری قوتوں کو مضبوط ہونا پڑے گا: سابق چیر مین سینٹ رضا ربانی
دورے پرحکومت پاکستان،حکومت آزاد کشمیر اور راجہ نجابت کی معاونت کے مشکور ہیں:کرس لیزے
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
یورپ میں مسئلہ کشمیر کو مزید تیزی سے اجاگر کیا جائے گا: تحریک حق خودارادیت
زمین پر دیوار چین
پکچرگیلری
Advertisement
مشرقی لندن میں کیئر لنک ایسوسی ایشن آف سینئر سٹیزنز یوکے کا اجلاس و مشاعرہ
لند ن:کیئر لنک ایسوسی ایشن آف سینئر سٹیزنز یوکے کا اجلاس ایسٹ لندن میں منعقد ہوا ۔ درسِ قرآن سے پروگرام کا آغاز اسلم رشید نے پیغامِ الٰہی کی روشنی میں کہا کہ ہمیں اپنی دنیا اور آخرت کی بھلائی کی خاطر قرآن حکیم سے اپنے رشتے کو مضبوط کرنے کی ضرورت ہے ۔ روزانہ اپنے گھروں میں اہل و عیال کے ساتھ قرآن کی تلاوت کریں ۔ محمد اسلم چغتائی ، فضل حسین ، یونس ڈویا اور محمد یوسف شیخ نے اپنی اپنی باری پر نعتِ رسول ﷺ سنا کر حاضریں کو مخظوظ کیا ۔ پروفیسر شاہد اقبال نے اپنے خطبہء استقبالیہ میں مہمانوں کا تعارف کرایا اور ڈاکٹر رحیم اللہ شادؔ کی کتاب بارے خیالات کا اظہار کر تے ہو ئے کہا کہ ڈاکٹر رحیم اللہ شادؔ ایک درویش صفت انسان ہیں ۔ ان کی شاعری میں خدا اور اس کے رسول ﷺ کی محبت صاف چھلکتی ہے ۔ مہمانِ خصوصی پیر محمد شاہ کاظمی نے کتا ب کی تقریبِ رونمائی کی ۔ سوشل ورکر سید محسن زیدی نے مسلمانوں سے اپیل کی کہ مسلمان یتیم بچوں کی دیکھ بھال کی اہمیت اور ضرورت پہلے سے بھی زیادہ ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ایک مسلمان بچے کی دیکھ بھال کے لیئے ساڑھے پانچ سو پونڈ فی ہفتہ اور مفت ٹریننگ بھی ملے گی ۔دوسری نشست میں مشاعرے کا آغاز پروفیسر شاہد اقبالؔ نے اپنے کلام سے کیا ، اُن کے بعد محمد اسلم چغتائیؔ ، اسلم رشید اسلمؔ ، اقبال گل ؔ ، نجمہ شاہینؔ ، فیض اللہ خان ٹونکی اور امجد مرزا امجدؔ نے باری باری اپنے کلام پیش کیئے اور دادِ تحسین وصول کی ۔تنظیم کے ایگزیکٹو بوستان خان نے اپنی سریلی آواز میں کلامِ اقیالؒؔ پیش کر کے سامعیں کی روحانی کیفیت کو اجاگر کر دیا اور خوب داد وصول کی ۔ڈاکٹر اصغر بٹ نے صحت کے شعبے کے متعلق اپنی خصوصی ٹرینگ اور برطانیہ میں اعزازات کے حصول کا ذکر کرتے ہوئے اپنی خدمات کو اُن لوگوں کے لیئے پیش کرنے کا اعلان کیا جو عوام کی بھلائی کے لیئے صحتِ عامہ کی خاطر کوئی پروجیکٹ شروع کرنا چاہتے ہیں ۔تنظیم کے رُکن محمد اشرف حکیم نے کہا کہ ہم سب کو مل جل کر کام کرنے کی ضرورت ہے اور اپنے علم اور تجربات کو فلاحی کاموں کے لیئے پیش کرنا ہو گا تبھی ہم ایک کامیاب قوم بن کر ابھریں گے ۔ تنظیم کے سینئر نائب صدر ڈاکٹر ظفر علی چوہدری نے اپنے خطاب میں کہا کہ خامیاں اور خوبیاں ہر کسی میں پائی جاتی ہیں ، ہمیں انسانوں کی خوبیوں کو تلاش کرنا ہے ۔ چھوٹی چھوٹی غلطیاں در گزر کر کے اعلیٰ مقاصد کو حاصل کرنے کے لیئے معاف کرنے کا جذبہ پیدا کرنا چاہئے ۔ ہم اس ملک کے شہری ہیں لہذا ہمیں اپنے کردار اور قول و فعل سے اپنی شناخت اور اپنے دین کی عظمت کو بڑھاوا دینا ہو گا ۔سابق مئیر ہیکنی اور سکرٹیری کیئر لنک ٹرسٹ یو کے فیض اللہ خان نے علامہ اقبالؒ ؔ کی طویل نظم ’’ تصویرِ درد ‘‘ کو ترنم کے ساتھ پیش کیا ۔سابقہ مئیر مسز مہر خان نے کراچی میں قائم اپنے سکول کی کارکردگی پر روشنی ڈالی ڈلتے ہو ئے کہا کہ اس سکول میں غریب بچے اعلیٰ معیار کی تعلیم حاصل کر رہے ہیں ۔ ان کی وردی ، صفائی اور بول چال سے لگتا ہے کہ وہ کسی اونچے درجے کے پرائیویٹ سکول کے طالب ِ علم ہیں ڈاکٹر رحیم اللہ شادؔ نے اپنی کتاب کے بارے میں کہا کہ الحمدُللہ والتھم سٹو اور کچھ دوسری تنظیموں نے ان کی کتاب ’’ کلامِ عرفان ‘‘ کو اپنے نصاب اور لائبریریوں میں شامل کرنے کی خوشخبری دی ہے ۔کیئر لنک ٹرسٹ کے چیئرمین رفعت لودھی نے کیئر لنک ٹرسٹ کے اغراض و مقاصد پر روشنی ڈالی ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا دین ہمیں سکھاتا ہے دوسروں کی کیئر کرنی ، دیکھا بھال کرنی اور ضرورتمندوں کی جائز و بنیادی ضرورتوں کو پورا کرنا ۔ اگر مستحق لوگوں کی جائز ضرورتیں کو پورا نہیں کریں گے تو وہ مایوس ہو کر غلط لوگوں کے ہاتھ چڑھ جائیں گے اور اللہ ہمیں پوچھے گا ۔ مہمانِ خصوصی پیر محمد شاہ کاظمی نے انسان کی بھلائی اور زندگی کے مقاصد کے بارے میں قرآنی آیات کا حوالہ دیا ۔ انہوں نے کہا انسان کو پیدا اسی لیئے کیا گیا ہے کہ وہ خدا کو راضی کرے اور خدا کی مخلوق کا خیال رکھے ۔پروگرام میں نجمہ شاہیںؔ ، لطیف منہاس ، مرزا خان راجہ ، اختر بٹ ، استاد نعیم سلہریا ، ایڈوکیٹ ظفر اقبال ، نظیر بٹ ، عمران اور ابرار احمد خان نے بھی ا پنے ا پنے خیا لا ت کا بھی ا ظہا کیا۔