مقبول خبریں
پاکستانی کمیونٹی سنٹر اولڈہم میں بیڈمنٹن ٹورنامنٹ کا انعقاد، برطانیہ بھر سے 20 ٹیموں کی شرکت
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
ہم دھوپ میں بادل کی، درختوں کی طرح ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
معاشی ترقی کیلئے پاکستان ملائیشین ماڈل پرعمل کرے گا ، وزیر اعظم کی کابینہ اجلاس میں منظوری
اسلام آباد ...ملائیشین وزیر اعظم کے دفتری امور کے وزیر داتو سری ادریس جالا نے پاکستان کی وفاقی کابینہ کے اجلاس میں خصوصی دعوت پر شرکت کر کے اپنے ملک کی اقتصادی ترقی کے منصوبوں سے متعلق تجربات پر وفاقی کابینہ کو بریفنگ دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ملائیشیا کی حکومت نے اپنے وسیع اسٹریٹجک منصوبوں کے اندر رہتے ہوئے قلیل المدتی پروگرام ترتیب دیے ہیں اور ان کی تکمیل کے لیے ایک مدت مقرر کی گئی ہے۔ داتو سری ادریس کے مطابق ان منصوبوں سے نمایاں اقتصادی بہتری آئی ہے اور اس بارے میں نجی و سرکاری شعبے کی شمولیت سے پالیسیاں ترتیب دی گئیں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مقامی اور غیر ملکی سرمایہ کاروں کو راغب کرنے کے لیے اس سارے عمل کو انتہائی سہل رکھا گیا۔ سرکاری بیان کے مطابق پاکستانی وزیر اعظم میاں نواز شریف نے ملائیشیا کی اقتصادی ترقی کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان ملائیشیا کی حکومت کے ساتھ قریبی تعلقات قائم کر کے ان کے تجربات سے مستفید ہونا چاہتا ہے۔ نواز شریف نے کہا کہ پاکستان ملائیشیا کی کامیابی کی داستانوں سے سیکھ کر انہیں پاکستان میں دہرا سکتا ہے۔ اقتصادی تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ اگر موجودہ حکومت اقتصادی بہتری کے لیے سنجیدگی سے ملائیشیا کے ماڈل پر عمل کرے تو اس کے بہتر نتائج سامنے آئیں گے۔ معروف اقتصادی تجزیہ کار ڈاکٹر فرخ سلیم کا کہنا ہے کہ ملائیشیا میں احتساب کمیشن اور انسداد بدعنوانی کی ایجنسی انتہائی فعال ہے، جو وہاں کے ترقیاتی ماڈل کی اہم وجوہات ہیں۔ ماہرین کے مطابق پاکستان میں تقریباً 200 کے قریب ایسے سرکاری ادارے اور کارپوریشنز ہیں، جو ماہانہ اربوں روپے کے خسارے میں ہیں۔ وزیر اعظم نواز شریف نے کابینہ کے خصوصی اجلاس سے اپنے خطاب میں کہا کہ کرپشن اور ناقص کارکردگی نے قومی ایئرلائن پی آئی اے سمیت دیگر اداروں کو اربوں روپے کا نقصان پہنچایا ہے، پی آئی اے میں کرپشن اور بدانتظامی کے سبب 3.3 ارب روپے کا ماہانہ نقصان ہو رہا ہے۔ نواز شریف کا کہنا تھا کہ جلد ہی پاکستان کا ایک اعلی سطحی وفد ملائیشیا کا دورہ کرے گا تا کہ دونوں ممالک کے درمیان مختلف شعبوں خصوصا معیشت کے شعبے میں تعلقات کو مضبوط کیا جاسکے۔ نواز شریف نے اپنے ملائیشین ہم منصب کو بھی دورہ پاکستان کی دعوت دی ہے۔