مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ارکان پارلیمنٹ ڈیوڈ کیمرون کو مسئلہ کشمیر کو اٹھانے کیلئے مجبور کریں: تحریک حق خود ارادیت یورپ
لیڈز :بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کے دورہ برطانیہ میں کشمیر دوست ارکان پارلیمنٹ اور حکومتی ارکان مسئلہ کشمیر کے حل اور مذاکرات کی بحالی کریں گے جبکہ برطانوی پارلیمنٹ میں بحث کیلئے برطانوی اور یورپی ارکان پارلیمنٹ کے تیس سے زائد ارکان کی جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت یورپ کے عہدیداروں اور معاونین کو حمایت کی یقین دہانی،9ستمبر کے کشمیر سیمینار میں نارتھ آف انگلینڈ کے متعدد ارکان سے تحریکی رہنمائوں نے ملاقات کر کے شرکت کی دعوت دی، جس میں شامل ہو کر ارکان برٹش کشمیریوں کا نکتہ نظر سن کر برطانوی حکومت کو خطوط بھی لکھیں گے،تحریک کے عہیدیدار دیگر کشمیریوں و پاکستانیوں کی معاونت سے ملک بھر میں متحرک ہو کر بھارتی عزائم کو بے نقاب کر رہے ہیں،برٹش کشمیری جہاں اپنے وطن کی آزادی کی جدو جہد کو عالمی سطح پر اجاگر کر رہے ہیں وہاں بیرون ملک کشمیریوں اور پاکستانیوں کو استحکام پاکستان اور دفاع پاکستان کیلئے کشمیری عوام کی قربانیوں سے بھی آگاہ کر رہے ہیں،ریاست جموں و کشمیر کی آزادی اور اسکی تحریک کی کامیابی کیلئے پاکستان کا مضبوط و مستحکم ہونا ضروری ہے جس کیلئے ریاستی عوام نے ہمیشہ ہر اول دستے کا کردار ادا کیا ہے اور آج یوم دفاع پاکستان کے موقع پر دوبارہ اس عزم کا اظہار کرتے ہیں کہ پاکستان کی سلامتی اور مضبوطی کیلئے ریاست کے دونوں اطراف کشمیری دفاعی لائن کا کردار ادا کرتے رہیں گے اور پاکستان کی معیشت کی مضبوطی کیلئے گلگت اور بلتستان و آذاد کشمیر کی عوام کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے،جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت یورپ کے عہدیداران راجہ نجابت حسین،سردار عبدالرحمان خان،محمد اعظم،امجد حسین مغل،معاونین کونسلر اصغر خان قریشی،کونسلر عاصم رشید،کونسلر ابرار حسین،خواتین رہنمائوں صبیحہ خان،عطرت علی،کلثوم اختر،ڈاکٹر تسلیم طارق کے علاوہ محمد بوٹا نے لیڈز،مانچسٹر،راچڈیل اور پڈسی کے ارکان پارلیمنٹ کو برٹش کشمیریوں کی طرف مسئلہ کشمیر پر مجوزہ بحث کیلئے لابی کرتے ہوئے برطانوی ارکان سے مطالبہ کیا کہ وہ وزیر اعظم ڈیوڈ کیمرون کو خط لکھ کر اپنے اپنے حلقے کے عوام کی طرف مسئلہ کشمیر کو نومبر میں نریندر مودی سے اٹھانے کیلئے مجبور کریں کیونکہ آج جو حالات مڈل ایسٹ اور افریقہ کے متاثرین اور مہاجرین کی وجہ سے یورپ بھر کیلئے لمحہ فکریہ بنے ہوئے ہیں،پاک بھارت تصادم کی صورت میں برصغیر کے تمام برطانوی شہریوں کے رشتہ دار اور خاندانوں کے حالات خراب ہو سکتے ہیں مسئلہ کشمیر دونوں ممالک کے درمیان انتہائی خطرناک صورت حال اختیار کر رہا ہے بھارت کشمیری لیڈروں اور عوام پر مظالم کے علاوہ جس انداز میں کنٹرول لائن پر مسلسل جنگ بندی کی خلاف ورزیاں کر رہا ہے عالمی برادری خصوصاً برطانیہ اور یورپ کو آگے بڑھ کر اس مسئلے کے حل میں اپنا کردار ادا کرنا چاہئے،تمام ارکان پارلیمنٹ جن میں لیڈز سے رچرڈ برگن،پڈسی سے سٹیورٹ اینڈریو،چیڈل مانچسٹر سے رکن پارلیمنٹ میری رابسن،راچڈیل کے ممبران پارلیمنٹ سائمن ڈینرک،لز میکنس اور اولڈہم کی ممبر پارلیمنٹ ڈیبی ابراہم نے بھی کشمیر پر بحث کروانے کیلئے تحریکی کاوشوں میں بھرپور معاونت کرنے اور اپنی طرف سے خطوط لکھنے کے عزم کا اظہار کیا ہے،تحریک کے مڈ لینڈ،لندن ریجن اور سائوتھ ویسٹ کے علاوہ ایسٹرن ریجن سے کشمیری و پاکستانی کونسلروں اور خواتین رہنمائوں نے یوم دفاع پاکستان کے اس موقع پر ریاستی عواک کی جدو جہد کو آگے بڑھانے اور سفارتی محاذ پر سرگرمیوں کو تیز کرنا شروع کر دیا ہے تاکہ9ستمبر کو زیادہ سے زیادہ ارکان پارلیمنٹ کشمیر سیمینار میں شرکت کر کے کشمیر پر متفقہ قرارداد پاس کر سکیں جسے16ستمبر کو فرینڈز آف کشمیر کے یورپی پارلیمنٹ میں سیمینار میں بھی پیش کر کے تحریکی عہدیدار اس مہم کو یورپی یونین میں بھی متعارف کروائیں گے۔بیور و رپورٹ:فیاض بشیر