مقبول خبریں
اولڈہم کے نوجوانوں کی طرف سے روح پرور محفل، پیر ابو احمد مقصود مدنی کی خصوصی شرکت
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
کنٹرول لائن پر امن کیلئےبرطانوی ارکان پارلیمنٹ اوربرٹش کشمیری رہنما مداخلت کریں
لندن ... آل پارٹیز پارلیمانی گروپ آن کشمیر اپنے اجلاس میں برطانوی وزیر خارجہ کو مدعو کرکے کشمیریوں کے جذبات سے آگاہ کرے.. کنٹرول لائن پر کشیدگی ختم کروانے کیلئے برطانوی ارکان پارلیمنٹ اور جموں کشمیر کے برٹش رہنما مداخلت کریں اور شام کی طرح مسئلہ کشمیر کو بھی عالمی مسائل میں اولیت دیکر بھارت اور پاکستان کو مذاکرات کی میز پر لائیں جن میں کشمیریوں کی شرکت کو بھی یقینی بنایا جائے۔ ان خیالات کا اظہار مقررین نے گزشتہ روز برطانوی پارلیمنٹ میں جموں و کشمیر تحریک حق خودارادیت یورپ کی ایماء پر بلائے گئے ایک خصوصی اجلاس میں ممبران پارلیمنٹ اور کشمیری رہنماؤں جن میں کشمیر پارلیمنٹری گروپ کے چیئرمین اینڈریو گرفتھس ایم پی، پاکستان پارلیمنٹری گروپ کے چیئرمین اینڈریو سٹیفسن ایم پی، سٹیو بیکر، ایم پی، جولی ہلنگ ایم پی، ڈیوڈ وارڈ ایم پی، مارکس جونز ایم پی، جین میکارٹنی ایم پی، تحریک کے چیئرمین راجہ نجابت حسین، مسلم کانفرنس برطانیہ کے صدر محمد بشیر رٹوی، لبریشن فرنٹ سفارتی ونگ کے سربراہ پروفیسر ظفر خان، مسلم لیگ ن یوتھ کے مرکزی چیئرمین ملک محمد حنیف، بیرسٹر شازیہ انجم، صبیحہ شہزاد، تھرڈ ورلڈ سالیڈیرٹی کے چیئرمین مشتاق لاشاری، مقبوضہ کشمیر کے رہنما پروفیسر شاہد اقبال، کاروان فکر کے شاکر قریشی، ہائی ویکمب سے میاں غلام رسول، لندن سے ظفر علی چوہدری، نارتھ ویسٹ سے تحریک کی رہنماؤں مونا آدم، آسیہ بانو اور امجد مغل نے اجلاس کی صدارت آل پارٹیز کشمیر پارلیمنٹری گروپ کے چیئرمین اینڈریو گرفتھس ایم پی نے کی۔ جبکہ تحریک کے چیئرمین راجہ نجابت حسین نے حاضرین کو کنٹرول لائن کی صورت حال پر بریف کیا اورحالات کو خطرناک قرار دیتے ہوئے برطانوی حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ جلد از جلد برٹش کشمیریوں کی درخواست پر مداخلت کریں۔ اینڈریو گرفتھس نے اپنے خطاب میں کشمیریوں کو یقین دلایا کہ وہ حال ہی میں گروپ کے چیئرمین بنے ہیں اور پورے گروپ کا لائحہ عمل طے کرکے کشمیری تنظیموں سے بھی رابطے میں رہیں گے، گروپ چیئرمین نے کہا کہ وہ بہت جلد اپنے دیگر ساتھیوں سے مل کر وزیر خارجہ سے بھی ملاقات کریں گے اور برٹش کشمیریوں کی نمائندگی کا حق ادا کریں گے اور 15 ستمبر کانفرنس میں بھی شرکت کریں گے۔ بولٹن سے ممبر پارلیمنٹ جولی ہلنگ نے کہا کہ کشمیریوں نے اپنے حقوق کیلئے بہت قربانیاں دی ہیں لاکھوں لوگوں کی قربانیوں کو عالمی برادری کے مہذب لوگ نظر انداز نہیں کر سکتے۔ بریڈفورڈ ایسٹ سے ممبر پارلیمنٹ ڈیوڈ وارڈ نے کہا کہ کشمیر گروپ اور کشمیری تنظیموں کو بھی کوشش کرکے اپنے اگلے اجلاس میں وزارت خارجہ کے نمائندے کو مدعو کرکے دو ایٹمی قوتوں کے درمیان جنگی صورت حال اور مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں پر ہونے والے مظالم سے آگاہ کرنا چاہئے۔ ہائی ویکمب سے کنزرویٹو ممبر پارلیمنٹ سٹیو بیکر نے کہا کہ کشمیریوں کو مزید متحرک کردار ادا کرنا ہوگا۔ ہڈرسفیلڈ سے ممبر پارلیمنٹ جیسن میکارٹنی نے کہا کہ وہ مسئلہ کشمیر اٹھائیں گے۔ ممبر پارلیمنٹ مارکس جونز نے کہا کہ برصغیر میں دو قوتوں نے مسئلہ کشمیر کو سیاسی فٹ بال بنایا ہوا ہے اورکشمیریوں سے کہا گیا وعدہ پورا کرنے میں ناکام ہوچکے ہیں۔ اس موقع پر پاکستان سے آئے ہوئے مسلم لیگ ن کے آزادکشمیر یوتھ ونگ کے چیئرمین ملک محمد حنیف نے تفصیل سے کنٹرول لائن پر ہونے والی فائرنگ اور کنٹرول لائن پر متاثرہ افراد کے بارے میں ممبران پارلیمنٹ اور کشمیری رہنماؤں کو بریف کیا۔ پروفیسر ظفر خان نے مسئلہ کشمیر کی افادیت، برطانوی حکومت کے کردار اور برٹش کشمیریوں کی حکمت عملی کے بارے میں ممبران پارلیمنٹ کو آگاہ کیا۔ مسلم کانفرنس برطانیہ کے صدر محمد بشیر رٹوی نے اپنی جماعت اور قائد سردار عتیق احمد خان کی طرف سے ممبران پارلیمنٹ اور کشمیری لیڈر شپ کو مکمل تعاون کا یقین دلایا۔