مقبول خبریں
مکس مارشل آرٹ کونسل اور چیریٹی آرگنائزیشن کے زیر اہتمام تقریب کا انعقاد
بریگزیٹ بحران :کنزرویٹو پارٹی کی تین خواتین ممبر کی آزاد گروپ میں شمولیت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
لاہورمیں نبوت کی جھوٹی دعویدار خاتون گرفتار، قبضے سے قبل اعتراض مواد بھی برآمد
لاہور...پاکستان میں ایک خاتون کو توہین اسلام کے الزام پر گرفتار کر لیا گیا ہے۔ چار بچوں کی ماں فاطمہ کو صوبہ پنجاب کے دارالحکومت لاہور میں گرفتار کیا گیا۔ پولیس کے مطابق خاتوں کو اس لئے بھی گرفتار کرنا ضروری تھا کہ لوگ مشتعل ہو کر اسے نقصان پہنچا سکتے تھےفاطمہ نامی عورت پر الزام لگایا گیا ہے کہ ناصرف اس نے نبوت کا جھوٹا دعویٰ کیا ہے بلکہ اس کے قبضے سے مذھب اسلام کے بارے میں قبل اعتراض مواد بھی ملا ہےسینئر پولیس اہلکار طارق عزیز نے کہا ہےکہ پولیس نے 40 سالہ سلمیٰ فاطمہ کو گرفتار کر کے توہین مذہب کے الزامات پر اسے جیل بھیج دیا۔ طارق عزیز کے مطابق ایک مقامی مولوی قاری افتخار احمد رضا نے اس خاتون پر توہین آمیز بیانات پر مبنی پمفلٹ تقسیم کروانے کا الزام لگایا ہے۔ جبکہ گلبرگ کی رہائشی اس خاتوں کے محلہ داروں کا کہنا ہے فاطمہ کی لوگوں کو تعویز بھی لکھ کر دیتی رہی ہے پولیس نے تفتیش کی غرض سے اس کے شوہر تنویر کو بھی گرفتار کیا ہوا ہے ..