مقبول خبریں
پاکستان میں صاف پانی کی سہولت کو ممکن بنانے کیلئے مختلف منصوبوں پر کام کرونگی:زارہ دین
پیپلزپارٹی کے رہنما ندیم اصغر کائرہ کی پریس کانفرنس ،صحافیوں کے سوالات کے جوابات دیئے
واجد خان ایم ای پی کا آزاد کشمیر سے آئے حریت کانفرنس کے رہنمائوں کے اعزاز میں عشائیہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے زیر اہتمام پہلی کشمیر کلچرل نمائش کا اہتمام
دسمبر بے رحم اتنا نہیں تھا!!!!!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
افغانستان میں تعینات نیٹو افواج کا جدید اسلحہ سمیت ساز و سامان پشاور کے بازاروں میں دستیاب
پشاور ... افغانستان سے اتحادی افواج کے انخلاء کے آغاز کے ساتھ ہی پشاور کی مارکیٹوں میں امریکی ساز و سامان بکنا شروع ہوگیا ہے۔ وہاں سے جدید اسلحے سے لےکر آرائش و زیبائش اور خورد ونوش کا غیر ملکی سامان خریدا جاسکتا ہے۔ پاکستان کے قبائلی علاقے خیبر ایجنسی کے سرحد پر واقع ’کارخانو مارکیٹ‘ کے نام سے غیر ملکی اشیاءکے لیے مشہور ستارہ مارکیٹ کی دو سو سے زیادہ دکانیں غیر ملکی اشیاء سے بھری پڑی ہیں۔ اس مارکیٹ میں سب سے زیادہ ڈیمانڈ سنائپر گن کی ہے، جس کے لیے لوگ ایڈوانس میں پیسے دیتے ہیں۔ یہ سنائپر بندوق زیادہ تر قبائلی علاقوں میں متحارب گروپ اور عسکریت پسند خریدتے ہیں۔ اس کے علاوہ اس بازار سے کلاشنکوف، نائٹ ویژن گلاسز، لیزرڈ گنز، جدید ترین پستول، چاقو، فوجی یونیفارم، سلیپنگ بیگز، اسلحے کے کورز، لیپ ٹاپس،بیٹریز،کیمرے اور غیر ملکی ادویات خریدی جا سکتی ہیں۔ اگرچہ اسلحے کی خرید و فروخت کھلے عام نہیں لیکن دلچسپی رکھنے والوں کو یہ چیز یں آسانی سے مل جاتی ہیں۔ جب مارکیٹ کے قریب ہی واقع سیکورٹی چیک پوسٹ میں موجود اہلکاروں سے اس بارے میں پوچھا گیا تو پولیس کے ایک اعلیٰ عہدیدار نے بتایا، یہاں کوئی غیرقانونی خرید و فروخت نہیں ہوتی، جو چیزیں یہاں فروخت کی جاتی ہیں وہ چائنہ ساخت کی ہیں اور یہ ملک بھر میں موجود ہیں۔ جہاں تک اسلحے کی بات ہے تو اس پوری مارکیٹ میں اسلحے کی ایک بھی دکان نہیں، البتہ چند قدم کے فاصلے پر قبائلی علاقہ ہے، جہاں صوبائی حکومت کا عمل دخل نہیں اور وہاں کھلے عام اسلحے کا کاروبار ہوتا ہے لیکن وہ اسلحہ کوئی یہاں نہیں لاسکتا۔