مقبول خبریں
عبدالباسط ملک کے والدحاجی محمد بشیر مرحوم کی روح کے ایصال ثواب کیلئے دعائیہ تقریب
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
سیاسی و سماجی اور دینی جماعتوں کی سرگرمیوں کو یکساں کوریج کیلئے اوصاف کی ٹیم اپنا کردار ادا کر رہی ہے
برمنگھم: اوصاف کے گروپ ایڈیٹر محسن بلال خان نے برمنگھم میں منعقدہ اوصاف فورم سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ مسئلہ کشمیر اور برطانیہ میں آباد کشمیری و پاکستانی کمیونٹی کے مسائل کو اجاگر کرنا روزنامہ اوصاف کی ترجیحات میں شامل ہے،تمام سیاسی و سماجی اور دینی جماعتوں کی سرگرمیوں کو یکساں کوریج کیلئے اوصاف کی ٹیم اپنا کردار ادا کر رہی ہے ادارے کی ہمیشہ سے یہ کوشش رہی ہے کہ کمیونٹی کے اندر اتحاد اور یکجہتی کی فضا کو برقرار رکھا جائے،انہوں نے کہا کہ برطانیہ میں حالیہ انتخابات کے نتیجہ میں کشمیری اور پاکستانی نژاد امیدواروں کی کامیابی سے کمیونٹی کے اندر خوشی اور اعتماد کا اظہار کیا جا رہا ہے،مسائل اور مشکلات کے حل کیلئے توقعات بھی بڑھ گئی ہیں اور مسلمانوں کے بارے میں جو کچھ پیش کیا جا رہا ہے اس میں منتخب نمائدے اپنا موثر کردار ادا کریں گے اور روزنامہ اوصاف بھی اپنی ذمہ داریوں کو پورا کرے گا،آئندہ سال میں اوصاف گروپ ٹی وی چینل بھی شروع کرنے والا ہے جس طرح اخبار نے کمیونٹی کی رہنمائی کی اسی طرح ٹی وی چینل بھی عوام کے مسائل کو پیش کر کے عوام کی خدمت جاری رکھے گا تمام طبقہ فکر کے عوام کیلئے اخبار اپنی خدمات سر انجام دے رہا ہے اخبار کا گزشتہ تیرہ سال سے جو بھی کردار رہا ہے وہ عوام کے سامنے ہے،فورم سے مختلف سیاسی و سماجی اور دینی جماعتوں اور کمیونٹی رہنمائوں نے خطاب کیا برمنگھم کے نمائندہ رب نواز چغتائی نے فورم کے اغراض و مقاصد پر روشنی ڈالی اور مہمانوں کا تعارف کرایا،فورم کی صدارت معروف قانون دان اور کشمیری رہنما بیرسٹر کرامت حسین نے کی،نظامت کے فرائض رب نواز چغتائی نے انجام دیئے فورم سے کل جماعتی کشمیر رابطہ کمیٹی کے سر پرست اعلیٰ مولانا بوستان قادری نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ روزنامہ اوصاف کی خدمات کو فراموش نہیں کیا جا سکتا برطانیہ میں آباد کشمیری و پاکستانی کمیونٹی کے مسائل کو اجاگر کرنے میں اوصاف کا اہم کردار ہے پاکستان ائر پورٹوں پر رشوت کا بازار گرم ہے نئی نسل جو برطانیہ میں پیدا ہوئی ہے انہیں اپنے ملک میں وہ ماحول میسر نہیں،وہ پاکستان میں پیش آنے والے ساتھ سے اس قدر مایوس ہو کر آتے ہیں پھر جانے کا کیلئے تیار نہیں ہوتے،تحریک کشمیر یورپ کے صدر محمد غالب نے کہا کہ اخبار کا کام مسائل اور مشکلات کو اجاگر کرنا ہے،مسائل حکومتوں نے حل کرنے ہوتے ہیں برطانیہ میں کشمیری اور پاکستانی جماعتوں سے وابستہ رہنمائوں کو اس میں اپنا کردار ادا کرنا چاہئے،تحریک انصاف کے رہنما چوہدری خادم حسین نے کہا کہ پاکستان اور آزاد کشمیر کی سیاست نے برطانیہ میں آباد کمیونٹی کیلئے مسائل اور مشکلات پیدا کی ہیں ہمیں برطانوی سیاست میں بھرپور حصہ لینا چاہئے،سنی حریت کونسل کے سربراہ مولانا فضل احمد قادری نے کہا کہ جہاد کے نام پر جس طرح بچوں کو شامل کیا جا رہا ہے جہاد جیسے با برکت نام کو بدنام کیا جا رہا ہے ایسے لوگوں کی حوصلہ شکنی کرنی چاہئے،سابق کونسلر اور برل ڈیمو کریٹ برمنگھم کے ترجمان راجہ شوکت خان نے کہا کہ کشمیری اور پاکستانی کمیونٹی برطانیہ سیاست میں بھرپور حصہ لے اور تمام جماعتوں میں شامل ہو کر سیاسی طاقت کا توازن قائم رکھیں،تحریک کشمیر برطانیہ کے صدر راجہ فہیم کیانی نے کہا کہ اوصاف ریزیڈنٹ ایڈیٹر مبین چوہدری نے روزنامہ اوصاف لندن کا معیار بلند رکھا ہے آزاد خطے میں بھی اوصاف بڑی تعداد میں پڑھا جاتا ہے،لیبر پارٹی کے سابق لارڈ میئر اور کونسلر عبدالرشید نے کہا روزنامہ اوصاف نے کشمیری اور پاکستانی کمیونٹی کے مسائل پر خصوصی توجہ دی ہے مسئلہ کشمیر کشمیریوں کا اولین مسئلہ ہے اور یورپ میں اس کی اہمیت کو مشترکہ طور پر دنیا کے سامنے پیش کرنے میں اوصاف نے بھرپور ساتھ دیا،پیپلز پارٹی کے رہنما چوہدری شاہ نواز نے کہا کہ برادری ازم نے کمیونٹی کو شدید نقصان پہنچایا ہے،ایسے لوگوں کو منتخب ہونا چاہئے جو کمیونٹی کی خدمت کر سکیں ،ممتاز کشمیری رہنما اور سیاسی تجزیہ نگار چوہدری تصدق حسین نے کہا کہ ٹی وی کا اعلان خوش آئند ہے،آزاد کشمیر کی سیاسی جماعتوں نے کمیونٹی کو نقصان اور تقسیم کر رکھا ہے،آزاد کشمیر سے آنے والے لیڈروں کو مسئلہ کشمیر اور کشمیر کے حالات کے بارے میں کوئی معلومات نہیں ہوتی اور ان کی کارکردگی بھی مایوس کن ہے،بنات المسلمین کی چیئر پرسن سمیرا نے کہا کہ روزنامہ اوصاف برطانیہ میں آباد کمیونٹی کی مشکلات اور مسائل کو اجاگر کرنے میں نئی نسل کی سوچ اور شعور کو بیدار کرنے کیلئے میڈیا اہم کردار ادا کر سکتا ہے اور اوصاف ٹی وی چینل اس سلسلے میں ایک اہم پیش رفت ثابت ہو گاجموں و کشمیر کے سربراہ مولانا محمد الطاف نے کہا کہ روزنامہ اوصاف نے کبھی بھی ایسے اشتہار کو جگہ نہیں دی جو کمیونٹی کی نظر میں اچھی نگاہ سے نہیں دیکھا جاتا،کشمیر فورم کے چیئر مین چوہدری محمد عظیم نے کہا کہ روزنامہ اوصاف ایک کمیونٹی اخبار ہے آزاد کشمیر کے کونے کونے سے خبریں اخبار میں شامل ہوتی ہیں مسئلہ کشمیر کو جس طرح اجاگر کیا گیا اور برطانوی کمیونٹی کیلئے اخبار کو وقف کر رکھا ہے اس پر لندن کی ٹیم مبارکباد کی مستحق ہے،مسلم لیگ ن کے رہنما فیصل محمود نے کہا کہ میڈیا آج کے دور میں جس طرح مسائل کو اجاگر کر رہے ہیں اس طرح کمیونٹی کی رہنمائی ہو رہی ہے عوام الناس کے اندر شعور پیدا ہو رہا ہے اور مستقبل میں اس کے مثبت اثرات مرتب ہونگے اوصاف فورم سے مختلف دیگر سیاسی و سماجی رہنمائوں نے بھی خطاب کیا۔