مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
جماعت احمدیہ برطانیہ کاسالانہ جلسہ اختتام پزیرتیس ہزار سے زائد افراد کی شرکت
ہمپشائر ... جماعت احمدیہ برطانیہ کا 47 واں سالانہ جلسہ گزشتہ روز اختتام پزیر ہو گیا ایک اندازے کے مطابق اس سالانہ جلسہ میں دنیا کے مختلف ممالک سے تیس ہزار سے زائد افراد نے شرکت کی جمعہ کے روز جلسہ کا آغاز جماعت احمدیہ کے سربراہ مرزا مسرور نے لواے احمدیت لہرا کر کیا۔ اپنے افتتاحی خطاب میں انہوں نے کہا کہ دنیا کی مشکلات میں اضافہ کی وجہ رعایا اور حکمرانوں کے درمیان حقوق کی جنگ ہے۔ دونوں ایک دوسرے کے حقوق سے غافل ہیں۔ اس سے غیروں کو موقع مل رہا ہے اور وہ امن کے نام پر ہم کو کمزور کر رہے ہیں۔ اس وجہ سے دنیا کا امن برباد ہورہا ہے۔ جماعت احمدیہ کے سربراہ نے نصیحت کی کہ جلسہ سالانہ کا مقصد جماعت کے لوگوں کے علمی، تربیتی معیار کو بہتر بنانا ہے۔ شرکاء جلسہ کے عارضی انتظام کی مجبوریوں کو سمجھتے ہوئے پیار و محبت کے ماحول میں ایک دوسرے کے ساتھ خندہ پیشانی کے ساتھ پیش آئیں اور اعلیٰ اخلاق کا مظاہرہ کریں۔ جس معاشرہ میں اخلاص نہ ہو اس میں کمزوریاں پیدا ہونے کے بعد تنزل شروع ہوجاتا ہے۔ جلسہ سالانہ تین روز جاری رہا۔ اتوار کے روز برطانیہ کی سماجی و سیاسی شخصیات نے بھی خطاب کیا۔