مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
طاقت کے بل بوتے پر کشمیریوں اور سکھوں کو زیادہ دیر تک غلام نہیں رکھا جا سکتا: مشترکہ کانفرنس
برمنگھم:برمنگھم سٹی کونسل کے چیمبر میں برطانیہ بھر کی قیادت نے کشمیری اور خالصتان کی مشترکہ کانفرنس کا انعقاد کیا جس میں امریکہ،انڈیا،مقبوضہ کشمیر اور پاکستان سے نمائندوں نے شرکت کی، کانفرنس میں نظامت کہ فرائض ڈاکٹر رنجیت سنگھ نے ادا کئے اور مہمان خصوصی لارڈ نذیر احمد اور راجہ افتخار احمد خان تھے،اجلاس میں برطانیہ کی تنظیموں اور اعلیٰ حکام نے شرکت کی مقبوضہ کشمیر سے پروفیسر نذیر احمد شال اور برطانیہ سے راجہ امجد خان پروفیسر ظفر اور ڈاکٹر اقتدار چیمہ کے علاوہ سکھو ں اور برٹش کمیونٹی کی کثیر تعداد نے شرکت کی،تمام مقررین نے کشمیر اور خالصتان کہ حقوق پر عاصبانہ قبضے کو ناجائز قرار دیا اور کہا کہ انڈیا پوری دنیا کہ سامنے اپنی ڈرامہ بازی بند کرے،انڈیا کہ اندر اقلیتوں کا جینا مشکل ہو گیا ہے،سکھ ،عیسائی اور مسلمان انڈین مظالم سے پرندوں کے شکار کی طرح شوقیہ انداز میں مارے جا رہے ہیں انسانیت سوز مظالم کی داستانیں بیان سے باہر ہیں کم سن بچوں کو گاجر مولی کی طرح کاٹا جا رہا ہے،مظلوم عورتوں کی عصمت دری کی جا رہی ہے اور عالمی برادری کی خاموشی شرمناک ہے،بھارت میں اقلیتوں پر ظلم و ستم کی انتہا ہو چکی ہے اب عالمی برادری پر سفارتی دبائو بڑھانا ہو گا،طاقت کے بل بوتے پر کشمیریوں اور سکھوں کو زیادہ دیر تک غلام نہیں رکھا جا سکتا،عالمی برادری دہرے معیار کو ترک کر کے بھارتی خلاف ورزیوں کا نوٹس لے اور اقلیتوں کے تحفظ کو ممکن بنانے کیلئے بھارت پر دبائو ڈالے اور بھارت کو خبر دار کرے کہ خطے کہ امن کو تہس نہس نہ کرے اور اس ظالم ملک کو امن سلامتی کونسل کا مستقل ممبر کیسے بنایا جا سکتا ہے ہم اس کی پرزور مذمت کرتے ہیں،بھارت ہٹ دھرمی چھوڑ کر سکھوں اور کشمیریوں کے جائز حقوق تسلیم کرے،تارکین وطن با ضابطہ مہم کا آغاز کرتے ہوئے انٹر نیشنل کمیونٹی کے سامنے بھارت کو بے نقاب کریں گے،برطانیہ کے الیکشن میں تمام کمیونٹی کو ان امیدواروں کی سپورٹ کرنی چاہئے جو خالصتان اور کشمیر کے جائز حقوق کی مدد کرنے کا وعدہ کریں ان بنیادی مسائل کو دبانا بھارت کی خام خیالی ہے،اگر بھارت نے اپنی روش نہ بدلی تو بہت جلد بھارت کے اندر بغاوت کی آواز بلند ہو گی،بھارت خونریزی سے سکھوں اور مسلمانوں کو کبھی بھی ڈرانے میں کامیاب نہیں ہو گا،ہم انٹر نیشنل سطح پر مل کر بھارتی ڈرامہ بازی کو بے نقاب کریں گے اور اب برطانیہ کہ اعلیٰ ایوانوں میں انصاف کی اپیل کر رہے ہیں اگر ان اعلیٰ حکام نے بھی ہماری آواز کو سرد خانے میں دھکیل دیا تو ہم عالمی عدالت میں مودی کو مجرم کے کٹہرے میں کھڑا کریں گے نریندر مودی لاکھوں بے گناہ جانوں کا قاتل ہے اور لاکھوں لاچار انسانوں کو ظلم و استداد کے ذریعے اپنے تسلط میں رکھے ہوئے ہے اور لاکھوں بے بس لوگوں کو قید خانوں میں غیر قانونی اور غیر اخلاقی لحاظ سے طاقت کہ ناجائز استعمال سے سزائوں کا مرتکب بنایا ہوا ہے اب انٹر نیشنل کمیونٹی میں بسنے والے سکھوں اور مسلمانوں کو مل کر اپنے حقوق کی خاطر اپنی آواز کو بلند کرنا ہو گا اور اس عزم کے ساتھ کہ ہم اپنے جائز حقوق کہ حصول تک مشترکہ طور پر اپنی جدو جہد جاری رکھیں گے۔بیورو رپورٹ:فیاض بشیر