مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ٹوریز نے برصغیر کے ان لوگوں کی خدمات کو تسلیم کیا جنہوں نے ورلڈ وار ٹو میں قربانی دی :بیرونس وارثی
بریڈ فورڈ : برطانوی حکومت میں شامل سابق وزیر خارجہ بیرونس سعیدہ وارثی اور موجودہ کمیونٹی وزیر لارڈ طارق احمد نے ڈیوڈ کیمرون اور کنزرویٹو پارٹی کو ہی اس ملک کا حقیقی نمائندہ قرار دیتے ہوئے خصوصی طور پر ایشیائی کمیونٹی سے اپیل کی ہے کہ وہ کنزرویٹو پارٹی کے پارلیمانی اور مقامی امیدواروں کو ووٹ دیکر ہم پر بھر پور اعتماد کا اظہار کریں ۔ کنزرویٹو پارٹی بھی آنیوالے نسلوں اور تمام کمیونٹیز کے مسائل حل کر سکتی ہے اس لئے یاکشائر کی تمام سیٹوں پر سابق ممبران پارلیمنٹ اور بریڈ فورڈ کی تینوں سیٹوں پر ہمارے امیدواروں کی کامیابی سے اس علاقے اور مسلمانوں کے مسائل حل کروانے میں مدد ملے گی ۔ ڈیوڈ کیمرون کی حکومت میں مسلمانوں کو کابینہ میں پہلی بار نمائندگی ، عیدیں ، افطاری اور اب یوم صدقہ منانے کے علاوہ ہولوکاسٹ کی طرح جنگ عظیم دوم میں برصغیر کے لوگوں کی قربانیوں کو بھی سرکاری طورپر تسلیم کیا گیا ہے ۔ پاکستان بھارت اور بنگلہ دیش کے ساتھ موجودہ حکومت کے تعلقات سب سے بہتر ہیں اس لئے ان ممالک سے آبائی تعلق رکھنے والے ووٹرز 7 مئی کو بھر پور انداز میں اپنے نمائندوں کا چنازہ کریں ۔ پڑسی کے سابق ممبر پارلیمنٹ نے ہائوس آف کامنز میں مسلمانوں کے مسائل خصوصاًمسئلہ کشمیر پر ہر سطح پر بھر پور حمایت کی ہے جبکہ آل پارٹیز پارلیمنٹری گروپ آن اسلامو فوبیا کے چیئرمین کی حیثیت سے مسلمانوں کے مفادات کا بھر پور تحفظ کیا ہے جبکہ افتخار احمد جیسے باصلاحیت افراد کی پارٹی اور حکومت کو بہت ضرورت ہے جس کیلئے بریڈ فورڈ ایسٹ کے عوام انہیں ووٹ دیں جس کیلئے ہم خصوصی طور پر آج دوبارہ اس حلقے کا دورہ کر رہے ہیں ۔ انتخابی اجلاس کی صدارت ممتاز کشمیری رہنما راجہ جابت حسین نے کی جبکہ حاجی محمد نجیب کی تلاوت کلام پاک سے شروع ہونیوالے اس اجلاس سے پڑسی سے کنزرویٹو امیدوار سٹیورٹ اینڈریو ، بریڈ فورڈ ایسٹ کے پارلیمانی امیدوار افتخار احمد ، بریڈ فورڈ کے پارلیمانی امیدوار جارج گرانٹ پاکستان کلب کے صدر بشارت علی ایڈووکیٹ اور کنزرویٹو پارٹی بریڈ فورڈ کے صدر محمد ریاض نے خطاب کیا جبکہ خواتین کی ایک بڑی تعداد جن میں لٹل ہارٹن کی امیدوار صبیحہ محبوب ، آئیڈکل اور کیتھلے کی امیدوار فلک ناز احمد ، بریڈ فورڈ مور کے امیدوار کونسلر راجہ سخاوت حسین ، بائولنگ بارکرینڈ کے امیدوار محمد جمیل ، پڑسی کے کونسلر اینڈریو کارٹر ، سابق کونسلر اظہر محمود ، ممتاز کاروباری شخصیات حاجیعاصم سلیم ، راجہ سلیم اختر ، واجد اقبال ، حاجی محمد رفیق ، صبیحہ خان ، تعظیم سویز ، روبینہ یاسمین ، روبی بھٹی ، ثمینہ خان ، صائمہ اسلم ، سبینہ خان ، عظمیٰ ، ڈاکٹر نشاط چوہان ، حاجی کرامت حسین ، چوہدری محمد غالب ، انڈر کلف وارڈ کے لوکل کونسل کے امیدوار واجد جہانگیر ، بریڈ فورڈ ایسٹ کے چیئرمین راجہ اشتیاق احمد اور بریڈ فورڈ کے ممتاز تاجر چوہدری مطلوب نے شرکت کرکے پارٹی لیڈروں کو یقین دلایا کہ وہ ان امیدواروں کی کامیابی کیلئے بھر پور کوششیں کرینگے ۔ میزبان راجہ نجابت حسین نے جہاں ہائوس آف لارڈز کے دونوں پاکستانی نژاد ارکان کو خوش آمدید کہا وہاں پڑسی کے سابق ممبر پارلیمنٹ کی کشمیر کے حوالے سے خصوصی خدمات پر انہیں خراج تحسین پیش کیا اور کہا کہ وہ سٹیورٹ اینڈریو جیسے ہمدردوں کو دوبارہ پارلیمنٹ میں دیکھنا چاہئے ہیں اور دونوں مہمانوں کے بھر شکر گزار ہیں جو انتخابی مصروفیات میں بریڈ فورڈ اور پڑسی کیلئے وقت نکال کر آئے ۔ مہمان خصوصی لارڈ طارق احمد وزیر برائے کمیونٹی نے اپنے خطاب میں کہا کہ موجودہ حکومت اس ملک کی سب سے بہتر حکومت ہے جو بلاامتیاز مذہب رنگ و نسل ہر فرد کی بھلائی اور اسکی ترقی کیلئے اقدامات کر رہی ہے اور ہمارا آئندہ مشن بھی یہی ہے کہ کنزرویٹو پارٹی ان انتخابات میں اکثریتی پارٹی بن کر ابھرے گی اور آپ لوگوں کے تعاون سے ہم قبضہ زیادہ ممبران پارلیمنٹ بنائیں گے اس سے نہ صرف ہم مضبوط حکومت بنائیں گے بلکہ برطانوی عوام کے مسائل بھی موثر انداز میں حل کروا سکیں گے ۔ انہوں نے کہا ڈیوڈ کیمرون کی عوامی مقبولیت اور لیڈر شپ کی صلاحیتوں کا پورا ملک معترف ہے یہی وجہ ہے کہ ہر پول میں کنزرویٹو پارٹی کو لیڈ مل رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ووٹ دیکر آپ ہم پر اعتماد کرینگے تو ہم آپکے حقوق کیلئے پارٹی اور حکومت سے لڑیں گے ۔ بیرونس سعیدہ وارثی نے کہا کہ غزہ کے مسئلے پر انہوں نے حکومت سے استعفیٰ ضرور دیا تھا مگر کنزرویٹو پارٹی میری سیاسی جماعت ہے اور میں آپ لوگوں کے ساتھ پارٹی کے اندررہ کر آپکے حقوق کیلئے جدوجہد جاری رکھوں گی مگر آپ پاکستانی اور مسلمان کنزرویٹو پارٹی کو ووٹ دیکر ایسے امیدواروں کا چنائو کریں جو میرا اور لارڈ طارق سمیت پارٹی کے اندر دیگر ارکان کا ہم خیال بن مسلمانوں اور دیگر ایشیائی کمیونٹی کے حقوق کا تحفظ کر سکیں ۔ انہوں نے کہا کہ وہ ہر حلقہ اور شہر میں جا کر پارٹی امیدواروں کی جیت میں معاون بن رہی ہیں تا کہ ڈیوڈ کیمرون جیسے لیڈر کو دوبارہ برطانیہ کا مضبوط وزیر اعظم بنایا جا سکے ۔ بریڈ فورڈ ایسٹ کے امیدوار افتخار احمد نے اپنی تقریر میں لبرل پارٹی اور لیبر کے دونوں امیدواروں کو ناکام اور اپنی اپنی پارٹی کی ہائی کمان سمیت علاقوں سے بھی مسترد شدہ قرار دیا اور کہا کہ بحیثیت کونسلرز بھی دونوں بری طرح فیل ہو چکے اور ایک نے پارلیمنٹ میں جا کر نہ صرف اپنی لیڈر شپ کو ناراض کیا بلکہ حکومت کا اتحادی ہونے کے باوجود کوئی کام نہیں کروا سکا اور خصوصاً بریڈ فورڈ ایسٹ کے تعلیمی اداروں کی خستہ حالی میں بھی لیبر اور لبرل کا سب سے زیادہ حصہ ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کنزرویٹو ممبر پارلیمنٹ بننے سے ہی اس علاقے کے مسائل حل ہونگے انہوں نے اس موقع پر ہر طبقہ فکر کے عوام کی طرف سے کنزرویٹو پارٹی کے امیدوار کی معاونت کا شکریہ ادا کیا ۔ بریڈ فورڈ ویسٹ سے کنزرویٹو پارٹی کے امیدوار جارج گرانٹ نے اپنے خطاب میں کہا کہ گزشتہ چند ہفتوں میں بحث مباحثے ہوئے ہیں اس سے ثابت ہوتا ہے کہ سوائے کنزرویٹو پارٹی دیگر امیدوار صرف شخصیات کی حیثیت سے انتخابات لڑ رہے ہیں اس لیے بریڈ فورڈ کے عوام قابلیت اور صلاحیت کے علاوہ پروگرم پر بھی ووٹ دیں گے توہم اس حلقے کی نمائندگی کر سکیں گے ۔ پارٹی کے بریڈ فورڈ کے صدر محمود ریاض نے کہا کہ گزشتہ بیس سال سے ہم یہاں کے عوام سے اپیل کر رہے ہیں کہ ہمیں موقع دیں مگر انہوں نے لیبر پارٹی ، لبرل ڈیمو کریٹس اور ریسپیکٹ پارٹی کو موقع دیکر بریڈ فورڈ کا جو حال کرا دیا ہے اسے تبدیل کرنے کا موقع ہے اور یہاں کے عوام کو کنزرویٹو پارٹی کے تمام امیدواروں کو کامیاب کرکے ہمیں بھی دیگر علاقوں اور شہروں کی طرح موقع دینا چاہئے اور ہم اپنے عمل اور کام سے تبدیلی لا کر ثابت کرینگے ۔ پاکستان کلب کے صدر بشارت علی ایڈووکیٹ نے کہا کہ اس علاقے کے نوجوانوں پروفیشنلز اور کاروباری شخصیات اور ہنر مند نوجوانوں کو کنزرویٹو پارٹی کی حمایت کرکے اپنے لوگوں کو موقع دینا چاہئے ۔ اس موقع پر مقامی کونسل کے تمام امیدواروں نے عوام سے اپیل کی کہ وہ پوسٹل موٹ پر کرکے واپس پوسٹ کریں ۔ بیورو رپورٹ:فیاض بشیر