مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
استعمال کنندگان بارے معلومات کیلئے 70 سے زائد ملکوں کی حکومتوں کا فیس بک سے رابطہ
سلاؤ ...فیس بک، مائکروسافٹ اور گوگل نے اعداد و شمار جاری کیے ہیں جن میں بتایا گیا ہے کہ حکومتوں نے کب کب اُن کے صارفین کے بارے میں معلومات کا تقاضا کیا.. سماجی رابطے کی بڑی ویب سائٹ، ’فیس بک‘ کا کہنا ہے کہ اس سال کے پہلے چھ ماہ کے دوران 70 سے زائد ملکوں میں حکومتی ایجنٹس نے فیس بک استعمال کرنے والے ہزاروں افراد کے بارے میں معلومات طلب کی۔ برطانوی حکومت نے بھی فیس بک استعمال کرنے والے افرادکے بارے میں معلومات فراہم کرنے کے تقریباً 2ہزار مطالبات کیے۔ 74ملکوں میں موجود ایجنٹوں کی جانب سے 38ہزار یوزرزکے بارے میں معلومات میں سے نصف امریکہ میں موجود حکام کی جانب سے کی گئی ہیں۔پولیس اور انٹیلی جنس ایجنسیزکی تحقیقات کے حوالے سے متعلق مذکورہ ڈیٹا جاری کرنے کے فیس بک فیصلے کے بعد مائیکروسافٹ اورگوگل نے بھی یہی اقدام کیا ہے۔ فیس بک سے تعلق رکھنے والے کولن سٹرٹچ کاکہناہے کہ مارک زوکربرگ کی سائٹ نے یہ ڈیٹاجاری کرنے کافیصلہ اس لیے کیاکہ ہماری سروسزاستعمال کرنے والے افرادیہ جان سکیں کہ ہمیں معلومات دینے کے حوالے سے کس قسم کی درخواستیں موصول ہوئی ہیں۔