مقبول خبریں
آشٹن گروپ کی جانب سے پوٹھواری شعر و شاعری کی محفل،شعرا نے خوب داد وصول کی
مشتاق لاشاری سی بی ای کا پورٹریٹ کونسل ہال میں لگا نے کی تقریب، بیگم صنم بھٹو نے نقاب کشائی کی
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
مسئلہ کشمیر کے منطقی انجام کیلئے بیرسٹر سلطان نے کشمیر تحریک انصاف جوائن کی: چوہدری حکمداد‘ چوہدری فاروق
سلائو ...آزاد کشمیر کی 70سے زائد اہم شخصیات کی عمران خان اور بیرسٹر سلطان محمود چوہدری کی موجودگی میں تحریک انصاف میں شمولیت سے بخوبی اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ آزاد کشمیر کے آئندہ الیکشن میں تحریک انصاف کلین سوئپ کرے گی۔ ان خیالات کا اظہار بیرسٹر سلطان محمود چوہدری کے معتمد خاص چوہدری حکمداد اور ایڈوائزر کشمیر افیئرز یوکے چوہدری فاروق احمد نے برطانیہ میں مختلف پارلیمنٹیرینز کو بریفنگ دیتے ہوئے کیا۔ ان رہنمائوں نے لیبر پارٹی، ٹوری اور لب ڈیم کے مختلف رہنمائوں سے ملاقاتیں کیں اور انہیں بتایا کہ کشمیری عوام کے وسیع تر مفاد اور مسئلہ کشمیر کے منطقی انجام کیلئے سابق وزیر اعظم بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے کشمیر تحریک انصاف جوائن کر لی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ وہ عمران خان جیسے عالمی ویژن والے لیڈر کے ہمراہ مسئلہ کشمیر پر بات کرتے اچھے بھی لگتے ہیں۔ ان رہنمائوں نے آل پارٹی پارلیمانی گروپ آن کشمیر کے چیئرمین انیڈریو گرفتھس سے خصوصی ملاقات بھی کی اور کشمیر ملین مارچ کامیاب بنانے پر انکا شکریہ ادا کیا اور بیرسٹر سلطان چوہدری کی نیک خواہشات ان تک پہنچائیں۔ چوہدری حکمداد اور چوہدری فاروق کا مزید کہنا تھا کہ آزاد کشمیر میں خواجہ فاروق احمد،رفیق نیئر، شیخ مقصود سمیت 70 سے زیادہ بااثر رہنمائوں نے مختلف جماعتوں سے مستعفی ہوکر اسلام آباد میں بیرسٹر سلطان محمود کی رہائش گاہ پر ایک پریس کانفرنس میں تحریک انصاف میں شامل ہونے کا باضابطہ اعلان کیا جو ایک بڑی کامیابی ہے۔ اس موقع پر انہوں نے مزید بتایا کہ ان کی کوشش ہے کہ برطانیہ میں تحریک انصاف جموں وکشمیر کی مرکزی لیڈر شپ منظوری دے تاکہ برطانیہ میں کشمیریوں کی الگ شناخت قائم رہے۔(نمائیندہ کشمیر لنک لندن)