مقبول خبریں
یوم عاشور کے حوالہ سے نگینہ جامع مسجد اولڈہم میں روح پرور،ایمان افروز محفل کا اہتمام
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
کروڑ نمازی،4 کی بجاے 35 صوبے آئینی سربراہ گورنرز: ڈاکٹر طاہر القادری کا نظام بدلوخاکہ جاری
لندن... پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہر القادری نے کہا ہے کہ جب تک ملک میں طاقت کے ارتکاز کا خاتمہ نہیں ہو جاتا عوام کی حالت نہیں بدل سکتی پاکستان عوامی تحریک ملک میں خاموش پرامن انقلاب کے راستے پر گامزن ہے جس کی تکمیل کیلئے ایک کروڑ نمازی تیار کئے جا رہے ہیں جو ایک ہی وقت میں نماز کی ادائیگی کریں گے اور اتحاد اور تنظیم کا عملی نمونہ پیش کریں گے, ان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں جاری نظام انگریز کا ہے جو اس نے 1850میں ہم پر حکمرانی کے لئے بنایا تھا اسکے تحت جتنے بھی الیکشن ہوں گے نتیجہ سفر ہی رہے گا .. لندن میں پاکستان پریس کلب کے زیر اہتمام ایک نشست میں اظہار خیال کرتے ہوے ان کا کہنا تھا کہ وطن عزیز کو اگر ترقی کی شاہراہ پر ڈالنا ہے تو تقرری، ترقی اور تبادلے کی طاقت حکمرانوں سے چھین کرعوام کے ہاتھوں میں دینا ہوگی.ڈاکٹر طاہر القادری کا کہنا تھا کہ اسلام آباد عوام کے لئے نہیں ہے عوام کے مسائل کےحل کا تعلق صوبوں سے ہے اس لئے چار صوبوں کے چار وزراعلی اٹھارہ کروڑ عوام کی تقدیر کے مالک بنے بیٹھے ہیں ملک کو اگر چار کی بجاے 35 صوبوں میں تقسیم کردیا جاے اور ہر صوبے کا انتظامی سربراہ گورنر کو بنا دیا جاے تو اضافی بجٹ کی ضرورت بھی نہیں رہتی کیونکہ اس طرح وسایل ضلع، تحصیل اور یونین کونسل کی سطح تک تقسیم ہو جائیں گے ..ڈاکٹر قادری کا کہنا تھا کہ اس طریقے سے کرپشن کا لیول بھی کم ہو جاتا ہے اس لئے ملک کے موجودہ نظام کو سپورٹ کرنے والے اسے تبدیل کرنے کے حق میں نہیں ہیں ان کے دماغ پٹواری، کانسٹیبل، گرداور، سمیت دیگر تقرریوں کی طاقت پر ہی خوش ہیں، ڈاکٹر طاہر القادری نے کہا کہ پاکستان عوامی تحریک کسی قسم کی دہشت گردی اور خوں خرابے کے خلاف ہے اس لئے ہم امن کے راستے پر گامزن رہتے ہووے اپنی تحریک کو آگے بڑھا رہے ہیں ..ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ شام میں بھی مصر اور عراق والا کھیل کھیلا جا رہا ہے پرامن مسلمانوں کو طالبان اور القاعدہ کےزریعے آپس میں لڑا کر ختم کیا جا رہا ہے انہوں نے کہا پاکستان کی جیلیں طور کر ایسے لوگوں کو وہاں بھیجا جا رہا ہے تاکہ وو اپنے ظلم کا بازار گرم کر سکیں برطانیہ میں چاند کی رویت کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ یہ مسلہ بڑی آسانی سے حل ہو سکتا ہے جب علم کی بدولت سو سال کے درست کیلنڈر بن سکتے ہیں تو عیدین کا مسلہ بھی حل ہو سکتا ہے شرط یہ ہے کہ ہٹ دھرمی کی بجاے سائنس کی آنکھ کو رویت ماں لیا جاے لیکن کچھ لوگ جان بوجھ کر ایسا نہیں چاہتے اور انکی اندھی تقلید کرنے والوں کی بھی کمی نہیں ہے اس لئے اسے مسلہ بنا لیا گیا ہے ..اس نشست کی نظامت کے فرائض پریس کلب کے سیکریٹری جنرل اظہر جاوید نےاداکئے صدر فیاض غفور نے آخر میں مہمان شخصیت کا شکریہ ادا کیا جبکہ سوالات کرنے والوں میں سینئر صحافی محمّد سرور، احمد علی سید، وجاہت علی خان ، مبین چودھری،عطا الحق، نسیم صدیقی، آفتاب بیگ , ذولفقار علی بھٹو، شوکت دار، مشتاق مغل، طارق خان، شامل تھے..سابق ایڈیٹر جنگ ظہور نیازی، بسیم بیگ، طحہ قریشی، سجاد شال، داؤد مشہدی اور اعجاز خان اس خصوصی نشست کے مہمان تھے ..