مقبول خبریں
مئیر کونسلر جاوید اقبال کی طرف سے نسیم اشرف اور قاری محمد بلال کو تعریفی سرٹیفکیٹ سے نوازا گیا
پیپلزپارٹی کے رہنما ندیم اصغر کائرہ کی پریس کانفرنس ،صحافیوں کے سوالات کے جوابات دیئے
واجد خان ایم ای پی کا آزاد کشمیر سے آئے حریت کانفرنس کے رہنمائوں کے اعزاز میں عشائیہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے زیر اہتمام پہلی کشمیر کلچرل نمائش کا اہتمام
دسمبر بے رحم اتنا نہیں تھا!!!!!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
دولت مند غیر ملکی طلبہ کےداخلوں سےآکسفورڈ یونیورسٹی کی ساکھ کوخطرہ ..!!
سلاؤ ...معروف برطانوی اخبار ٹیلی گراف کی ایک رپورٹ کے مطابق خالصتاً کمرشل بنیادوں پر کم گریڈ رکھنے والے غیر ملکی دولت مند طلبہ کے داخلوں سے آکسفورڈ یونیورسٹی کی ساکھ گرنے کا خطرہ پیدا ہو گیا ہے۔ اخبار کے مطابق ایسوسی ایٹس سٹوڈنٹس 13 ہزار پونڈ فی ٹرم ادا کرتے ہیں جن سے یونیورسٹی کی ساکھ کو خراب ہونے کا خطرہ ہے۔ کیونکہ وہ کمزور طالبعلم ہوتے ہیں۔ یہ انکوائری ایک ورکنگ گروپ نے کی ہے جس کے سربراہ پروفیسر پال سلیک ہیں جو آکسفورڈ میں ہی پرو وائس چانسلر کے عہدے پر رہ چکے ہیں۔ ان کی رپورٹ یونیورسٹیوں پر غیر ملکی طلبہ کو کیش کارڈز کے طور پر استعمال کرنے کے الزام کے بعد آئی ہے۔ ہر سال ایسوسی ایٹ طلبہ داخلہ لیتے ہیں۔ ان کا داخلہ تھرڈ پارٹی آرگنائزیشن کے ذریعے ہوتا ہے جو کالج کو پے منٹ کرتی ہے۔