مقبول خبریں
عبدالباسط ملک کے والدحاجی محمد بشیر مرحوم کی روح کے ایصال ثواب کیلئے دعائیہ تقریب
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان بنا توہمارےپاس قلم اور کاغذ تک نہ تھاآج ہم ایٹمی قوت ہیں:لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈعبدالقیوم
لوٹن...لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈعبدالقیوم نے کہا ہے کہ پاکستان حکومت مسئلہ کشمیر سے انحراف نہیں کر رہی کشمیر پاکستان کا لباس ہے۔پاکستان کے چھ بڑے مقاصد ہیں قومی یکجہتی،علاقائی سیکورٹی،سیاسی آزادی،معاشی استحکام،کشمیر کی آزادی اور نیو کلیئر پلانٹ کا تحفظ کرنا۔پاکستان اسلام کے نام پر بنا تھا ۔پاکستان جب بناتھا تواس وقت ہمارے پاس لکھنے پڑھنے کیلئے قلم اور کاغذ تک تک نہیں تھا۔آج ہم ایٹمی قوت ہیں۔ان خیالات کا اظہار انھوں نے لوٹن میں استحکام پاکستان کے سلسلہ میں منعقدہ تقریب سے بطور مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا۔تقریب کا اہتما م پروفیسر مسعود اخترہزاروی، ڈاکٹر یٰسین رحمان،چوہدری فاروق احمد اور شیراز خان نے کیا۔لیفٹیننٹ جنرل (ر)عبدالقیوم نے کہا کہ مسئلہ کشمیر پاکستان کی اولین ترجیح ہے اور کوئی بھی حکومت مسئلہ کشمیر کو نظر انداز نہیں کر سکتی ہر ایک مسئلے پر گفت و شنید کے حالات سازگار بنانے کی ضرورت ہوتی ہے اور حالات و واقعات کے مطابق کام کیا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان ہم سب کا ہے اوورسیز پاکستانی ایک بڑی مقدار میں زرمبادلہ اپنے ملک بھیج کر ملک کی معاشی حالت بہتر بنانے میں اپنا کردار ادا کر رہے ہیں ۔ دیار غیر رہنے والے پاکستانی اپنے ملک کیلئے فکر مند رہتے ہیں پاکستان کو سب نے مل کر زندہ رکھنا ہے ہمیں مایوس نہیں ہو نا انشا ء اللہ پاکستان ایک دن دنیا کا سب سے بڑا ترقی یافتہ ملک بنے گا۔ پیر سلطان فیاض الحسن نے کہا کہ پاکستان اسلام اور ایمان کے بغیر نامکمل ہے اور پاکستان میں دہشت گردی کرنے والے مسلم نہیں ہیں ۔انھوں نے کہا کہ پاکستان میں بہتری لانے کیلئے ہمیں بالخصوص تعلیم پر توجہ دینی ہوگی۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے میزبان پروفیسر مسعود اخترہزاروی اور ڈاکٹر یٰسین رحمان نے کہا کہ پاکستان کے اندر سے ہمیں نوابی سسٹم کا خاتمہ کرنا ہو گا۔تقریب کی نظامت کے فرائض شیراز خان نے انجام دیئے جبکہ تلاوت اور نعت رسول مقبول کی سعادت حافظ عبدالرحمن نے حاصل کی۔تقریب میں صدر ورلڈ کانگرس ناہید داؤد،سابق میئر کونسلر چوہدری سلیم،کونسلر چوہدری محمد ایوب،چوہدری محمد شریف،پروفیسر ممتاز حسین بٹ،کونسلر طاہر ملک،اکبر دادخان،پروفیسر امتیاز چوہدری،محمد فیاض قریشی، تحسین گیلانی،امجدشاہ،چوہدری صابر ،حاجی سلیمان ،ملک صادق اور دیگر افراد نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔