مقبول خبریں
چوہدری سعید عبداللہ ،چوہدری انور،حاجی عبدالغفار کی جانب سے حاجی احسان الحق کے اعزاز میں عشائیہ
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
بین الااقوامی مغربی موسیقار زوبن مہتا کاسرینگر میں پروگرام احساس کشمیر تنازع کا شکار ..!!
سری نگر ...کشمیری حریت پسند رہنما سید علی شاہ گیلانی نے معروف بین الااقوامی مغربی کلاسیکی موسیقار زوبن مہتا کے سرینگر میں موسیقی کے پروگرام کو منسوخ کرنے کی اپیل کی ہے۔ موسیقی کا یہ پروگرام سات ستمبر کو سری نگر میں جرمنی کا سفارتخانہ ریاستی اور مرکزی حکومت کے تعاون سے منعقد کر رہا ہے۔ اس پروگرام کے لیے ملک اور بیرون ملک سے ڈیڑھ ہزار اہم شخصیات کو مدعو کیا گیا ہے۔ پروگرام کے مطابق تمام یوروپی ممالک کے سفیر بھی اس کنسرٹ کے لیے سری نگر میں ہوں گے۔ کشمیری رہنماسید علی شاہ گیلانی نے جرمنی کے سفیر مائیکل اسٹینر کو لکھا ہے کہ’کشمیر ایک متنازع خطہ ہے اور متنازع خطے میں کسی بین الاقوامی پروگرام کے انعقاد سے اس کی متنازع حیثیت میں مداخلت ہوتی ہے‘۔ انہوں نے مزید لکھا ہے کہ’1983 میں ہم نے انڈیا ویسٹ انڈیز کرکٹ میچ کی بھی مخالفت کی تھی کیونکہ اس طرح کے بین الاقوامی پروگراموں کو کشمیری کی متنازع حیثیت تبدیل کرنے کے لیے استعمال کیا جا سکتا ہے‘۔ جرمن سفیرگزشتہ ہفتے اس کنسرٹ کی تیاری کے سلسلے میں سری نگر میں تھے۔ انہوں نے سول سوسائٹی کے ارکان سے بات کرتے ہوئے امید ظاہر کی تھی کہ تمام یورپی ممالک کے سفیر موسیقی کےاس یادگار پروگرام میں شریک ہونگے۔ گیلانی نے جرمنی کے سفیر سے اپیل کی ہے کہ وہ اس خطے میں بھارت کے ذریعے حقوق انسانی کی خلاف ورزیوں کو نظر انداز نہ کریں۔ انہوں نے یوروپی یونین کے ایک وفد کے 2004 کے سرینگر کے دورے کو یاد دلاتے ہو کہا ہے کہ’اس وفد نے کشمیر کو ایک خوبصورت جیل قرار دیا تھا۔ یوروپی یونین کے ایک ذمےدار رکن کے طور پر جرمنی کے لیے یہ نامناسب ہو گا کہ وہ قیدیوں کے لیے موسیقی کی محفل کا اہتمام کرے‘۔ ’احساس کشمیر‘ نام کا یہ پروگرام سر ی نگر کی ڈل جھیل کے کنارے شالیمار باغ میں منعقد کیا جائے گا۔اس کنسرٹ کا لوگو کشمیر کے معروف فنکار مسعود حسین تیار کر رہے ہیں ۔پروگرام کی نظامت معروف فلمی اداکارگل پناگ کریں گی اور اس پروگرام کو پوری دنیا میں ٹیلی ویژن پر براہ راست نشر کیا جا ئے گا۔