مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
سانحہ پشاور کے متاثرین کیلئے دعائیہ تقریب ممبران پارلیمنٹ خالد محمود اور شبانہ محمود کی خصوصی شرکت
برمنگھم ... دہشت گردی دنیا کے کسی بھی کونے میں ہو قابل مذمت ہے، کوئی ہوشمند انسان ظلم اور بربریت کی حمائت نہیں کرسکتا اور نہ ہی دنیا بھر میں کوئی مذہب دہشت گردی کی تائید کرتا ہے، دہشت گردوں کا کوئی دین کوئی مذہب نہیں یہ پاکستان، اسلام اور انسانیت کے کھلے دشمن ہیں۔ پشاور میں دہشت گردوں کی جانب سے معصوم بچوں، طالب علموں جو حصول علم کی راہ میں تھے، کے خون سے ہولی ظلم و جبر اور بنیادی انسانی حقوق کی پامالی ہے۔ اس کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے۔ اس ماسٹرمائنڈ اس سوچ کا خاتمہ ضروری ہے جس نے یہ انتہا پسند پیدا کئے۔ ان خیالات کا اظہار ممبر آف پارلیمنٹ مرزا خالد محمود، ممبر آف پارلیمنٹ شبانہ محمود اور دیگر نے برمنگھم میں کونسلر عنصر علی خان، کونسلر محمد ادریس اور کونسلر مریم کی جانب سے منعقدہ سانحہ پشاور کے شہداء کیلئے تعزیتی ریفرنس سے خطاب میں کیا۔ نظامت کے فرائض ممتاز صحافی ساجد یوسف نے سرانجام دیئے۔ تعزیتی ریفرنس میں عورتوں بچوں، حضرات کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ شہداء پشاور کی یاد میں شمعیں روشن کی گئیں۔ ننھے بچوں نے اپنے مخصوص انداز میں دہشت گردوں کو للکارا اور پشاور میں متاثرہ سکول کے زندہ بچ جانے والے بچوں اور زخمیوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کیا۔ مرزا خالد محمود نے مزید کہا کہ دہشت گردی کے خلاف قوم کو متحد ہونے کی ضرورت ہے جس طرح پاک فوج نے آپریشن ضرب عضب شروع کیا ہوا ہے ہم پاک فوج کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑے ہیں۔ ایم پی شبانہ محمود نے کہا کہ سکول پر حملے سے ثابت ہوتا ہے کہ دہشت گرد سکول کے ہی نہیں پاکستان کے ہی نہیں بلکہ انسانیت کے کھلے دشمن ہیں۔ کونسلر عنصر علی خان نے اس واقعہ کی پُرزور مذمت کی اور کہا کہ ہم بیرون ملک میں وطن کا نام روشن کرنے کیلئے دن رات جدوجہد کرتے ہیں ایسے میں کوئی دہشت گرد حملہ کرکے ملک کو اسلام کو بدنام کردیتا ہے۔ اس واقعہ پر سخت افسوس اور دکھ ہے۔ کونسلر محمد ادریس نےبھی پُرزور مذمت کی، کونسلر مریم خان، ساجد یوسف اور دیگر نے اس واقعہ کو پاکستان کی تاریخ کا سیاہ ترین دن قرار دیا۔ آخر میں شہداء کیلئے دعا کروائی گئی۔