مقبول خبریں
یوم عاشور کے حوالہ سے نگینہ جامع مسجد اولڈہم میں روح پرور،ایمان افروز محفل کا اہتمام
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان کیلئے سب سے زیادہ قربانیاں بھٹو خاندان اور پیپلزپارٹی کےکارکنان نے دی: پیر مظہر الحق
ریڈنگ ... پاکستان پیپلزپارٹی سائوتھ زون کے تحت مسلم ممالک کی پہلی خاتون وزیراعظم اور شہید جمہوریت بے نظیر بھٹو کی ساتویں برسی اور سانحہ پشاور کے شہداء کو خراج عقیدت نہایت احترام سے منایا گیا۔ تقریب کے مہمان خصوصی ممبر سینٹرل ایگزیکٹیو پی پی پی اور سابق سینئر وزیر حکومت سندھ پیر مظہر الحق تھے۔ جبکہ صدارت میاں سلیم سابق صدر پی پی پی سائوتھ اور ممبر ایڈھاک کمیٹی نے کی۔ تقریب سے میاں افضل خالد چیئرمین فیڈرل کونسل، ابرار میر سابق ڈپٹی جنرل سیکرٹری، مشتاق لاشاری چیئرمین تھرڈ ورلڈ سالیڈرٹی اعجاز محی الدین، ناہید حیات، ریاض، سابق سیکریٹری جنرل پی وائی او ریاض کوہمروی، شفقت بیبلی سابق صدر سلائو، راجہ اعظم خان سابق صدر لوٹن سردار آصف سابق نائب صدر پی پی پی سائوتھ، سابق چیئرمین پی وائی او یوکے نعیم عباسی، چوہدری نثار، ملک مسعود رانا، اصغر خان، ڈاکٹر خالد باجوہ، شمشیر سبحانی، بشارت حسین اور خلیل آرائیں نے خطاب کیا۔ جبکہ حاجی الف دین نے تلاوت کلام پاک اور شہداء کیلئے دعا سے کیا۔ مہمان خصوصی پیر مظہر الحق نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ یہ بات تو تہہ ہے کہ شہید ذوالفقار علی بھٹو اور شہید رانی محترمہ بے نظیر بھٹو کو کوئی بھی بھول نہیں سکتا۔ انہوں نے کہا بے نظیر بھٹو نے جس طرح حقیقی معنوں میں شہید ذوالفقار علی بھٹو کے فلسفے کو آگے پہنچایا وہ اپنی مثال آپ ہے۔ پیر مظہر الحق نے کہا کہ پاکستان میں جمہوریت کیلئے سب سے زیادہ قربانیاں بھٹو خاندان اور پاکستان پیپلزپارٹی کے لیڈران اور کارکنان نے دی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ برطانیہ میں پارٹی کی فوراً تنظیم سازی ہونی چاہئے اور وہ اس مسئلے کو سی ای سی کی میٹنگ میں بھی اٹھائینگے۔ پیر مظہر الحق نے شہدائے سانحہ پشاور اور بالخصوص معصوم بچوں کو زبردست الفاظ میں خراج عقیدت پیش کیا اور کہا کہ دہشت گردوں کے عزائم نہ صرف پاکستان کو تباہ کرنا ہے بلکہ معاشرے میں شدت پسندی سے خوف و ہراس بھی پھیلانا ہے۔ تقریب کے میزبان میاں سلیم نے کہا کہ ہمیں یہ دیکھنا ہوگا کہ مذہب اور سیاست میں فرق کیسے رکھیں ورنہ ہم مزید تقسیم ہونگے۔ میاں افضل خالد نے کہا کہ میں نے شہید ذوالفقار علی بھٹو اور شہید محترمہ بے نظیر بھٹو کے ساتھ کام کیا مگر اب ہمیں بلاول بھٹو زرداری کے ہاتھ مضبوط کرنے ہونگے تاکہ پارٹی کو مزید مضبوط کیا جاسکے۔ ابرار میر نے کہا کہ فوج دہشت گردوں کو ضرور ختم کر دے گی مگر اصل لڑائی شدت پسند سوچ سے ہے اور اسے ہم سب نے ملکر لڑنا ہے۔ مشتاق لاشاری نے کہا کہ میں قائداعظم کے بعد شہید ذوالفقار علی بھٹو اور محترمہ بے نظیر بھٹو کے بعد پاکستان میں کوئی لیڈر نہیں ہے۔ پیپلزپارٹی شاید اس کمی کو پورا کرسکے۔تقریب میں سابق میئر ریڈنگ گل نواز خان، فخر عمران، خان ارباز میرنعمان ابرار میر، محمودہ عبداللہ، منزہ مسکان، ، عمر بلال سلیم، قیصر سلیم، سابق کونسلر چوہدری وزیر حسین، سابق کونسلر اعظم جنجوعہ، چوہدری قربان حسین، چوہدری امین گورال، راجہ بشیر، چوہدری صابر، چوہدری لیاقت، چوہدری شبیر اور ملک ارشد کے علاوہ دیگر نوجوان اور بزرگ کارکنان نے بھرپور شرکت کی۔ تقریب کے اختتام پر ھال میں شہدائے پشاور کیلئے دعا کی گئی اور موم بتیاں جلا کر خراج عقیدت پیش کیا جس میں خواتین اور نوجوان بچوں نے بھی بڑھ چڑھ کر حصہ لیا اور متاثرین پشاور سے اپنی مکمل یکجہتی کا اظہار کیا۔