مقبول خبریں
راچڈیل کیسلمئیرسنٹر میں کمیونٹی کو صحت مند رہنے،حفاظتی تدابیر بارے آگاہی ورکشاپ کا انعقاد
یورپی پارلیمنٹ میں قائم ’’فرینڈز آف کشمیر گروپ‘‘ کی تنظیم سازی کردی گئی
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت جولائی میں برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز،سیمینارز منعقد کریگی
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
اوورسیز پاکستانیز ویلفیئر کونسل کا وسیم اختر چوہدری اور ملک ندیم عباس کے اعزاز میں استقبالیہ
مسئلہ کشمیر کو برطانیہ و یورپ میں اجاگر کرنے پر تحریکی عہدیداروں کا اہم کردار ہے: امجد بشیر
ہم نے سچ کو دیکھا ہے جھوٹ کے جھروکوں سے!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
چائلڈ سیکس گرومنگ کا شکار ہونے والی متعدد لڑکیوں کا رادھرم کونسل پر مقدمہ کرنے کا فیصلہ
مانچسٹر ...ساؤتھ یارکشائر میں چائلڈ سیکس گرومنگ کا شکار ہونے والی متعدد لڑکیوں نے اپنی دیکھ بھال اور جنسی استحصال سے بچانے میں ناکامی پررادھرم کونسل پر مقدمہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے اس سلسلے میں انہوں نے یارکشائرکی معروف سالیسٹرز فرم سوتاکیز سے رابطہ کیا ہے ..انہوں نے یہ فیصلہ ارکان پارلیمنٹ کی اس رپورٹ کے بعد کیا جس میں کہا گیا تھا کہ کونسل ان بچوں کو جنسی استحصال سے نہیں بچاسکتی بعض لڑکیوں کے وکیل ڈیوڈ گرین وڈ نے کہا ہے کہ رادھرم کونسل کے ساتھ ساتھ پولیس کے خلاف بھی مقدمہ دائر کیا جاسکتا ہے۔ کیونکہ یہ دونوں نابالغ لڑکیوں کو تحفظ دینے میں ناکام رہے ہیں۔ اخبارات میں شائع ہونے والی ایک خبر کے بعد رادھرم کونسل کے ڈپٹی لیڈر جہانگیر اختر پہلے ہی اپنے عہدے سے استعفیٰ دے چکے ہیں ۔ اس خبر میں دعوی کیا تھا کہ جہانگیر اختر کے علم میں یہ بات تھی کہ چائلڈ سیکس گرومنگ کے ایک ملزم ارشد حسین نے ایک چودہ سالہ لڑکی کے ساتھ جنسی تعلقات قائم کررکھے ہیں اور وہ دوسری لڑکیوں کے ساتھ بھی ایسا ہی کررہا ہے۔جہانگیر اختر نے اس بات کی تردید کی تھی کہ وہ ارشد حسین کی سرگرمیوں کے بارے میں جانتے تھے تاہم انہوں نے کہا کہ اس بیان کے حوالے سے متنازع ہونے کی وجہ سے وہ اپنے عہدے سے الگ ہورہے ہیں۔ پولیس کا کہنا ہے کہ میڈیا میں شائع ہونے والی رپورٹ کے نتیجے میں اس کی ان کوششوں کو دھچکا لگے گا جو وہ چائلڈ سیکس گرومنگ کے ملزموں کو گرفتار کرنے کے لئے کررہی ہے۔ معروف برطانوی اخبار دی ٹائمز کی رپورٹ میں ارشد حسین کی جانب سے ایک 14سالہ لڑکی کو دو مرتبہ حاملہ کرنے کے حوالے سے تفصیلات شائع کی تھیں۔اور کہا گیا تھا کہ اسے سوشل سروسز والوں نے کیئر ہوم میں لڑکی کے ساتھ ملنے کی اجازت دے رکھی تھی۔