مقبول خبریں
مکس مارشل آرٹ کونسل اور چیریٹی آرگنائزیشن کے زیر اہتمام تقریب کا انعقاد
بریگزیٹ بحران :کنزرویٹو پارٹی کی تین خواتین ممبر کی آزاد گروپ میں شمولیت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
بریڈفورڈ میں سانحہ پشاور کے شہدا کو خراج عقیدت ‘سکھوں ، عیسائیوں سمیت متعدد کمیونیٹیزکی شرکت
بریڈفورڈ ... سانحہ پشاور کے شہدا کو خراج عقیدت پیش کرنے اور انکے لواحقین سے اظہار یکجہتی کیلئے بریڈفورڈ سٹی ہال کے باہر پاکستانی کمیونٹی کے ہمراہ سکھوں اور عیسائیوں سمیت متعدد کمیونیٹیز نے یادگاری تقریب میں شرکت کی اور داعی اجل کو لبیک کہہ جانے والوں کی یاد میں شمعیں روشن کیں۔ ان میں مقامی ممبر پارلیمنٹ ڈیوڈ وارڈ، پاکستانی قونصل جنرل خلیل باجوہ، پارلیمانی امیدوار لیبر عمران حسین، پارلیمانی امیدوار ٹوری افتخار احمد، سابق لارڈ میئر کونسلر نویدہ اکرام، پی ٹی آئی کے نمائیندے آصف خان، مسلم لیگ ن کے نمائیندے راجہ اے ڈی خان، سابق لارڈ میئر غضنفر خالق، پروفیسر نذیر تبسم، شرجیل ملک، مدثر علی سمیت کونسلرز اور مختلف شعبی ہائے زندگی سے خواتین و حضرات شامل تھے۔ جن کا کہنا تھا کہ معصوم بچوں کو بارود کا ڈھیر بنانے والے انسان کہلوانے کے بھی حق دار نہیں ہیں۔ شرکا نے پشاور میں دہشت گردوں کے حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس وقت قومی یکجہتی کی سخت ضرورت ہے۔ سانحہ پشاور قومی سانحہ ہے۔ پوری قوم اس کی مذمت کرتی ہے۔ آپریشن ضرب عضب کی کامیابی پر دہشت گرد بوکھلا کر ظلم و بربریت پر اتر آئے ہیں۔ جنہوں نے اساتذہ سمیت ڈیڑھ سو کے قریب معصوموں کو شہید کرکے نہ صرف ان خاندانوں بلکہ 18کروڑ پاکستانیوں کو نفسیاتی خوف میں مبتلا کرنے کی ناپاک جسارت کی ہے۔ بریڈفورڈ سے تعلق رکھنے والے مختلف کمیونٹی رہنماؤں کا اس موقع پر کہنا تھا کہ بے گناہ معصوم بچوں کو شہید کر کے تعلیمی درسگاہ کو خون میں نہلا دینے والے مسلمان اور انسان کبھی نہیں ہوسکتے۔درندوں نے جس طرح سفاکی سے معصوم انسانی جانوں پر گولیاں چلائیں اسے سوچنا بھی مشکل ہے۔ ان رہنماؤں کا کہنا تھاکہ سانحہ پشاور میں ملوث افراد کسی بھی رعائت کے مستحق نہیں ہیں ان کا جڑ سے خاتمہ کرنا ہو گا۔خلیل باجوہ نے برطانیہ میں مقیم کمیونٹی کی طرف سے شہدائے پشاور کو کراج عقیدت پیش کرنے پر سب کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ پاکستان ایک طویل عرصے سے حالت جنگ میں ہے اور ان دشمنوں نے اب تک تیرہ سالوں میں ہزروں انسانوں کا بے گناہ خون بہایا ہے۔ اس تعزیتی تقریب میں معصوم بچوں نے بھی سخت سردی کے باوجود شرکت کی۔