مقبول خبریں
ن لیگ برطانیہ و یورپ کا نواز شریف،مریم نواز اور کیپٹن صفدر کی سزائیں معطل ہونے پر اظہار تشکر
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
ہم دھوپ میں بادل کی، درختوں کی طرح ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
برطانوی حکومت افغانستان اور فلسطین کے علاوہ کشمیرکو بھی اپنے ایجنڈے میں شامل کرے: ایم پیز
برنلے ... کنزرویٹو ارکان پارلیمنٹ مسئلہ کشمیر کو کشمیریوں کی خواہشات کے مطابق حل کروانے کیلئے بھرپور معاونت کریں گے،اگلے چند ہفتوں میں برطانوی وزیر اعظم ڈیوڈ کیمرون اوروزیر خارجہ فلپ ہیمنڈ کو برٹش کشمیریوں کے تحفظات سے آگاہ کریں گے جبکہ تحریک حق خود ارادیت یورپ کی مجوزہ کانفرنسوں میں بھی شرکت کریں گے،برطانوی حکومت افغانستان اور فلسطین کے مسئلے کے علاوہ کشمیرکو بھی اپنے ایجنڈے میں شامل کرے تاکہ برطانیہ میں بسنے والے ایک ملین سے زائد کشمیری یہاں کے مقامی اور قومی انتخابات میں اپنا موثر کردار ادا کر سکیں ۔ان خیالات کا اظہار نارتھ ویسٹ سے کنزرویٹو پارٹی کے ممبران پارلیمنٹ پاکستانی پارلیمنٹری گروپ کے چیئرمین اینڈ ریو سٹیفن1922کمیٹی کے چیئرمین سرگراہم بریڈی ایم پی اور بری نارتھ سے ممبر پارلیمنٹ ڈیوڈ نٹال نے جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت یورپ کے چیئرمین راجہ نجابت حسین اور سرپرست سردار عبدالرحمان خان سے خصوصی ملاقاتوں میں کیا،بری میں ہونیوالی ملاقات میں کنزر ویٹو پارٹی بری سائوتھ کے پارلیمانی امید وار اور لوکل کونسلر برائے والکر بھی موجود تھے جبکہ نیلسن میں ہونیوالی ملاقات میں ہڈر سفیلڈ سے کنزر ویٹو پارٹی کی پارلیمانی امید وار عطرت علی،مقامی کونسلروں اور حاجی رحمت علی کے علاوہ عمران علی بھی موجود تھے۔دونوں کشمیری رہنمائوں نے ممبران پارلیمنٹ کو مقبوضہ کشمیر کے انتخابات اور بھارتی حکمرانوں خصوصاً وزیر اعظم نریندر مودی کے دورہ مقبوضہ کشمیر کے حوالے سے بھی بریفنگ دی اور بتایا کہ حریت کانفرنس کی اپیل پر مقبوضہ کشمیر کے عوام نے ڈھونگ انتخابات کا بائیکاٹ کر کے ثابت کیا کہ کشمیری عوام حق خود ارادیت اور اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے مطابق رائے شماری کے علاوہ کوئی آپشن قبول نہیں کرے گی اور کوئی بھی مقامی الیکشن قراردادوں کا نعم البدل نہیں ہو سکتا،تحریکی رہنمائوں نے حکمران جماعت کے رہنمائوں سے مطالبہ کیا کہ وہ پارلیمنٹ کے اندر اور حکمران جماعت کی قیادت تک برٹش کشمیریوں کے جذبات پہنچائیں اور ان سے مطالبہ کریں کہ وہ مڈل ایسٹ اور افغانستان کے مسائل حل کروانے کے ساتھ ساتھ مسئلہ کشمیر کو بھی حل کروانے کیلئے بھارت اور پاکستان کے درمیان ثالثی کا کردار ادا کریں کیونکہ برطانیہ دنیا میں واحد ملک ہے جو مسئلہ کشمیر کو اس کے حقیقی تاریخی تناظر میں سمجھتا ہے،تینوں ارکان پارلیمنٹ نے کشمیریوں کویقین دلایا کہ وہ مسئلہ کشمیر کے پر امن سیاسی حل کیلئے ہر سطح پر اپنی آواز بلند کریں گے اور حکومتی نمائندوں کو بھی پاک بھارت کشیدگی بارے برٹش کشمیریوں کی تشویش سے آگاہ کریں گے،بری اور پنڈل کے دونوں ممبران پارلیمنٹ نے تحریکی رہنمائوں کو5جنوری لندن کانفرنس اور10جنوری کو مانچسٹر میں ہونیوالی کشمیری تقریب میں شرکت کی یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ وہ ماضی کے پروگراموں کی طرح ان پروگراموں میں دیگر ہم خیال ارکان کی شرکت کو بھی یقینی بنائیں گے،جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت یورپ کے چیئرمین راجہ نجابت حسین نے اس سے قبل سردار عبدالرحمان خان کے ہمراہ بریڈ فورڈ ایسٹ سے لبرل ڈیمو کریٹک ممبر پارلیمنٹ ڈیوڈ وارڈ ایم پی سے انکے دفتر میں ملاقات کر کے جنوری میں ہونیوالے کشمیر پروگراموں پر تبادلہ خیال کیا اور ممبران پارلیمنٹ کی شرکت کے علاوہ مختلف ممالک میں متحرک کشمیری لیڈر شپ کے بارے میں بھی دعوت ناموں پر بریفنگ دی اور انکا شکریہ ادا کیا کہ وہ ہر مرحلے پر تحریک آزادی کشمیر کے سفارتی محاذ پر معاونت کر رہے ہیں،اس موقع پر بریڈ فورڈ سٹی ہال میں لبرل گروپ کی لیڈر کونسلر جینٹ سنڈر بھی موجود تھیں۔بیورو رپورٹ:فیاض بشیر