مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
تحریک حق خود ارادیت جیسی تنظیمیں ریاست کی آزادی کیلئے فعال کردار ادا کر رہی ہیں،چوہدری عبدالمجید
بریڈ فورڈ:تحریک حق خود ارادیت جیسی تنظیمیں ریاست کی آزادی کیلئے فعال کردار ادا کر رہی ہیں،دوسری جماعتوں اور سیاسی و سماجی کارکنوں کو ان سے بھرپور تعاون کرنا چاہئے بیرون ملک کشمیری مقبوضہ وادی کے عوام کا کیس عالمی اداروں تک پہنچائیں،بیس کیمپ کی حکومت پوری ریاست کی نمائندگی کرتی ہے اور بحیثیت وزیر اعظم آزاد کشمیر پوری ریاست کی آزادی اور پاکستان کے استحکام کیلئے ہر سطح پر جدو جہد کروں گا،پیپلز پارٹی کے نوجوان چیئرمین بلاول بھٹو زرداری پاکستانی عوام کی نمائندگی کرتے ہوئے مسئلہ کشمیر کو بین الاقوامی برادری کے سامنے پیش کرنے کیلئے میدان میں آ چکے ہیں برٹش کشمیری اور پاکستانی15نومبر کو برمنگھم میں جمع ہو کر ہندوستان اور برطانوی حکومت کو ایک واضع پیغام دیں کہ جب تک بھارت مقبوضہ کشمیر کے عوام کو آزادی نہیں دیتا ہماری جدو جہد جاری رہے گی،وزیر اعظم آزاد کشمیر چوہدری عبدالمجید یہاں یورپ کی متحرک ترین کشمیری تنظیم جموں کشمیر تحریک خود ارادیت کے عہدیداروں اور معاونین سردار عبدالرحمان خان،راجہ نجابت حسین،سابق لارڈ میئر بریڈ فورڈ کونسلر غضنفر خالق،ملک رحمت اعوان،حاجی محبوب حسین،راجہ خالد محمود اور دیگر رہنمائوں سے ایک خصوصی ملاقات میںکیا،اس موقع پر وزیر اعظم آزاد کشمیر کے مشیر شوکت راجہ ایڈووکیٹ،چوہدری حق نواز،راجہ خالد فاروق اور پیپلز پارٹی بریڈ فورڈ کے سابق صدر آصف نسیم راٹھور اور راجہ منشا اقبال بھی موجود تھے،وزیر اعظم نے راجہ نجابت حسین اور انکی پوری ٹیم کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ آزادی کی اس جدو جہد میں برٹش کشمیریوں کا سب سے بڑا کردار ہے اور آپ لوگوں کی وجہ سے ہی برطانیہ اور یورپ کے ہر ایوان میں مسئلہ کشمیر اجاگر ہواہے،جس طرح آپ لوگوں نے دو مرتبہ برطانوی پارلیمنٹ میں بحث کروائی اور یورپی پارلیمنٹ میں کشمیر گروپ بنوایا اسی طرح بھارتی حکومت کے قبضہ اور مقبوضہ کشمیر نام نہاد انتخابات کے حوالے سے بھی برطانوی حکومت اور سیاستدانوں کو آگاہ کرنے کیلئے ہر ایوان میں خصوصی اجلاس منعقد کر کے ان کی حقیقت اور مقبوضہ کشمیر کے عوام کے جذبات سے آگاہ کریں،وزیر اعظم آزاد کشمیر نے کہا کہ وہ پوری ریاست کے نمائندہ وزیر اعظم کی حیثیت سے بیرون ملک کشمیریوں سے اپیل کریں گے کہ وہ ریاست جموں کشمیر کے عوام کی آزادی کیلئے سفارتی محاذ پر بلا امتیاز سیاسی وابستگی ایک بھرپور مہم چلائیں اور کشمیری قوم کا نکتہ نظر عالمی برادری تک پہنچائیں،انہوں نے کہا کہ آزاد کشمیر کے تمام سیاستدان وطن کی آزادی اور اسکی سالمیت کیلئے متحد ہیں لہٰذا برٹش اور یورپی کشمیریوں کو بھی متحد و متفق ہو کر تحریک آزادی کشمیر کی جدو جہد کو تیز کرنا ہو گا،اس موقع پر تحریکی عہدیداروں نے وزیر اعظم آزاد کشمیر کو بتایا کہ ہم جلسے اور جلوسوں کی سیاست کی بجائے عملی طور پر برطانیہ کے ہر چھوٹے بڑے سیاستدان کومل کر مسئلہ کشمیرکو اسکے حقیقی تناظر میں پیش کر رہے ہیں اور یہی وجہ ہے کہ ہر ایوان میں اور سیاسی پارٹی میں کشمیر دوست ارکان کی بڑی تعداد موجود ہے مگر آزاد کشمیر سے آنیوالی علاقائی اور مقامی سیاست کی وجہ سے بیرون ملک کشمیریوں کی تحریک کوسخت نقصان پہنچ رہاہے آپ سارے سیاستدان ہمارے لئے قابل احترام ہیں براہ کرم اپنے پیر وکاروں کو تحریک آزادی کے سفارتی محاذ پر متحرک کریں،انہوں نے وزیر اعظم کو بتایا کہ تحریک حق خود ارادیت کسی کشمیری جماعت یا سیاستدانوں کی خوشنودی کیلئے نہیں بلکہ کشمیری قوم کی آزادی کے اور ریاست کے تمام علاقوں کے عوام کے حقوق کیلئے جدو جہد کر رہی ہے اور آئندہ دو ماہ میں برطانوی اوریورپی پارلیمنٹ کے علاوہ برطانیہ کی چاروں سیاسی پارٹیوں کی اعلیٰ لیڈر شپ سے بھی ملاقاتیں کریں گے اور ہر ایوان میں اجلاس منعقد کر کے مقبوضہ کشمیر کے انتخابات پر بھی بریفنگ دیں گے،اس موقع پر سابق پریس سیکرٹری محمد رشید چوہدری بھی موجود تھے۔بیورورپورٹ:فیاض بشیر