مقبول خبریں
حضرت عثمان غنی ؓ نے دین اسلام کی ترویج میں اہم کردار ادا کیا: علامہ ظفر محمود فراشوی
بھارتی ظلم و جبر؛ برطانیہ کے بعد امریکی اخبارات میں بھی مسئلہ کشمیر شہہ سرخیوں میں نظر آنے لگا
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز اورسیمینارز منعقد کریگی : راجہ نجابت
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
اوورسیز پاکستانیز ویلفیئر کونسل کا وسیم اختر چوہدری اور ملک ندیم عباس کے اعزاز میں استقبالیہ
مودی کا دورہ فرانس، کشمیری و پاکستانی پیرس میں احتجاج کریں:جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت
وہ جو آنکھ تھی وہ اجڑ گئی ،وہ جو خواب تھے وہ بکھر گئے
پکچرگیلری
Advertisement
کشتواڑ میں ہونے والے فسادات کیخلاف احتجاج، پولیس اور مظاہرین کے درمیان شدید جھڑپ
سرینگر ... مقبوضہ کشمیر میں کشتواڑ میں ہونے والے فسادات کیخلاف احتجاجی مظاہروں کا سلسلہ جاری، ہڑتال کے دوران پولیس اور مظاہرین کے درمیان شدید جھڑپ ، آنسو گیس لاٹھی چارج کا بے دریغ استعمال مظاہرین کا پتھراو پولیس اہلکاروں سمیت بیسیوں افراد زخمی۔ سرینگر مظفر آباد شاہراہ کئی گھنٹوں تک بند۔ تفصیلات کے مطابق کشتواڑ فسادات کیخلاف شمالی قصبہ بارہمولا میں ہزاروں کی تعداد میں لوگ سڑکوں پر نکل آئے مشتعل مظاہرین نے پولیس سٹیشن پر دھاوا بول دیا اور ریاستی انتظامیہ کیخلاف نعرے بازی شروع کر دی۔ احتجاجی مظاہرے کے تحت سرینگر مظفر آباد شاہراہ کئی گھنٹوں تک بند رہی ٹریفک کا نظام معطل ہو کر رہ گیا۔ پولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے آنسو گیس اور لاٹھی چارج کا بے دریغ استعمال کیا جبکہ مشتعل مظاہرین نے جوابی حملے کے طور پر پولیس پر پتھراو کیا اہم شاہراہ اور گلی کوچے دن بھر میدان جنگ کا منظر پیش کرتے رہے۔ جھڑپوں کے دوران بیسیوں افراد زخمی جبکہ پولیس نے بیسیوں نوجوانوں کو گرفتار کرکے مختلف تھانوں میں پہنچا دیا دوسری جانب حریت کانفرنس کی کال پر کشتواڑ واقعات اور دفاعی کمیٹیوں کیخلاف ہفتے کے روز وادی بھر میں مکمل ہڑتال رہی تمام کاروباری ادارے سرکاری و پرائیویٹ دفاتر ، سکول اور کالجز بند رہے سڑکوں پر ٹریفک غائب ہر طرف ہو کا عالم رہا کئی مقامات پر حریت کارکنوں نے احتجاجی مظاہرے بھی کئے ہیں۔