مقبول خبریں
سیرت النبیؐ کے پیغام کو دنیا بھر میں پہنچانے کے لئے میڈیا کا کردار اہم ہے:پیر ابو احمد
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
سیلاب کی تباہ کاریاں، صرف فصلوں کو پہنچنے والے نقصان کا تخمینہ 130 ارب روپے سے زائد
اسلام آباد ...مون سون کی حالیہ شدید بارشوں اور سیلاب سے پاکستان کے مختلف علاقوں میں اب تک جہاں ایک سو سے زائد افراد ہلاک، سینکڑوں دیہات اور تین لاکھ سے زائد افراد متاثر ہوچکے ہیں وہیں سرکاری اندازوں کے مطابق تقریباً دو لاکھ کے ایکڑ کے لگ بھگ رقبے پر کھڑی فصلوں کو بھی نقصان پہنچ چکا ہے۔ کسانوں کی ایک نمائندہ تنظیم ایگری فورم پاکستان نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ حالیہ سیلابی صورتحال سے ملک میں خریف کی فصلوں کی پیداوار قابل ذکر حد تک متاثر ہوسکتی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ اس وقت لاکھوں ایکڑ رقبے پر کپاس، چاول اور گنے کی فصلوں کو موجودہ سیلابی صورتحال سے نقصان پہنچنے کی صورت میں برآمدات میں کمی اور تجارتی خسارے میں اضافے کا خدشہ ہے۔ اس سال بارشوں اور سیلاب کے نقصان سے ہمارا سروے ہے کہ ماضی کی نسبت کپاس کی گانٹھیں کم آئیں گی پھر سے حاصل ہونے والا بنولہ اور اس سے بننے والے خوردنی تیل کی پیداوار بھی متاثر ہوگی۔چاول کی فصل کے بھی 10 لاکھ ٹن کم ہونے پیدا ہونے کے امکانات ہیں۔ گنے کی فصل متاثر ہونے سے اس سے پیدا ہونے والی چینی کی پیداوار کم ہوگی۔ اور فصلوں کو پہنچنے والے نقصانات کا تخمینہ 130 ارب روپے سے زائد لگایا ہے۔