مقبول خبریں
دی سنٹر آف ویلبینگ ، ٹریننگ اینڈ کلچر کے زیر اہتمام دماغی امراض سے آگاہی بارے ورکشاپ
پارٹی رہنما شعیب صدیقی کو پاکستان تحریک انصاف پنجاب کا سیکریٹری جنرل بننے پر مبارک باد
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت جولائی میں برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز،سیمینارز منعقد کریگی
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
اوورسیز پاکستانیز ویلفیئر کونسل کا وسیم اختر چوہدری اور ملک ندیم عباس کے اعزاز میں استقبالیہ
مسئلہ کشمیر کو برطانیہ و یورپ میں اجاگر کرنے پر تحریکی عہدیداروں کا اہم کردار ہے: امجد بشیر
جس لڑکی نے خواب دکھائے وہ لڑکی نابینا تھی!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ایشیائی کمیونٹی کے اندر بڑھتی ہوئی ذیابیطس کی مرض باعث تشویش ہے،ڈاکٹر حیدر عباس
اولڈہم :ایشیائی کمیونٹی کے اندر بڑھتی ہوئی ذیابیطس کی مرض باعث تشویش ہے اسکی سب سے بڑے وجہ غذا کی زیادتی اور بڑھتا ہوا وزن ہے ۔اس بارے آگاہی انتہائی ضروری ہے تمام افراد کو اپنے فیملی ڈاکٹرز سے رجوع کرکے مکمل معائنہ کروانا چاہئے جتنا ابتدائی مرحلہ پر اس کی تشخیص ہو گی اس پر قابو پانے اور اعضاء کو نقصان پہنچنے میں کمی ہو گی ۔ یہ باتیں چیئرمین برٹش ایتھنک ہیلتھ Awarness ٹرسٹ اور سی سی جی اولڈہم کے اہم رہنما ڈاکٹر حیدر عباس نے الیگزنڈرا پارک میں ذیابیطس بارے آگاہی دینے کے سٹال پر میڈیا نمائندگان سے خصوصی بات چیت کے دوران کیں ۔ انہوں نے کہا کہ بدقسمتی سے ہماری کمیونٹی کے اندر سنی سنائی باتوں پر عمل کرکے بعض مریض عمل کرکے اپنے مرض کو انتہائی خطرناک حد تک لے جاتے ہیں ۔ جہاں سے انکا مکمل علاج مشکل ہو جاتا ہے میری کمیونٹی سے یہ مئودبانہ گزارش ہے کہ اگر کوئی وراثتی بیماری ہے یا پھر آپ کو اپنی صحت بارے سخت تشویش ہے تو فی الفور اپنے جی پی سے رابطہ کریں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ زندگی کی دوڑ میں ہر انسان بہت زیادہ معروف ہے لیکن اپنے آپ کو صحت مند رکھنے کیلئے ہلکی پھلکی ورزش روزانہ کا معمول بنانا چاہئے تا کہ وزن نہ بڑھے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے لئے یہ سنہری موقع تھا کہ ایشیائی کمیونٹی یہاں پارک میں آئے گی تو ہم نے کمیونٹی کمی سہولت کیلئے یہ سٹال لگایا ۔ دو سو افراد کا شوگر کا چیک اپ کیا گیا ان میں سے 50 افراد کو بتایا گیا کہ انکو ذیابیطس کا مرض لاحق ہونے کا زیادہ خطرہ ہے ۔ آخر میں انہوں نے انتظامیہ اور کمیونٹی کا شکریہ ادا کرتے ہوئے امید ظاہر کی کہ مستقبل میں بھی ایسے مواقع میسر آئینگے جس سے عوام الناس مستفید ہو سکے گی ۔ بیورو رپورٹ:فیاض بشیر