مقبول خبریں
lets talk گروپ کے زیر اہتمام کمیونٹی کو ذہنی امراض کی آگاہی کے لیے ورکشاپ کا انعقاد
صادق خان رسوائی کا باعث اور برطانیہ کے دارالحکومت لندن کو تباہ کررہے ہیں: ڈونلڈ ٹرمپ
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت جولائی میں برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز،سیمینارز منعقد کریگی
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
سابق صدر پی ٹی آئی یارکشائر اینڈ ہمبر ریجن طاہر ایوب خواجہ کا اپنی رہائش گاہ پر محفل کا انعقاد
رنگ خوشبو سے جو ٹکرائیں تو منظر مہکے!!!!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
جمہوریت اور آئین کی بالادستی قائم رہنی چاہیئے اور تمام فیصلے عوامی مفاد کے تحت ہونے چاہیئں: حسین شہید
لوٹن ... آزادی بڑی نعمت ہے اس کی قدر ان اقوام سے پوچھ کر دیکھیں جو اس کے حصول میں کئی دہائیوں سے سرگرداں ہیں اور پھر بھی اس نعمت سے محروم ہیں۔ پاکستان کے سیاستدانوں کو اس آزادی کی دل و جان سے قدر کرنی چاہیئے اور باہم دست و گریبان ہونے کے بجائے ملک و قوم کیلئے مثبت اور تعمیری کاموں میں وقت صرف کرنا چاہیئے۔ ان خیالات کا اظہار ممتاز سیاسی و سماجی رہنماء سید حسین شہید سرور کی جانب سے حکومت آزادکشمیرکے سابق مشیراور سماجی تنظیم ’’انسپاڈ‘‘ کے چیئرمین سردارمحمد طاہر تبسم کے اعزاز میں یہاں ظہرانہ میں کیا گیا۔طاہرتبسم ان دنوں برطانیہ کے دورے پر ہیں۔اس موقع پر سردار اعظم خان، جہانگیر خا ن جے۔پی اور شاہد حسین سید بھی موجود تھے۔ اس دوران پاکستان اور آزادکشمیرکی موجودہ صورتحال پر تبادلہ خیال کیاگیا۔ دونوں رہنماوؤں نے زوردیاکہ پاکستان کے موجودہ بحران کو سیاسی افہام و تفہیم اورقانون اور آئین کے مطابق حل کیاجائے ۔ تشدد اور افراتفری کسی بھی مسئلے کا حل نہیں۔جمہوری اصولوں اور آئین کی بالادستی قائم رہنے چاہیے اور عوا م کے مفاد میں فیصلے ہونے چاہیے۔ علاوہ ازیں سید حسین شہید سرور نے لوٹن کے سماجی رہنماؤوں آزاد پروانہ مغل اور صغیر احمد مغل کے سسر حاجی محمد زمان مغل کی وفات پر ان کے گھر جاکر تعزیت کی اور مرحوم کی مغفرت اور درجات کی بلندی کے لیے دعا کی.