مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
عمران خان اور علامہ طاہر القادری نے اسلام آباد کو مفلوج کرکے رکھ دیا ہے،راجہ آفتاب شریف
اولڈہم : پاکستان کے اندر جاری کشیدگی سے برون ممالک بسنے والوں میں گہری تشویش پائی جاتی ہے ۔ مشکلات ، قربانیوں اور جلا وطنی کی زندگی گزارنے کے بعد حالات بہتری کی طرف گامزن ہوئے اور جمہوریت کی ریل پٹڑی پر چلنی شروع ہوئی اور تاریخ میں پہلی دفعہ ایک منتخب حکومت نے پانچ سال مکمل ہونے کے بعد عام انتخابات کے نتیجہ میں اقتدار کی منتقلی کی ۔ مسلم لیگ ن نے واضح اکثریت سے کامیابی حاصل کی اور تیسری مرتبہ ہمارے قائد جناب میاں نواز شریف اسلامی جمہوریہ پاکستان کے وزیر اعظم منتخب ہوئے انکے اقتدار سنبھالنے سے پہلے ملک معاشی طور پر دیوالیہ پن کے قریب تھا انہوں نے گرتی ہوئی معیشت کو سہارا دینے کیلئے بیرونی ممالک سے پاکستان کے اندر سرمایہ کاری کرنے کیلئے قائل کیا کیونکہ بجلی کے بحران اور جاری دہشتگردی کی وجہ سے بیرونی سرمایہ کار تذبذب کا شکار تھے ۔ اس کے علاوہ صوبہ پنجاب کے اندر خادم اعلیٰ میاں شہباز شریف نے ہنگامی بنیادوں پر ترقیاتی کاموں کا ایک جال بچھا دیا جو ناقدین کو ناگوار گزرا ہے اور حکومت کیخلاف زہر اگلنا شروع کر دیا ۔ یہ باتیں پاکستان مسلم لیگ ن برطانیہ کے چیئرمین راجہ آفتاب شریف نے میڈیا نمائدگان سے خصوصی گفتگو کے دوران کیں ۔ انہوں نے کہا کہ پچھلے دس دنوں سے عمران خان اور علامہ طاہر القادری نے دارالحکومت اسلام آباد کو مفلوج کرکے رکھ دیا ہے ، عالمی سطح پر ملکی وقار مجروح ہو رہا ہے اور معیشت کو بھی ناقابل تلافی نقصان پہنچ رہا ہے ہ سیاسی سوچ رکھنے والے ہمیشہ تمام مسائل ، غلط فہمیوں اور تشویشات کو مذاکرات کے میز پر بیٹھ کر حل کرتی ہیں جمہوریت میں تمام مسائل کا واحد حل یہی ہے لیکن سمجھ سے بالا تر ہے کہ یہ سب کچھ کس کے ایجنڈے کو پایہ تکمیل دینے کیلئے کیا جا رہا ہے ۔ ایک طرف پاکستان کی مسلح افواج ملکی سلامتی کیلئے شمالی وزیرستان میں آپریشن ضرب غضب کے ذریعے دہشتگردوں کو نیست و نابود کرنے کیلئے مصروف عمل ہے اور دوسری طرف یہ ڈرامہ رچایا جا رہا ہے اگر مملکت پاکستان سے محبت ہے تو پھر یہ لانگ مارچ ہونا ہی نہیں چاہئے تھا اگر عام انتخابات کے اندر دھاندلی ہوئی تو پھر پارلیمنٹ کے اندر سے حل کرنا چاہئے تھا نہ کہ ملکی سلامتی کو مزید دائو پر لگا دیا جاتا اب بھی کچھ نہیں بگڑا ہماری جناب عمران خان اور علامہ طاہر القادری صاحب سے مودبانہ عرض ہے کہ اس معاملے کو مذاکرات کیلئے باہمی گفت و شنید اور انا کا مسئلہ بنائے بغیر حل کرنا چاہئے ۔ آخر میں انہوں نے کہا کہ برطانیہ بھر کے کارکنان اور عہدیداران وزیر اعظم پاکستان میاں نواز شریف اور خادم اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں اور قیادت پر مکمل اعتماد اور بھروسہ ہے۔ بیورو رپورٹ:فیاض بشیر