مقبول خبریں
سیرت النبیؐ کے پیغام کو دنیا بھر میں پہنچانے کے لئے میڈیا کا کردار اہم ہے:پیر ابو احمد
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ادائیگی عمرہ اور وزیر اعظم پاکستان سے ملاقات کے بعد زبیر گل کی برطانیہ واپسی ‘شاندار استقبال
مانچسٹر... وطن عزیز پاکستان رب عظیم کا امت مسلمہ کیلئے دنیا میں ایک تحفہ ہے‘ خانہ خدا میں روزانہ لاکھوں فرزندان توحید اسکی سلامتی اور بقا کیلئے دعا گو ہوتے ہیں ضرورت اس امر کی ہے کہ بطور پاکستانی ہم بھی حب الوطنی کا ثبوت دیتے ہوئے اسے مضبوط سے مضبوط تر کریں اور عدم استحکام کی کسی کوشش کو بار آور نہ ہونے دیں۔ ان خیالات کا اظہار برطانیہ میں مسلم لیگ ن کے صدر زبیر گل نے عمرہ کی سعادت کے بعد مانچسٹر پہنچنے کے بعد استقبال کیلئے آنے والوں سے گفتگو میں کیا۔ انہوں نے کہا اس امر میں کوئی شک نہیں کہ رمضان المبارک کے آخری عشرے میں خانہ خدا اور روضہ رسول کی آغوش میں عبادت کا مزہ ہی کچھ اور ہے۔ زبیر گل نے کہا کہ سعودی عرب میں قیام کے دوران وزیر اعظم پاکستان اور وزیر خزانہ اسحاق ڈار سے ملاقاتیں بھی ہوئیں اور باہمی امور پر گفتگو ہوئی۔ انہوں نے بتایا کہ اس موقع پر برطانیہ میں پارٹی امور کے حوالے سے بھی گفتگو ہوئی۔ زبیر گل نے کہا کہ پاکستان میں دہشت گردوں کے خلاف آپریشن ضرب عضب اپنی پوری شدت سے جاری ہے جس کے اچھے نتائج برآمد ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ اوورسیز پاکستانی بھی اس آپریشن کو قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہیں۔ انہوں نے اپنے استقبال کیلئے آنے والے ساتھیوں کا بھی شکریہ ادا کیا جن میں برطانیہ میں پارٹی کے چیئرمین سفارتی ونگ ڈپٹی میئر اولڈہم عتیق الرحمان، صدر نارتھ ویسٹ ریجن راجہ سجاد، جنرل سیکریٹری راجہ جلیل الرحمان، باسط بٹ، راجہ عبدالقیوم، بیرسٹر عابد حسین، چوہدری عبدالکریم، وحید لہڑی، یامین کھٹانہ، راجہ ادریس، راجہ فضل داد، اے ڈی خان و دیگر شامل تھے۔ (بیورو رپورٹ: فیاض بشیر)