مقبول خبریں
مکس مارشل آرٹ کونسل اور چیریٹی آرگنائزیشن کے زیر اہتمام تقریب کا انعقاد
بریگزیٹ بحران :کنزرویٹو پارٹی کی تین خواتین ممبر کی آزاد گروپ میں شمولیت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
سری لنکا کے دارالحکومت میں واقع مسجد پر بودھوں کا حملہ نمازیوں پر پتھراؤ ، پانچ افراد زخمی
کولمبو... سری لنکا کے دارالحکومت میں واقع ایک مسجد پر بودھوں کے ایک گروہ نے حملہ کیا جس کے نتیجے میں پانچ افراد زخمی ہو گئے۔ یہ واقعہ کولمبو کے علاقے گرینڈ پاس میں ہوا۔ مسجد پر حملے کے بعد بودھوں اور مسلمانوں کے درمیان تصادم ہوا اور پولیس نے علاقے میں کرفیو نافذ کردیا۔ پچھلے ماہ بودھوں کے ایک گروہ نے مسجد کے قریب مظاہرہ کیا تھا اور مطالبہ کیا تھا کہ یہ مسجد منتقل کی جائے۔ واضح رہے کہ بودھوں نے حالیہ مہینوں میں مسلمانوں اور عیسائیوں کے خلاف مہم کو تیز کردیا ہے۔ اس علاقے کے ایک رہائشی نے بتایا کہ شام کی نماز کے وقت بودھوں نے نمازیوں پر پتھراؤ کیا۔ پولیس ترجمان کا کہنا تھا کہ فوری طور پر پولیس اور کمانڈوز کو حالات پر قابو پانے کے لیے بھیجا۔ بودھوں نے کئی بار مسجد پر اعتراض اٹھایا اور آخر میں انہوں نے رمضان کے ختم ہونے تک کی مہلت دی۔ تاہم اس علاقے کے مسلمانوں کا کہنا ہے کہ ان کو سری لنکا کی وزارت برائے مذہبی امور نے اس مسجد کو استعمال کرنے کی اجازت دی ہوئی ہے۔ پچھلے ایک سال سے سری لنکا میں بودھوں نے مساجد اور مسلمانوں کی دکانوں کے علاوہ گرجا گھروں کو بھی نشانہ بنایا ہے۔ اس سال فروری میں ایک بدھ مت گروہ نے حلال کھانوں کے نظام کو ختم کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔ بدھ مت الزام لگاتے ہیں کہ مسلمان اور عیسائی لوگوں کے مذہب تبدیل کرنے کی کوششیں کر رہے ہیں۔ واضح رہے کہ برما میں بھی بودھوں نے مسلمانوں پر مظالم کے پہا ڑ توڑے تھے ...