مقبول خبریں
پاکستان میں صاف پانی کی سہولت کو ممکن بنانے کیلئے مختلف منصوبوں پر کام کرونگی:زارہ دین
پیپلزپارٹی کے رہنما ندیم اصغر کائرہ کی پریس کانفرنس ،صحافیوں کے سوالات کے جوابات دیئے
واجد خان ایم ای پی کا آزاد کشمیر سے آئے حریت کانفرنس کے رہنمائوں کے اعزاز میں عشائیہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے زیر اہتمام پہلی کشمیر کلچرل نمائش کا اہتمام
دسمبر بے رحم اتنا نہیں تھا!!!!!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
کشمیر چھوڑ دو تحریک،یاسین ملک سمیت لبریشن فرنٹ کے رہنما گرفتار
سرینگر :مقبوضہ کشمیر میں بھارتی پولیس نے جموںو کشمیر لبریشن فرنٹ کے چیئرمین محمد یاسین ملک کواحتجاجی مارچ کی قیادت سے روکنے کیلئے جمعہ کے روزگھر پر چھاپہ مار کر گرفتار کر لیا۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق پولیس نے بشیر احمدبٹ، شوکت احمد بخشی، شیخ عبدالرشید، پروفیسر جاوید احمد اور لبریشن فرنٹ کے دیگر رہنمائوں کو بھی اس وقت گرفتار کر لیا جب وہ ‘‘ کشمیر چھو ڑ دو تحریک’’ کے سلسلے میں سرینگر میں مائسمہ سے لال چوک کی طرف مارچ کر رہے تھے ۔ پولیس نے مارچ کے شرکا ء پر شدید لاٹھی چارج اور آنسو گیس کا استعمال کیا جس سے متعدد لوگوں کے زخمی ہونے کی اطلاع ہے ۔ دریں اثناء بھارتی پولیس نے حریت رہنما نعیم احمد خان کو بارہمولہ کے علاقے کنڈی میں عوامی اجتماع سے خطاب سے روکنے کیلئے گرفتار کرکے ٹنگمرگ تھانے میں منتقل کر دیا۔ ادھر کشمیر یونیورسٹی کے طلباء نے غزہ کے مسلمانوں کے حق میں اور اسرائیلی جارحیت کے خلاف ایک احتجاجی مظاہرہ کیا اورشدید نعرے بازی کی ، جبکہ بھارتی فوج کے ہاتھوں شہید ہونے والے مجاہد کو سپرد خاک کردیاگیا ، مجاہد کی شہادت کے خلاف قصبے اور اس کے ملحقہ علاقوں میں تیسرے دن بھی ہڑتال جاری رہی ، سڑکوں پر گاڑیوں کی آمدورفت معطل ،سرکاری اور پرائیویٹ اداروں میں کام کاج نہ ہونے کے برابر رہا ۔ دوسری جانب کل جماعتی حریت کانفرنس نے 13جولائی 1931ء کے اولین شہدائے جموں و کشمیر کی یاد میں جموں و کشمیر میں مکمل ہڑتال کی اپیل کرتے ہوئے احتجاج کا شیڈول جاری کردیا ہے ، جبکہ مظفرآباد میں متحدہ جہاد کونسل کے زیراہتمام کشمیر پر ایک خصوصی سیمینار ہوگا۔ مقبوضہ کشمیر میں ہڑتال کی کال کل جماعتی حریت کانفرنس نے دی ہے جس کی تمام تنظیموں اور جماعتوں نے حمایت کی ہے ۔ سرینگر سمیت ریاست بھر میں اتوار کو تمام کاروباری مراکز بند رہیں گے جبکہ ٹریفک بھی معطل ہوگی۔ سرینگر میں حفاظتی انتظامات مزید سخت کردئیے گئے ہیں جبکہ حریت قیادت کو یوم شہدائے کشمیر کے پروگراموں میں شرکت سے روکنے کیلئے دو روز قبل ہی اپنے گھروں میں نظربند کردیا گیا ہے ۔