مقبول خبریں
راچڈیل کیسلمئیرسنٹر میں کمیونٹی کو صحت مند رہنے،حفاظتی تدابیر بارے آگاہی ورکشاپ کا انعقاد
یورپی پارلیمنٹ میں قائم ’’فرینڈز آف کشمیر گروپ‘‘ کی تنظیم سازی کردی گئی
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت جولائی میں برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز،سیمینارز منعقد کریگی
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
اوورسیز پاکستانیز ویلفیئر کونسل کا وسیم اختر چوہدری اور ملک ندیم عباس کے اعزاز میں استقبالیہ
مسئلہ کشمیر کو برطانیہ و یورپ میں اجاگر کرنے پر تحریکی عہدیداروں کا اہم کردار ہے: امجد بشیر
ہم نے سچ کو دیکھا ہے جھوٹ کے جھروکوں سے!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
نریندر مودی کل سرینگر کا دورہ کرینگے،مقبوضہ وادی میں مکمل ہڑتال کا اعلان
سرینگر :مقبوضہ کشمیرمیں جمعہ کو بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کے مقبوضہ علاقے کے دورے کے موقع پر مکمل ہڑتال ہوگی ۔اس روز سرینگر سمیت وادی کے دیگر مقامات پر تمام کاروباری مراکز ، تعلیمی ادارے بندرہیں گے جبکہ ٹریفک بھی معطل ہوگی ۔ کشمیر میڈیاسروس کے مطابق ہڑتال کی کال بزرگ حریت رہنما سید علی گیلانی ،کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین میر واعظ عمر فاروق، جموںو کشمیر لبریشن فرنٹ کے چیئرمین محمد یاسین ملک اور سینئر حریت رہنما شبیر احمد شاہ نے دی ہے ۔ سید علی گیلانی نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں کہاکہ بھارتی قابض انتظامیہ اسرائیل کی طرز پر پنڈتوں کیلئے الگ شہر بسا کر کشمیریوں کو فرقہ وارانہ بنیادوں پر تقسیم کررہی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ ہڑتال کے ذریعے ہم نریندرمودی کو پیغام دینا چاہتے ہیں کہ ان کے خطرناک عزائم کیخلاف جموں وکشمیر میں بھرپور ردّعمل سامنے آئیگا ۔حریت چیئرمین میر واعظ نے کہا کہ کشمیری عوام اس روز مکمل ہڑتال کرکے بھارت اور پوری عالمی برادری پر واضح کردیں کہ جس عظیم نصب العین کیلئے کشمیری قوم نے بے مثال قربانیاں پیش کی ہیں ان کو اقتصادی یا معاشی پیکجز کے اعلان کے عوض قربان نہیں کیا جاسکتا ۔انہوں نے کہاکہ بھارتی وزیر اعظم کے دورے کے کچھ اقتصادی محرکات ہوں گے مگر مسئلہ کشمیر کوئی اقتصادی یا معاشی مسئلہ نہیں بلکہ ایک سیاسی اور انسانی مسئلہ ہے۔میرواعظ نے کہاکہ بھارت نے کشمیر کوعملاً ایک فوجی سٹیٹ میں تبدیل کر رکھا ہے محمد یاسین ملک نے کہا کہ بھارتی وزیر اعظم سربراہ حکومت کی حیثیت سے کشمیریوں پر مظالم ڈھانے اورانکے حق آزادی کوسلب کرنے کے براہ راست ذمہ دار ہیں۔انہوں نے کہاکہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی وزیر اعظم کے دورے کے موقع پر ہمیشہ احتجاج کیا جاتاہے اور اسی روایت کوبرقرار رکھتے ہوئے جمعہ کو بھی مکمل احتجاجی ہڑتال کی جائے گی ۔